نمرتا نے آج مٹھائی تقسیم کی تھی، وہ خوش تھی، نمرتا ایسی لڑکی نہیں تھی کہ خودکشی کرتی: متوفیہ طالبہ کی دوست کا بیان

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاڑکانہ میڈیکل کالج کے ہاسٹل میں جاں بحق ہوانے والی طالبہ کی دوست کا بیان سامنے آگیا ہے جس نے معاملے کو اور پیچیدہ کر دیا ہے۔ نمرتا کی دوست وشال نے کہا ہے کہ نمرتا نے اپنی دوستوں میں آج مٹھائی تقسیم کی تھی اور وہ بہت خوش تھی، نہ جانے کیا ہوا۔ وشال نے کہا کہ نمرتا خوش تھی اور وہ ایسی لڑکی نہیں تھی کو خودکشی کرتی، نہیں پتا کہ کیا ہوا ہے۔

یاد رہے کہ ہاسٹل کے کمرے میں مردہ حالت میں ملنے والی نمرتا کی موت کے بارے میں ڈاکٹرز نے بھی کہا ہے کہ نمرتا کے گلے میں دوپٹا بندھا تھا لیکن اس کے گلے میں رسی کے نشانات ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نمرتا کی موت خودکشی نہیں ہے تاہم ابھی حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جاسکتا، تفصیلی رپورٹ آنے کے بعد حتمی رائے دی جا سکے گی۔

خیال رہے کہ لاڑکانہ کے چانڈکا میڈیکل کالج کے ہاسٹل سے 22 سالہ طالبہ کی لاش برآمد ہوئی ہے۔

 

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •