نوازشریف کے اردگرد تین، چار بندے ایسے ہیں کہ اگر وہ نہ ہوتے تو نوازشریف چوتھی بار وزیراعظم بن جاتے: وزیر داخلہ

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

وفاقی وزیر داخلہ بریگیڈیئر (ر) اعجاز شاہ نے کہا ہے کہ ہمیں تسلی ہے کہ ہم درست سمت میں جا رہے ہیں۔ نوازشریف کو ان کے اردگرد بیٹھے دو چار لوگوں نے پھنسایا، اگر ایسا نہ ہوتا تو نوازشریف چوتھی بار بھی وزیراعظم بن جاتے۔ ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں 18ویں ترمیم کے خلاف نہیں لیکن یہ اتنی جلدی ہوئی کہ کافی ساری چیزوں کو صوبوں کو دے دیا گیا جن کا بوجھ صوبے نہیں اٹھا سکتے تھے، ایسا کرنے سے وفاق کمزور ہوا۔ امن وامان کا مسئلہ صوبوں کا ہے لیکن وفاق کا بھی کردار ہے۔

وزیر داخلہ  نے کہا کہ موجودہ حالات اس حکومت کے نہیں بلکہ سابقہ حکومت کے پیدا کردہ ہیں۔ وزیرداخلہ نے کہا نیب ہماری حکومت کے ماتحت نہیں لیکن بدقسمتی سے ایسا تاثر دیا جا رہا ہے کہ حکومت نیب کو چلا رہی ہے۔ اگر نیب ہمارے ماتحت ہو تو کیا عمران خان چاہیں گے کہ پاکستان میں سرمایہ کاری نہ ہو۔

انہوں نے کہا نوازشریف کے ارد گرد اگر تین چار بندے ایسے ہیں کہ اگر وہ نہ ہوتے تو وہ چوتھی بار بھی وزیراعظم بن جاتے۔ یہ وہ لوگ ہیں جو شریف خاندان کے کسی بھی فرد کو جیل سے باہر نہیں رہنے دیں گے۔ اگر نوازشریف چودھری نثار کی بات مان جاتے تو مسئلہ ٹھیک ہوجاتا۔ اب بھی نواز شریف کے گرد وہی لوگ ہیں، میں کسی کا نام نہیں لوں گا۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •