بھائیوں نے بیس سال اپنی بہن کو قید میں رکھا

کل شب ٹی وی پہ منظر دیکھا کہ دو بھائیوں نے بیس سال اپنی بہن کو قید میں رکھا ۔اُس وقت روح کانپ جانا تو معمولی سی بات تھی زمین و آسماں کانپتے ہوئے معلوم ہوئے ! سوچتا ہوں نائلہ زندہ کیسے رہی ؟ اور کیوں رہی ؟اس کو موت کیوں نہ آئی؟ اس نے…

Read more

ہمارے ہاں ظلم کے خلاف ویسا کیوں نہیں ہوتا؟

نیوزی لینڈ میں سینکڑوں لوگوں کے ساتھ ہوا ظلم دنیا نے اپنی آنکھوں سے دیکھا، وہ منظر جب میری آنکھوں کے سامنے آیا تو مجھ جیسے کمزور دل آدمی ہوش و حواس کھو بیٹھے، ذہن یہ ماننے سے مکمل انکار کیے ہوئے تھا کہ ایسا ظلم کبھی نہیں ہو سکتا لیکن ظلم کرنے والوں نے…

Read more

کیا پاکستان کا جوابی کارروائی کا فیصلہ درست ہے؟

دو عالمی جنگیں ہوئی اور اُن جنگوں سے جو نقصان ہوا اُس نقصان کو پورا کرنے کے لیے انسانی کوششوں کو صدیاں گزر گئیں لیکن وہ نقصان نہ پورا ہوا۔ برسوں انسانی سوچ و فکر کے بعد یہ نتیجہ حاصل کیا گیا کہ کسی مسئلے کا حل جنگ نہیں اور جنگ سے ہونے والی تباہی و بربادی کا ازالہ بھی ممکن نہیں۔ وہی قومیں جن کے درمیان دو عالمی جنگیں ہوئی جن کا وجود شاید دنیا میں کچھ دن اور باقی نہ رہنے والا تھا، انہیں قوموں نے اس نتیجے کو لے کر اپنے وجود کو باقی ہی نہیں رکھا بلکہ دنیا کو ہر پہلو سے سب سے مضبوط ہو کر دکھایا۔ کیا پاکستان اور ہندوستان کو اس حقیقت سے سبق نہیں سیکھنا چاہیے؟

Read more

پِیے جاتے ہیں ”واں“ حسرت، لہو انساں ہی انساں کا!

کوئی مجھے بتاؤ کہ اس دیس میں کیا اب کوئی ایسا دن گزرتا ہے جس میں کسی انسان کا لہو نہ بہایا جاتا ہو؟ جس میں کسی انسان کو بے دردی سے مارا نہ جاتا ہو؟ جس میں آہیں اور سسکیاں نہ ہوتی ہوں؟ جس میں آہ و فغاں نہ ہوتی ہو، کوئی مجھے کیا بتائے گا؟ میری آنکھیں نہیں جو میں دیکھ نہ سکوں، میرے کان نہیں جو میں سن نہ سکوں، میرے دیکھنے اور سننے میں تو کوئی دن اب اس دیس میں ایسا نہیں گزرتا جس میں انسان ہی انسانوں کا لہو نہ پیتا ہو۔ ایسے دردناک ماحول میں باقی کے لوگ کیوں نہیں بلکتے، باقی کے لوگوں کو درد کیوں نہیں محسوس ہوتا۔ لوگوں کے سامنے لوگوں کو بے دردی سے مار دیا جاتا ہے لیکن لوگ چپ رہتے ہیں۔ آخر کیوں؟ کیا اس کی یہی وجہ ہے کہ لوگ چپ رہتے ہیں کہ کہیں انہیں بھی نہ مار دیا جائے، کہیں ان کا بھی لہو نہ پی لیا جائے؟ نہیں نہیں ایسا ہر گزر بھی نہیں ہے۔ اب معاملہ تو یہاں تک آن پہنچ چکا ہے۔

Read more

عمران و واصف اب نہ رہے!

عمران اور واصف یونیورسٹی کے طالبِ علم تھے۔ سردی کا موسم کیا شروع ہوا کہ زمیں چاند کی طرح چمکنے لگی۔ ساری رات برف پورے آب و تاب سے زمیں پر پڑتی رہی پھر جب صبح سویرے سورج کی کرنیں اِس زمیں پڑتی ہیں تو اِس زمیں کی چمک سورج کی چمک سے بڑھ جاتی…

Read more

ایٹم بم اور اسلام

یہ اس وقت کی بات ہے جب نیوکلئیر ویپن ( ایٹم بم) بنایا گیا۔
نعمان اپنے استاذ مولانا عمران سے پوچھتا ہے۔
استاذ آپ کو پتا ہے؟ امریکہ میں غیر مسلموں (گوروں ) نے ایٹم بم بنا دیا ہے۔

مولانا صاحب نعمان سے فرماتے ہیں۔
بڑے نکمے اور نا لائق بچے ہو نعمان آپ۔

نعمان : استاذ یہ جملہ آپ تو میری تعریف میں ہر بار ارشاد فرما دیتے ہیں۔ میں نے جو پوچھا اس کے بارے کچھ بتانے کی زحمت فرمائیں گے آپ؟

مولانا صاحب :نعمان بیٹا تو اس میں کون سی حیرانگی والی بات ہے۔ قرآن پاک میں دین و دنیا کا ہر علم موجود ہے۔ تو ان غیر مسلموں نے قرآن پاک کا مطالعہ کر کے ایٹم بم بنا لیا تو اس میں کون سی بڑی بات ہے۔ بلکہ آپ کو تو فخر کرنا چاہیے کہ وہ غیر مسلم ہمارے احسان مند ہیں۔

Read more

کچھ اہم باتیں

ہمیں خدا سے اور خدا کے آخری رسولؐ سے محبت ہے، خدا اور اس کے آخری رسولؐ سے عشق ہے۔ خدا کرے کہ ہمیں خدا اور اس کے رسولؐ کے ساتھ سچا عشق نصیب ہو۔ یہ خدا گواہ ہے کہ یہ محبت، یہ عشق ہم ان سے کتنا کرتے ہیں؟ خدا کے حکموں کا ذرا…

Read more

کچی آبادی میں بسنے والا ایک شخص

میرے پاس کیا تھا؟ ایک کچا، ٹوٹا سا گھر تھا۔ ایسا گھر جس کے اندر سے دن میں سورج صاف دکھائی دیتا تھا اور رات میں چاند بھی ایسے دکھتا تھا جیسے وہ اس گھر کو ہی چاندنی دے رہا ہو۔ ہمیں باقیوں کے مقابلے میں یہ آسانی میسر تھی کہ اگر کہیں موسم کا…

Read more