ہیش ٹیک کیوں استعمال کرے؟

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

سوشل میڈیا آج کل ہر کسی کے دسترس میں ہے۔ ہر کوئی بغیر کسی پروفیشن، عمر، جنس، علاقہ وغیرہ کی تفریق کے روزانہ بیشتر وقت سوشل میڈیا استعمال کرتا ہے۔ اکثر و بیشتر تفریح اور اپنے دوست احباب سے رابطے کے ساتھ سوشل میڈیا ہی کے توسط سے علاقائی، ملکی اور عالمی حالات سے بھی باخبر ہوتے ہیں۔ سیاسی و سماجی اور تعلیمی و دیگر معاملات پر گفتگو بھی سب سے زیادہ سوشل میڈیا پر کرتے ہیں۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی اس زمانے میں سوشل میڈیا کے مثبت استعمال پر بہت زیادہ تاکید کرتے ہیں۔ اس کی وجہ یہی ہے کیونکہ عام فہم افراد کو اصل حقائق سے آگاہی دینے کے لئے موثر ترین ٹول سوشل میڈیا کا مثبت استعمال ہے۔

سوشل میڈیا کے موثر استعمال کی بہت سی ترکیبیں ہیں جن کے استعمال سے پیغامات کی ترسیل اور پہنچ آسان تر ہوجاتی ہے۔

ہیش ٹیک (#) کا استعمال ایک آسان سا کام ہے جس کے ذریعے آپ کا سادہ سا پوسٹ (ٹیکسٹ، تصویر یا ویڈیو کیپشن، ویب سائٹ لنک وغیرہ) بھی ایک انٹرنٹ لنک سے منسلک ہوجاتا ہے۔

ہیش ٹیک در اصل ایک سرچ الگوریتھم کو فالو کرتی ہے۔ مخصوص لفظ، حرف، ایموجی، وغیرہ کو سرچ کرنے اور کاؤنٹ کرنے کا یہ بہت ہی آسان اور موثر طریقہ ہے۔ فیس بک اور ٹویٹر دونوں پر کسی بھی پوسٹ میں استعمال ہونیوالا ہیش ٹیگ ایک لنک پیدا کرتی ہے۔ جب کسی لفظ یا فقرے کے شروع میں پیش ٹیک لگا دے تو وہ لفظ یا فقرہ ہائی لائٹ ہوجاتا ہے۔ آپ پوسٹ کرنے کے بعد اس پر کلک کرے تو آپ کو اسی لفظ یا فقرے کے ساتھ دنیا کے کسی بھی ملک میں کی گئی پوسٹیں نظر آجاتی ہے۔ اسی طرح جب دوسرا کوئی بھی کسی بھی ملک اور شہر سے اسی لفظ یا فقرے پر پیش ٹیک استعمال کرے تو وہ آپ کے اس پوسٹ کو فورا دیکھ سکیں گے۔

ٹویٹر ٹرینڈ کا رجحان اب بیشتر عام لوگوں کی معلومات اور استعمال میں بھی ہے۔ مخصوص وقت میں جب ایک ہی لفظ یا فقرے پر بہت سے لوگ ہیش ٹیگ استعمال کرنے لگ جائے تو وہ ایک ٹرینڈ بن جاتا ہے۔ اس کی تعداد جب بہت زیادہ ہوجاتی ہے تو وہ عالمی توجہ حاصل کرتی ہے۔ اور ایک ملک کے اندر مخصوص وقت میں ٹاپ ٹرینڈ بن جانے والا لفظ اور فقرہ تعداد سمیت اس ملک کے تقریبا تمام ٹویٹر صارف کو نظر آنے لگتا ہے، جس پر لوگ متوجہ ہوجاتے ہیں۔ ساتھ ساتھ ملکی ادارے اور پرنٹ و الیکٹرانک میڈیا اس ٹرینڈ سے متعلقہ ایشوز کو دیکھنے اور تحقیق پر مجبور ہوتے ہیں۔

مثلا آج کل سب سے زیادہ ٹرینڈ #قاسم۔ سلیمانی #WWIII #IranvsUSA وغیرہ کے چل رہے ہیں۔ جس کی وجہ سب جانتے ہیں۔ سیاسی جماعتیں اپنے پروگرامز کے حوالے سے آگاہی دینے کے لئے، حکومتی اقدامات اور پالیسیوں کی بابت سول سوسائٹی کسی اقدام کے لئے، عالمی امور اور سماجی معاملات وغیرہ وغیرہ پر سوشل ایکٹیویسٹ یہی طریقہ کار اختیار کرتے ہیں۔ اور مخصوص وقت متعین کرکے اپنے ہم فکر افراد سے زیادہ سے زیادہ ہیش ٹیک کے ساتھ پوسٹ کرواتے ہیں۔ اور اس طرح بغیر کسی خرچ کے اپنے دلچسپی والے معاملات کو کروڑوں افراد تک پہنچاتے ہیں۔ بعض سیاسی جماعتوں نے میڈیا ہاؤسز اور ایکٹیویسٹ کی ٹیم۔ بنائی ہوئی ہوتی ہیں جو باقاعدہ منصوبہ بندی کے ساتھ اپنے ٹرینڈز سیٹ کرتے ہیں، اس طرح اپنے مخصوص معاملات کی بابت آگاہی اور نظریات عوام تک پہنچاتے ہیں۔

اس لیے دوست احباب جو ریگولر فیس بک اور ٹویٹر استعمال کرتے ہیں وہ ہیش ٹیگ کو استعمال کیا کرے۔ خاص طور پر اہم بین الاقوامی امور کی بابت مقامی سرگرمیوں کو ہائی لائٹ کرنے کے لئے انگریزی یا اردو الفاظ و فقرے کے ساتھ پیش ٹیک استعمال کرکے آپ عالمی تحریکوں کے آواز میں آواز ملا رہے ہوں گے۔ اپنی مقامی سرگرمیوں کو دنیا تک پہنچا رہے ہوں گے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *