4 سالہ بچی مبینہ طور پر قاری کے ہاتھوں ریپ: مانسہرہ میں عوامی احتجاج

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

مانسہرہ مین نوجوان لڑکوں نے احتجاج کیا ہے کہ ایک چار سالہ بچی کو ریپ کرنے والا ملزم گرفتار نہیں ہو سکا۔ 4 سالہ بچی کا گزشتہ روز ریپ کیا گیا تھا جس کا الزام مقامی قاری عبدالستار پر ہے۔ طالبعلموں کا الزام ہے کہ قاری کو اہل محلہ نے موقع سے فرار کردیا تھا۔ جب کہ اب تک اسکی گرفتاری عمل میں نہیں لائی جا سکی جس پر احتجاج کیا جا رہا ہے۔

دوسری طرف اطلاعات ہیں کہ مانسہرہ میجر ایوب روڈ پر 4 سالہ بچی سے جنسی زیادتی کیس میں نامزد ملزم نے گرفتاری دے دی، 4 سالہ بچی کو میجر ایوب روڈ پر جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا تھا۔ ایک گھر کے باہر سی سی ٹی وی کیمرے کی فوٹیج پر ملزم کو نامزد کیا گیا تھا۔

نامزد ملزم عبدالستار نے صحت جرم سے انکار کرتے ہوئے کہا کہ میں اس وقت یہاں نہیں تھا۔ نامزد ملزم کے بھائیوں کا موقف ہے کہ ملزم اس وقت بینک میں تھا، جہاں کی فوٹیج موجود ہے۔ گھر واپسی پر کسی نے ہوٹل پر تصویر بنا کر اپلوڈ کر دی۔ ڈی این اے ٹیسٹ کے بعد اصل حقائق سامنے آئیں گے۔ نامزد ملزم عبدالستار نے تھانہ سٹی پولیس کو گرفتاری دے دی ہے۔

Comments - User is solely responsible for his/her words

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •