عورتوں کو بھی ایک دوسرے کو سپورٹ کرنے کی ضرورت

فیمینزم کیا ہے؟ کیا یہ صرف خواتین کے حقوق کے مساوات کی حمایت کرتا ہے؟ کیا یہ صرف مردوں کی طرف سے خواتین کے استحصال کے خلاف نعرے بلند کرنا ہے؟ کیا یہ صرف آپنی شرٹ پر ”فمینسٹ“ چپھوا کے پہن لینا ہے؟ کیا یہ صرف اس معاشرے کے بارے میں بولنا ہے جس میں مرد غالب ہیں؟ میرے لئے صرف یہ نہیں ہے،کچھ دن پہلے میں نے بس سٹاپ پر کھڑے ہوئے لڑکیوں کے ایک گروپ کی گفتگو اتفاقاً سنی جو قریب ہی کھڑی لڑکی کی ”سیاہ جلد“ اور اوپر سے ہلکا رنگ پہننے پر اس کا مذاق اڑا رہی تھیں۔ ان کی اس حرکت نے حقیقتاً مجھے سوچ میں ڈال دیا۔ کیا فیمنیزم کا مطلب صرف مردوں سے عورتوں کے حقوق کی حفاظت کرنا ہے؟

Read more

خودکشی اور ہمارے معاشرے کا المیہ

خودکشی، جب انسان خود کو مار لیتا ہے، ختم کر لیتا ہے۔ ہمارے لیے یہ بات اب بالکل بھی نئی نہیں رہی کیوں کی اب تو ہر دن ہی ایسی خبریں آ رہی ہوتی ہیں۔ کبھی ہم نے سوچا ہے کہ خودکشی کرنے والے کو سب سے آسان کام اور تمام مشکلات کا حل خود…

Read more

مرد، اللہ تعالیٰ کی خوبصورت مخلوق

ہمیشہ کہا جاتا ہے کہ عورتوں کی زندگی بہت مشکل ہوتی ہے، ایک عورت ہونا آسان کام نہیں۔ ان کا ساری زندگی اپنا گھر تک نہیں ہوتا چاہے وہ ماں باپ کا گھر ہو یا ان کے شوہر کا، اور انہیں ان کی تمام زندگی بہت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے، مگر اللہ نے تو انہیں رحمت قرار دیا ہے۔ لیکن جہاں تک میرا خیال ہے ہمارے معاشرے کے لوگوں کو اچھا لگتا ہے عورتوں پر ایک بوجھ یا مصیبت کا ٹیگ لگا دینا نہ کہ ان کو اللہ کی رحمت سمجھنا۔ چلیں میں اس بات سے اتفاق کرتی ہوں کہ عورتوں کی زندگی آسان نہیں ہوتی، ان کو بس ایک ذمہ داری ہی سمجھا جاتا ہے۔ مگر کیا ہم نے کبھی اس لحاظ سے مردوں کے بارے میں سوچا ہے۔

Read more

فیمنزم ایک حقیقت یا محض عورت کا ہتھیار

فیمنزم ایک ایسا تصور ہے جس کے مطابق مرد اور عورت دونوں برابر انسانی حقوق، بنیادی سہولیات، اقتصادی اور سماجی حقوق کے مستحق ہیں۔ مرد ذات ’پر تنقید کرنا اور ان کو صفحہ ہستی سے ختم کرنے کے بارے میں سوچنا فیمنزم نہیں بلکہ اپنے آپ کو مضبوط بنانے کے بارے میں سوچنا اور اس…

Read more

ریپ: کپڑے مسئلہ ہیں تو برقع والی کا کیا قصور تھا؟

ہمارے معاشرے میں دن بہ دن بڑھتے جنسی زیادتیوں کے کیس جن میں سے اکثر چھوٹی بچیوں کے ساتھ ہوتے ہیں، کا سن کر میں اکثر سوچتی ہوں کہ کسی چیز کی خواہش انسان کو کہاں سے کہاں پہنچا دیتی ہے، اس کا اندازہ اسے خود بھی نہیں ہوتا۔ یہ خواہش جب حد سے بڑھ جاتی ہے تو ہوس کی صورت اختیار کر لیتی ہے۔ انسان کو صحیح اور غلط میں فرق کرنا ہی بھول جاتا ہے، اسے بس اپنے نفس کی تسکین چاہیے ہوتی ہے۔ یہ ہوس اکثر نظر سے شروع ہو کر عزت پر ختم ہوتی ہے۔

Read more