ریاض پیرزادہ نے مسلم لیگ (نواز) چھوڑنے کی تردید کر دی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

مسلم لیگ ن کے سینئر رکن قومی اسمبلی ریاض پیرزادہ نے اپنی جماعت چھوڑنے کی خبروں کو افواہ قرار دے دیا ہے جبکہ ارکان پنجاب اسمبلی اشرف انصاری، قاسم ہنجرا اور عطاالرحمان نے بھی وزیراعظم کے ساتھ ملاقات کی تردید کر دی ہے۔

رکن قومی اسمبلی ریاض حسین پیرزادہ نے نواز لیگ چھوڑنے کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ نواز شریف ہی ان کے لیڈر ہیں، مشکل وقت میں انہیں کیسے چھوڑ سکتا ہوں۔

اشرف انصاری نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ وہ نواز لیگ میں ہیں اور رہیں گے۔ وزیراعظم کے ساتھ ان کے بڑے بھائی یونس انصاری کی ملاقات ہوئی۔ انہوں نے مزید کہا کہ یونس انصاری ن لیگ میں نہیں تھے، انہوں نے جیپ کے نشان پر الیکشن لڑا تھا۔

ملک قاسم ہنجرا نے کہا کہ وزیراعظم سے نہیں ملا تاہم وزیر اعلی پنجاب سے ملاقاتیں ہوتی رہتی ہیں۔ ایم پی اے عطاالرحمان کا کہنا ہے کہ وہ نواز لیگ میں خوش ہیں، پھر وزیراعظم سے کیوں ملیں گے؟

رانا ثناء اللہ نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ مہنگائی سے توجہ ہٹانے کیلئے حکومت افواہیں پھیلا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ صرف تین چار نام سامنے آئے ہیں، ہم ان ضمیر فروشوں کے گھروں کا گھیراؤ کریں گے۔

ادھر یونس انصاری نے دعویٰ کیا ہے کہ میری قیادت میں 15 ایم پی اے اور پانچ لیگی ایم این اے وزیراعظم سے ملے تاہم میرے بڑے بھائی اشرف انصاری وزیراعظم سے ملاقات میں شریک نہیں تھے۔

یونس انصاری نے دعویٰ کیا کہ فاورڈ بلاک کا باضابطہ اعلان مناسب وقت پر ہوگا، ابھی تمام حکمت عملی نہیں بتا سکتے۔ مسلم لیگ ن کے بڑی تعداد میں ارکان رابطے میں ہیں۔

مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی اور حکومت کی خام خیالی ہے کہ ن لیگ تقسیم ہوگی۔ مسلم لیگ ن میں صرف نواز شریف کا بیانیہ ہے۔ عوام لوٹوں کو پسند نہیں کرتے، پارٹیاں چھوڑنے والوں کو عوام نے الیکشن میں مسترد کر دیا تھا۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •