پاکستان ایران ترکی اتحاد وقت کی ضرورت

پاکستان اور ایران کے تعلقات کی تاریخ پاکستان بننے کے فورًا بعد سے شروع ہوتی ہے۔ اس کی بنیاد اس وقت رکھی گئی جب ایران نے سب سے پہلے پاکستان کو تسلیم کیا اور پاکستان کے لئے بیرونی دنیا اور خارجہ پالیسی کا دروازہ کھلا۔ شاہ ایران، رضا شاہ پہلوی کو یہ اعزاز حاصل ہے…

Read more

غلامی در غلامی

شیخ سعدی بیان کرتے ہیں کچھ عرصہ میرا قیام دمشق میں رہا۔ ایک دفعہ اہلِ دمشق سے تنگ آ کر فلسطین کے بیابانِ قدس میں ترکِ دنیا کر کے بیٹھ رہا۔ وہاں کے عیسائیوں نے مجھے قید کر لیا اور یہودی قیدیوں کے ساتھ طرابلس کی خندق کھودنے پر لگا دیا۔ مدت بعد حلب کے ایک رئیس آدمی کا وہاں سے گزر ہوا جو میرا جاننے والا تھا۔ اس نے مجھے پوچھا کے یہ تو نے اپنی کیا حالت بنا رکھی ہے۔ میں نے کہا کچھ نہ پوچھ انسانوں سے تنگ آ کر پہاڑوں اور جنگلوں کی طرف بھاگا کے عبادت کی یکسوئی میسر آئے اور دیکھ لے میرا حال تیرے سامنے ہے۔رئیس کو میری حالت پر رحم آیا اور اور اس نے دس دینار اد ا کر کے فرنگیوں سے مجھے آزادی دلائی۔ وہ مجھے اپنے ساتھ حلب لے آیا اور سو دینار مہر پر اپنی بیٹی کے ساتھ میری شادی کر دی۔

Read more

پاک ایران نہیں صرف ایران گیس پائپ لائن

ایران پاکستان گیس پائپ لائن کا آئڈیا ایک پاکستانی انجینئر ملک آفتاب احمد خان کی طرف سے پیش کیا گیا تھا۔ اس معاہدے پر دونوں ملکوں کی طرف سے ابتدائی گفت شنید اور دستخط 1995 میں کیے گئے تھے۔ جس کے مطابق ایران کے جنوبی پارس گیس فیلڈ سے کراچی تک گیس پائپ لائن بچھائی جانا تھی۔ بعد میں ایران کی تجویز پر اس میں بھارت کو بھی شامل کر لیا گیا اور 1999 میں ایران اور بھارت کے درمیان بھی ابتدائی معاہدہ طے پایا۔

Read more

وہ ایک لڑکی: چھوٹی سوچ سے ڈری نہیں اور پاؤں کی موچ سے رکی نہیں

وہ بظاہر ایک شرمیلی سادہ مزاج مگر حساس لڑکی تھی جو پولینڈ میں پیدا ہوئی۔ دوسروں کی نظر میں بظاہرایک معمولی واقعہ نے اس کی زندگی میں انقلاب برپا کردیا۔ جس کے بعد اس نے یہ ثابت کر کے دکھایا کہ اپنی خوبیوں میں اضافہ کرنا اور اپنی ذات کا ارتقا ہی بہترین انتقام ہے۔…

Read more

سٹنٹ گروتھ اور پاکستان کا مستقبل

میں نے پہلی بار سٹنٹ گروتھ کا لفظ جناب وزیر اعظم کی ایک تقریر میں سنا تھا جس میں آپ کہہ رہے تھے کہ پاکستان کے پینتالیس فیصد بچے اچھی خوراک نہ ملنے کی وجہ سے سنٹٹ گروتھ یعنی نا مناسب نشوونما کا شکار ہیں۔ یہ الفاظ سن کر اور اس سچائی پر غور کرکے…

Read more

یقین کے معجزے

ایک پرانی روایت ہے کہ ایک چرواہا مدتوں بعد جمعہ کی نماز پڑھنے مسجد چلا گیا۔ خطیب خطبہ دے رہا تھا جس کا موضوع بسم اللہ کے فضائل تھا۔ خطیب صاحب نے ایک موقع پر کہا کہ اگر آپ یقین کے ساتھ بسم اللہ پڑھو گے تو پانی پر بھی چل سکو گے۔ چرواہا جمعہ…

Read more