جہانگیر ترین جس طرف رخ کرتے ہیں، عوام کا بیڑا غرق ہو جاتا ہے: سلیم صافی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

تجزیہ کار سلیم صافی نے کہا ہے کہ کہ جہانگیر ترین جتنی زیادہ حرکت کرتے ہیں، اتنا ہی زیادہ عوام کا بیڑا غرق ہوتا ہے۔  جیسے گنا سستا خریدا جاتا ہے اور چینی مہنگی بیچی جاتی ہے۔ اس طرح گندم اور آٹے کا معاملہ ہے۔ عثمان بزدار ان سے بہتر ہیں کہ کم از کم چپ کرکے بیٹھے تو ہیں کیونکہ جو وزیر اور مشیر جتنا حرکت کر رہا ہے، اتنا ہی زیادہ ملک کا بیڑا غرق کر رہا ہے۔

سلیم صافی کا کہنا تھا کہ جس طرح فواد چودھری وغیرہ نواز شریف اور آصف زرداری وغیرہ کو گالیا ں دیتے ہیں تو پھر وہ تو بے قصور ہیں کیونکہ قصور وار تو اسحاق ڈار اور عبد الحفیظ شیخ تھے۔

انہوں نے کہا کہ فواد چودھری نے بڑا عجیب فلسفہ بیان کر دیا ہے کہ عثمان بزدار ناکام لیکن اس کے ذمہ دار عمران خان نہیں ہیں۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

2 thoughts on “جہانگیر ترین جس طرف رخ کرتے ہیں، عوام کا بیڑا غرق ہو جاتا ہے: سلیم صافی

  • 22/01/2020 at 5:18 pm
    Permalink

    بالکل عثمان بزدار عمران خان نہی لگایا جس نے لگایا وہ عمران خان کا ساتھی ھیں ۔۔ اور وہ ساتھی نے اربوں روپیہ لگا کر ارکان پارليمينٹ پنجاب اسمبلی کے گھر گھر جاکر اپنا نجی جہاز استعمال کیا اور ہر ممبر پچاس کروڑ سے بھی زیادہ پہ خرید لیا۔۔ اب وہ ساتھی جو مشرف کے دور میں چینی ترین اور موجودہ حکومت میں گندم ترین اور چینی ترین دونوں اعزاز اپنے نام کردیا۔۔ اور پنجاب کا وزیر اعلی بھی اس ترین نے لگایا ۔۔۔ اور ملک اور عوام کا بیڑھ غرق کردیا۔۔ اب اصل وزیراعظم سپریم کورٹ سے نااہل جہانگير ترین ھیں ۔۔ اور فواد چوہدری کو حقیقت بھی معلوم ھیں ۔۔ اس لہے کہتے ھیں کہ بزدار کی ناکامی عمرن خان قصور وار نہی ۔۔۔ اور اس طرح خیبر پختونخواہ میں بھی ناکامی کا ذمہدار عمران خان نہی ۔۔ وزیر اور مشیر سب جہانگير ترین کے ہاتھوں میں ھیں ۔۔

  • 22/01/2020 at 8:03 pm
    Permalink

    بالکل سچ ۔۔ عمران خان کی اس میں غلطی نہی ۔۔ جہانگير ترین نے مشرف کے دور میں کروڑوں نہی چینی کی مصنوعی بحران پیدا کرکے اربوں چینی میں کمانے کے بعد اس تجربے کے ساتھ تبدیلی سرکار میں داخل ھوا۔۔ اور پنجاب کی حکومت بنای ۔۔ اور بزدار جہانگير ترین کا فیورٹ ھیں ۔۔ نہ کہ عمران خان کا۔۔۔ اب ایم کیو ایم کو ایزی لوڈ کرنا ھیں ۔۔ جہانگیر ترین نے جو لگایا سود سمیت وصول کی ۔۔ لیکن کس سے عوام سے ۔۔ اب چینی ترین کے بعد گندم ترین بھی بن گیا۔۔ جہانگیر ترین کی ذاتی جہاز کا استعمال اور ارکان پارلیمنٹ کی خریدو فروخت جہانگیر ترین کی ذمہ تھی ۔۔ لیکن افسوس اس بات پہ کہ عمران خان صاحب کو یہ سب کچھ معلوم ھوتے ہی چپ کا روزہ رکھنا۔۔ اور عوام کے امیدوں کی قتل عام کا ذمہدار کوی اور نہی عمران خان صاحب ھیں۔۔۔ لہذا غلطی عمران خان کی نہی محسن عمران خان کی ھیں ۔۔ اب ان لوگوں کی چمڑی اتارنا ھیں جس نے تبدیلی کے نام پہ ووٹ دیا

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *