نواز شریف نے عملی طور پر مسلم لیگ کی قیادت پھر سے سنبھال لی؟

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

سابق وزیر اعظم نواز شریف لندن میں حسن نواز کے دفتر میں جاری رہنے والے کئی گھنٹے طویل مشاورتی اجلاس میں شرکت کے بعد گھر روانہ ہو گئے۔

حسن نواز کے دفتر میں گزشتہ کئی گھنٹے سے مسلم لیگ ن کا اہم اجلاس جاری تھا جس میں اتوار کو اے پی سی سے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے خطاب کے حوالے سے مشاورت کی گئی۔ اجلاس میں حسین نواز، حسن نواز، اسحاق ڈار، ناصر بٹ سمیت لندن میں موجود دیگر اہم لیگی رہنماؤں نے شرکت کی۔

اجلاس ختم ہونے کے بعد نواز شریف باہر آئے تو پاکستانی صحافیوں نے انہیں گھیر لیا اور ان سے سوالات پوچھے۔ ایک صحافی نے سوال پوچھا کہ ” حکومت آپ کی تقریر پر پابندی لگا رہی ہے ،اس پر آپ کیا کہیں گے؟” اس سوال پر میاں نواز شریف نے کوئی جواب نہیں دیا اور کہا ” آپ سے صبح بات کروں گا۔”

لندن میں اس اہم ترین اجلاس کی کوریج کرنے والے صحافی اظہر جاوید کے مطابق آج نواز شریف نے مسلم لیگ ن کی قیادت عملی طور پر سنبھال لی ہے اور وہ فرنٹ سیٹ پر آ گئے ہیں۔ مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف عملی طور پر معطل ہوئے ہیں اور انہیں کھڈے لائن لگا دیا گیا ہے۔

اظہر جاوید نے کہا کہ ن لیگ کے جو کارکن کشمکش کا شکار تھے انہیں ایک واضح پیغام چلا گیا ہے کہ اب نواز شریف کے ہی فیصلے چلیں گے اور ووٹ کو عزت دو کا نعرہ لگے گا۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •