گرینیڈ کی شکل والی مشتبہ ڈیوائس سیکس ٹوائے نکلا

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

 

A grenade-shaped object is seen next to a tube of lubricant and a USB cord in place handout image

Polizei Hauzenberg
پولیس کی جانب سے ریلیز کی گئی تصاویر

جرمنی کی ریاست بویریا میں ایک مشتبہ ڈیوائس کی تحقیقات کے لیے جب دھماکہ خیز مواد کے ماہرین کو طلب کیا گیا تو معلوم ہوا کہ وہ ایک سیکس ٹوائے یا جنسی کھلونا تھا۔

حکام کا کہنا ہے کہ گرینیڈ کی شکل والی یہ ڈیوائس پیر کو ایک جنگل میں پلاسٹک کے بیگ میں پڑی ملی تھی جس کے ساتھ دیگر اشیا بھی تھیں۔

ایک خاتون کی جاگنگ کے دوران اس پر نظر پڑی اور انھوں نے پولیس کو اطلاع دی جس پر دھماکہ خیز مواد سے نمٹنے کے خصوصی یونٹ کو طلب کیا گیا۔

مقامی پولیس کے مطابق ماہرین کو جلد ہی اندازہ ہوگیا کہ یہ ایک ہنگامی صورتحال نہیں تھی۔

حکام نے ایک پریس ریلیز میں کہا ہے کہ ’بیگ میں موجود چیزوں کا معائنہ کرنے کے بعد آفسران نے جلد ہی یہ پتہ لگا لیا کہ یہ گرینیڈ کی شکل کی لیکن ربڑ کی ڈیوائس ہے۔‘

’بیگ کو خالی کیا گیا تو اس میں سے لُوبریکینٹ کی ایک ٹیوب، ایک ٹِن میں دو غیر استعمال شدہ کونڈوم اور ایک یو ایس بی کیبل ملی۔

حکام کا کہنا ہے کہ آن لائن سرچ کرنے پر انھوں نے اس بات کی مزید تصدیق بھی کر لی کہ یہ ایک گرینیڈ کی شکل والا سیکس ٹوائے تھا۔ حکام کے مطابق یہ چیزیں اس مقام پر کچھ عرصے سے پڑی تھیں اور انھیں اب پھینک دیا گیا ہے۔

پولیس کے بیان میں کہا گیا ہے کہ ’یہ تو صرف تصور ہی کیا جا سکتا ہے کہ یہ چیزیں اس مقام تک کیسے پہنچی ہوں گی‘۔ جرمنی میں دوسری عالمی جنگ کے دوران نہ پھٹنے والا گولہ بارود آج بھی برآمد ہو جاتا ہے جسے ناکارہ بنانے کے لیے بڑے پیمانے پر انخلا کرنا پڑتا ہے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

بی بی سی

بی بی سی اور 'ہم سب' کے درمیان باہمی اشتراک کے معاہدے کے تحت بی بی سی کے مضامین 'ہم سب' پر شائع کیے جاتے ہیں۔

british-broadcasting-corp has 18859 posts and counting.See all posts by british-broadcasting-corp