جی ایس پی پلس: پاکستان میں میڈیا پر پابندیوں، انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور صحافیوں کے خلاف جرائم پر یورپی کمیشن کے تحفظات

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

یورپی کمیشن نے یورپی پارلیمنٹ میں پیش کی گئی پاکستان کے دو سالہ جی ایس پی پلس کارکردگی رپورٹ میں سول سوسائٹی کے لیے محدود حالات، میڈیا کی آزادی میں کمی اور انسانی حقوق کےکارکنوں اور صحافیوں کےخلاف ہونے والے جرائم پر اقدامات نہ ہونے پر شدید تحفظات کا اظہار کیا ہے۔

پاکستان کو برآمدات میں دیئے گئے جی ایس پی پلس درجے میں توسیع کے لیے پاکستان نے اقوام متحدہ کے کنونشن کے مطابق عملدرآمد پر عزم کا اعادہ کیا ہے۔

یورپی یونین نے جی ایس پی پلس پر جاری رپورٹ میں کہا ہے کہ پاکستان میں قانون سازی کے حوالے سے بہتری آئی ہے تاہم ان قوانین پر عملدرآمد کے لیے اداروں کی استعداد اور انفورسمنٹ کمزور ہے۔ پاکستان کو 2014 میں جی ایس پی پلس کا درجہ دیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق نئی حکومت 2018میں اقتدار میں آئی اور معاشی ترقی، روزگار کی فراہمی اور کرپشن اور ماحولیاتی تبدیلی ایجنڈے کا حصہ تھے۔ حکومت نے جی ایس پی پلس کو معاشی اور تجارتی ترقی کےلیے جی ایس پی پلس کو برقرار رکھنے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *