اکسیویں صدی اور بچوں کی شامت

سنتے آئے تھے کہ اگلے دور میں خوب ترقی ہوگی مگر ایسی ترقی تو خدا کسی کو بھی نہ کروائے کہ جس دور میں معصوم پھولوں کی شامت آئی ہو اور جدید ٹیکنالوجی کا تمام تر استعمال ان شگوفوں پر ہی ہو ا ہو۔ بچوں کے ساتھ بہیمانہ رویوں کی مثالیں بیسویں صدی کے آخری…

Read more

سقوط ڈھاکہ اور الطاف فاطمہ

ادیب اور معاشرہ لازم و ملزم ہیں۔ اسلوب اور کہانی سماج میں رہتے ہوئے اسی کے تانے بانے سے جوڑے جاتے ہیں مگر الطاف فاطمہ کا چلتا مسافر پڑھ کر حیرانی ہوتی ہے۔ مصنفہ نے بنگلہ دیش میں قدم رکھے بغیر وہاں کی سیاست اور سماج کو اس قدر کھول کر اور واضح بیان کیا…

Read more

ساہیوال، علمی ادبی و ثقافتی کانفرنس اور نوجوان محققین کی حوصلہ افزائی

تاریخی شہر ساہیوال میں منعقد ہونے والی دو روزہ کانفرنس نے دُنیائے ادب کے ستاروں کو جُھرمٹ کی شکل میں اس سرزمین پر اکٹھا کر دیا۔ مُلک بھر سے آنے والے دانشوروں کے مقالات نے عالمگیر یت کے اثرات کی ناصر ف نشاندہی کی بلکہ شعرو ادب کے ثقافتی ورثے کے اُن مختلف پہلووؤں کو بھی سامنے لایا گیا جہاں گلوبلائزیشن نے بھرپور اثرات چھوڑے تھے۔ ناصرف یہ کہ ساہیوال سے بلکہ اردگرد کے شہروں سے بھی لوگوں نے کانفرنس میں بھرپور شرکت کی۔ دو دن آرٹس کونسل کا بڑا ہال شرکاء سے بھرا رہا۔

Read more

حوا کی بیٹی، تلاش رزق اور تماش بین

سانپ کے زہر، بچھو کے ڈنک اور کتے کے جبڑے سے تو شاید کوئی معصوم بچی بچ سکتی ہو مگر ان تینوں سے بد تر انسان نما درندوں سے پرندوں کی طرح اڑان بھرتی رزق حلال کی تلاش میں روزانہ 800کلو میٹر سفر کرنے والی ہر طرح کے فقرے، بھوکی نظریں، لہجے برداشت کر کے…

Read more

گھر سے بھاگنے والی ہر لڑکی قصور وار نہیں ہوتی

کلچر، سسٹم ،یا معاشرہ بہت بڑی وجہ ہیں کسی رونما ہونے والے واقعے یا تحریک کے۔ جب کوئی سانحہ ہو جاتا ہے تو معاشرہ کے نام نہاد علم بردار لٹھ لے کر اس کے پیچھے پڑ جاتے ہیں کچھ لوگ براہ راست سخت تنقید کرتے ہیں اُن لڑکیوں پر جو والدین کا گھر چھوڑ کر…

Read more

قوم لوط اور معصوم بچے

میرا پھول میرا شہزادہ کملا گیا تھا۔ وجہ سمجھ میں نہ آتی تھی اس کا ہنسنا کھیلنا موقوف ہو گیا تھا۔ ہر وقت روتا بسورتا۔ بھی کچھ دن پہلے تک وہ کھلے ہوئے گلاب کی مانند کبھی ایک اور کبھی دوسرے کے ہاتھوں میں ہمکتا تھا۔ پسے ہوئے آلو، کھیر، کیلا شوق سے کھاتا فیڈر…

Read more