مطیع اللہ جان صحافی نہیں، بلیک میلر ہے، اغوا کا ڈرامہ رچایا: جنرل (ر) امجد شعیب

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

دفاعی تجزیہ کار لیفٹنٹ جنرل (ر) امجد شعیب نے کہا ہے کہ مطیع اللہ جان صحافی نہیں بلکہ بلیک میلر ہپے۔ اس نے اپنے اغوا کا ڈرامہ رچایا تاکہ سپریم کورٹ میں توہین عدالت کے مقدمے سے توجہ ہٹائی جا سکے۔

ایک ڈجیٹل نیوز چینل پر حارث شاہد سے بات کرتے ہوئے لیفٹنٹ جنرل (ر) امجد شعیب نے کہا کہ حامد میر سمیت مطیع  اللہ جان سے ہمدردی رکھنے تمام افراد کو اس معاملے میں اپنی رائے پر نظر ثانی کرنی چاہیے۔

لیفٹنٹ جنرل (ر) امجد شعیب نے سوال اٹھایا کہ قومی سلامتی کے اداروں کو، یہ جانتے ہوئے بھی کہ اگلے روز مطیع اللہ جان کو سپریم کورٹ میں پیش ہونا تھا، اٹھانے کی کیا ضرورت تھی۔ اس جعلی اغوا سے صرف مطیع اللہ جان کو فائدہ ہوا کیونکہ اسے عدالت عظمیٰ کے ججوں کی ہمدردی حاصل ہو گئی۔

لیفٹنٹ جنرل (ر) امجد شعیب نے مطیع اللہ جان سے یک جہتی کا اظہار کرنے پر بلاول بھٹو اور ایم این اے محسن داوڑ کو تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ مطیع اللہ جان کا بطور صحافی کوئی مقام نہیں۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

One thought on “مطیع اللہ جان صحافی نہیں، بلیک میلر ہے، اغوا کا ڈرامہ رچایا: جنرل (ر) امجد شعیب

  • 30/07/2020 at 6:00 am
    Permalink

    اچھا یہ جنرل صاحب کہنا چاہتے ہیں کہ ادارے کسی بھی شخص کو اٹھا لینے کا حق رکھتے ہیں اور وہ اٹھائے گئے شخص سے اس کا شیڈول بھی پوچھتے ہیں کہ بھائی آپ کے کل کے کیا پروگرام ہیں..

    Reply

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *