مہنگائی کی شرح 9 اعشاریہ ایک فیصد سے زیادہ ہوگئی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

پاکستان میں جاری معاشی بحران اور سخت حکومتی پالیسیوں کے باعث رواں مالی سال مہنگائی کی شرح 9 اعشاریہ ایک فیصد سے زیادہ ہو گئی ہے۔

سرکاری دستاویز کے مطابق رواں سال درآمدات میں کمی اوربرآمدات میں اضافہ ہوا، گزشتہ سال کی نسبت ترسیلات زرمیں 9 فیصد تک اضافہ ہوچکا ہے۔ رواں سال جاری کھاتوں کاخسارہ 11 ارب ڈالر سے زائد رہنے کا امکان ہے۔

چھوٹے صنعتی شعبے کی شرح نمو ٹارگٹ کے مطابق 8 اعشاریہ 2 فیصد رہی جبکہ ٹرانسپورٹ اور مواصلات کے شعبے میں شرح نمو 3 اعشاریہ 3 فیصد ریکارڈہ وئی۔ خدمات کے شعبے میں رواں مالی سال شرح نمو 4 اعشاریہ 7 فیصد رہی اور ہول سیل اور ریٹیل کے شعبے کی شرح نمو 7 اعشاریہ 8 فیصد کی بجائے تین اعشاریہ ایک فیصد رہی۔ مالیات اورانشورنس کے شعبے میں شرح نمو 5 اعشاریہ ایک فیصد رہی۔

سرکاری دستاویز کے مطابق رواں سال درآمدات میں کمی اور برآمدات میں اضافہ ہوا، گزشتہ سال کی نسبت ترسیلات زر میں 9 فیصد تک اضافہ ہو چکا ہے۔ رواں سال جاری کھاتوں کا خسارہ 11 ارب ڈالر سے زائد رہنے کا امکان ہے۔

image_pdfimage_print
Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •