کورونا کے بعد مردوں کے جنسی رویوں میں کیا تبدیلی آئی؟

کورونا وائرس کی وبا کی وجہ سے ہمارے رویوں میں بہت کچھ تبدیلیاں آئی ہیں اور اب معروف ماڈلز اور انفلوئنسرز نے مردوں کے جنسی رویوں میں درآنے والی تبدیلیوں کے متعلق حیران کن انکشاف کر دیا ہے۔ پلے بوائے ماڈلز، سوشل میڈیا انفلوئنسرز اور مقابلہ ہائے حسن جیتنے والی خواتین کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کی وبا کے بعد مردوں کے جنسی رویوں میں بہت تبدیلی آ چکی ہے۔ اب وہ ایسی خواتین کے ساتھ تعلق قائم کرنے کو ترجیح دیتے ہیں جنہوں نے کورونا ویکسین لگوا رکھی ہو۔ بیشتر مرد جنسی تعلق کے دوران فیس ماسک پہننے کو بھی ترجیح دینے لگے ہیں۔

ان خواتین نے بتایا کہ انہوں نے حال ہی میں جتنے مردوں کے ساتھ ڈیٹنگ کی، ان مردوں میں سے اکثر نے ان کے ساتھ ملاقات کے فوری بعد اپنے کورونا ٹیسٹ کرائے۔ انسٹاگرام ماڈل جوکیمپوس نے بتایا کہ ”میں گزشتہ دنوں ایک شخص کے ساتھ پہلی ڈیٹ پر گئی اور تمام ملاقات کے دوران وہ کورونا وائرس سے متعلق سوالات پوچھتا رہا، اس نے مجھ سے ویکسین لگوانے سے لے کر دیگر احتیاطی تدابیر تک ایسے سوالات پوچھے کہ میں نے وہیں فیصلہ کر لیا کہ اس سے دوسری ملاقات نہیں کروں گی۔ “پلے بوائے ماڈل وینوسا فریٹس نے بتایا کہ وہ ایک شخص کے ساتھ ڈیٹ پر گئی جس نے معیار بنا رکھا تھا کہ وہ صرف ایسی خاتون کے ساتھ ڈیٹ پر جائے گا جس نے ’فائزر‘ ویکسین لگوا رکھی ہو گی۔

Comments - User is solely responsible for his/her words