سلمان خان نےکورونا مریضوں کی امداد کے لئے بننے والی فلم رادھے میں ‘No Kiss’ پالیسی توڑ دی

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

بالی ووڈ اداکار سلمان خان نے اپنی خود اختیار کردہ  ‘No Kiss’ پالیسی توڑ کر فلم رادھے میں اداکارہ دشا پٹانی کے ساتھ آن اسکرین کسنگ سین kissing scene کیا ہے۔

سلمان خان کی بے چینی سے انتظار کی جانے والی فلم رادھے: یور موسٹ وانٹیڈ بھائی (Radhe: Your Most Wanted Bhai)’  کا ٹریلر رلیز ہو چکا ہے۔ اداکار کے مداحوں میں فلم کا ٹریلر خوب پسند کیا جا رہا ہے تاہم اس بات پر بھی خوب بحث ہو رہی ہے کہ سلمان خان نے آن اسکرین کسنگ سین kissing scene کیا ہے۔

دراصل ابھی تک سلمان خان کو آن اسکرین کس Kiss کرتے نہیں دیکھا گیا تھا لیکن رادھے میں پہلی مرتبہ ایسا ہوتا دکھائی دے رہا ہے۔ ٹریلر کے ایک سین میں سلمان دشا پٹانی کو کس کرتے نظر آ رہے ہیں جسے دیکھنے کے بعد اداکار کے مداح حیران رہ گئے کیونکہ اس سے پہلے کبھی سلمان خان نے پردے پر کسی اداکارہ کو Lip Lock کس نہیں کیا ہے۔

اس نیم تاریک سین میں جہاں دشا کھڑی ہیں، وہیں سلمان خان آتے ہیں اور دشا کو کس کرتے نظر آرہے ہیں۔

بھارت میں کورونا بحران سے افرا فری مچی ہوئی ہے۔ بیڈ، دوائیں اور آکسیجن کی کمی سے ہر جانب کہرام بپا ہے۔ اس دوران سلمان خان (Salman Khan) کی فلم (Radhe : Your Most Wanted Bhai) نے بڑا اعلان کیا ہے۔ کورونا بحران سے متاثرہ لوگوں کی مدد میں فلم کی ساری کمائی لگانے کا فیصلہ سلمان خان اور فلمس زی انٹرپرائز نے کیا ہے۔

فلم ساز کے مطابق ملک بے حد مشکل حالات سے گزر رہا ہے اور ایک ذمے دار کارپوریٹ ادارے کے طور پر، فلمس زی انٹرپرائز کووڈ 19 کے خلاف لڑائی میں سبھی ضروری قدم اٹھانے کے لئے پرعزم ہے۔ ہم نہ صرف اپنی آڈینس کو غیر معمولی انٹرٹینمنٹ ​​فراہم کرنے میں یقین رکھتے ہیں بلکہ ملک بھر میں بامقصد اور مرکوز کوششیں کرنے کے لئے بھی آگے بڑھ رہے ہیں۔ ہمیں امید ہے کہ فلم رادھے کی رلیز سے ہونے والی آمدنی کورونا وبا سے متاثر لوگوں کی موثر مدد ہو سکے گی۔

دونوں کمپنیوں نے اس وبا سے متاثر روزانہ مزدوری کرنے والے مزدوروں کے اہل خانہ کو مدد فراہم کرنے کا بھی عزم کیا ہے۔ سلمان خان (Salman Khan) فلمس زی انٹرپرائز فلم کے ترجمان نے کہا کہ ‘ہمیں اس عظیم اقدام کا حصہ بننے پر خوشی ہے تاکہ ہم کووڈ 19 کے خلاف ملک کی لڑائی میں تھوڑا سا حصہ ڈال سکیں گے’۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *