جھوٹ کے کچرے سے سچ کی تلاش

دنیا کا کوئی بھی ملک، قوم یا معاشرہ ایسا نہیں ہے جو مختلف الخیال لوگوں پر مشتمل نہ ہو یعنی جہاں بھی کم از کم ایک سے زیادہ افراد ملکر رہتے ہیں وہاں ہر بات پر نہ سہی لیکن کسی نہ کسی بات ان کا آپس میں اتفاق نہ کرنا ایک عام سی بات ہے۔ بعض اوقات ایک ہی مسئلہ کو حل کرنے کے لئے دو مختلف لوگوں کے پاس دو مختلف حل موجود ہوتے ہیں۔ اگر ایک ملک یا معاشرے کے سارے لوگ ایک ہی سوچ کے تابع ہو جائیں تو پھر معاشرے میں جھگڑے اور فساد کی جڑ ختم ہوجاتی ہے اور بظاہر تو یہ بات دیکھنے میں بڑی بھلی معلوم ہوتی ہے کہ سارے لوگ ایک ہی رائے پر متفق ہو جائیں اور کسی بات پر جھگڑا ہی نہ ہو لیکن ایسی صورتحال میں اس بات کا کیا ثبوت ہو گا کہ سب لوگ ایک اچھی اور درست بات پر متفق ہوئے ہیں یا کہ ایک نقصان دہ بات پر اکٹھے ہوگئے ہیں

Read more