جہانگیر ترین نے عمران خان پر بیس ارب روپے خرچ کیے: عارف حمید بھٹی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

سینئر صحافی عارف حمید بھٹی نے کہا ہے کہ جہانگیر ترین نے عمران خان پر بیس ارب روپے خرچ کیے۔ اب انہیں پارٹی میں پیچھے کیا جا رہا ہے۔ پرویز خٹک نے اہم عہدیداروں کے ہمراہ وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کی جس میں ان کا کہنا تھا کہ پارٹی میں اختلافات جہانگیر ترین پیدا کر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق عارف حمید بھٹی نے نجی ٹی وی چینل پر بتایا کہ پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیر ترین نے عمران خان پر قریباً بیس ارب روپے سے زائد خرچ کیے ہیں، اتحادیوں کو منانے والے بھی جہانگیر ترین ہی تھے۔ اںھوں نے بتایا کہ پاکستان تحریک انصاف میں کچھ ایسے لوگ بھی موجود ہیں جو کہ جہانگیر ترین کو ناکام کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ ان کے خلاف میڈیا پر ایک بہت بڑی مہم چلائی گئی۔ عبدالعلیم خان اور جہانگیر ترین نے الیکشن سے پہلے پارٹی پر بہت زیادہ پیسہ خرچ کیا تھا۔

عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ اب پرویز خٹک پارٹی میں آگے آنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ اس حوالے سے انھوں نے تین روز قبل وزیراعظم ہاؤس میں وزیراعظم عمران خان سے دو رکن قومی اسمبلی اورایک اعلیٰ بیوروکریٹ کے ہمراہ ایک ملاقات کی جس میں ان کا کہنا تھا کہ پارٹی میں جو بھی گڑبڑ چل رہی ہے اسکے پیچھے جہانگیر ترین ہیں۔ انھوں نے مزید بتایا کہ اس کے بعد جہانگیرترین ملک سے باہر چلے گئے اور واپس آکر انھوں نے وزیراعلیٰ خیبرپختونخواہ محمود خان سے ملاقات کی۔

واضع رہے کہ محمود خان کے حوالے سے صحافی عارف حمید بھٹی نے ہی انکشاف کیا تھا کہ ان کو وزیراعلیٰ بنانے والے پرویز خٹک ہی ہیں۔ اںھوں نے ایک انٹرویو میں بتایا تھا کہ پہلے یہ فیصلہ کیا گیا تھا کہ وزیراعلیٰ خیبرپختوںخواہ عاطف خان کو بنایا جائے گا، لیکن بعد میں عمران خان کو یہ پیغام دیا گیا کہ پرویز خٹک اپنے ساتھ پندرہ سے بیس ارکارن صوبائی اسمبلی کو ملا کر پارٹی سے نکلنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

اس کے بعد وزیراعظم عمران خان نے محمود خان کو وزیراعلیٰ کے پی کے بنا دیا تھا۔ اب عارف حمید بھٹی نے انکشاف کیا ہے کہ پارٹی میں جہانگیر ترین کو پیچھے کرنے والے اور کوئی نہیں بلکہ پرویز خٹک ہیں۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *