ریلوے کا وزیر اور نواز شریف کی بہادری

شیخ رشید ریلوے کے وزیر ہیں، مگر ساتھ ساتھ وہ وزیراعظم کے سیاسی مفادات کو بھی سنبھالے ہوئے ہیں اور دلچسپ بات یہ ہے کہ ریلوے کو سنبھالتے ہیں تو وزارت عظمیٰ ڈوبتی ہے اور اگر وزیراعظم کے سیاسی مفادات کو سنبھالتے ہیں تو ریلوے ڈوبتی ہے۔ موصوف روزانہ اپنے سوتیلے بالوں کو کالا کولا…

Read more

آستانہ بنی گالہ شریف

ہم ایک ماڈرن ملنگ کی قیادت میں ”ماڈل لنگر“ کی طرف بڑھ چکے ہیں، چند دِنوں تک ہم ”ماڈل دھمال پارک“ میں گھنگرو باندھے ناچتے نظر آئیں گے، اس تبدیلی کے لئے ہم نے بہت ”پاپڑ بیلے“ ہیں، بہت چلہ کشی کی ہے، بہت سے وظائف پڑھے ہیں، بہت سے تعویزات گھول گھول کے پئے…

Read more

عمران خان کے دھرنا ناچ سے فضل الرحمن کے “قال اللہ و قال رسول” تک

وہ بھی کیا دن تھے، جب پنڈی اور اسلام آباد کے شہری سورج غروب ہوتے ہی ”دھرنہ گاہ“ کی طرف چل پڑتے تھے۔ دھرنا نہ ہوا…… عمران خان کا سجایا ہوا میلہ ہو گیا۔ اس میلے میں ”میل بھی ہوتے تھے اور وچھوڑے“ بھی۔ بعض کو مقررہ جگہ کی نشانی بھول جاتی تو بعض کو…

Read more

”شوباز“ کے لئے واپسی کی دُعائیں

بتایا گیا، یہ ایک ایسے شخص ہیں،جن کے گھر میں بجلی تک نہیں ہے، یہ سیاسی قابلیت یا نوحہ سننے کے بعد تو سوال بنتا تھا کہ ایک ایسا خاندان جو مجلس شوریٰ کا رکن، ایم پی اے اور تحصیل ناظم کے عہدے پر رہا ہو…… اگر اپنے گاؤں میں بجلی نہیں لگوا سکا تو…

Read more

کشمیر میں مودی اور اسلام آباد میں ڈینگی

وزیراعظم عمران خان امریکہ کے ”کامیاب“ دورے کے بعد وطن واپس تشریف لا چکے ہیں۔ ائرپورٹ سے جلسہ گاہ تک آتے آتے وہ خاصے تھکے تھکے دکھائی دیے۔ ان کی چال سے لگ رہا تھا جیسے وہ اس بار ”ورلڈکپ“ ہار کر آئے ہیں۔ انہوں نے چند منٹ تک اپنے دیوانوں کے ساتھ خطاب کیا…

Read more

عوام ’’ٹویٹ‘‘ نہیں ’’ٹربیوٹ‘‘ چاہتے ہیں

وزیراعظم کے ’’خوشخبری‘‘ والے ٹویٹ نے ہمارے دوست ’’طرم خان‘‘ کی خوشیوں میں بے پناہ اضافہ کر دیا ہے۔ گزشتہ روز سے ایک ٹانگ پر اچھل اچھل کے پشتو میں نجانے کون کون سے ’’سندرے‘‘ گاتا پھرتا ہے۔ پہلے اس کے پس منظر سے آگاہ ہونا اپنا ’’مسلکی‘‘ فریضہ سمجھتی ہے۔ اس سے پہلے کہ…

Read more

شیخ رشید بھی ’’جہادی‘‘ ہیں

شیخ رشید جیسے لوگوں کا دم غنیمت ہے۔ ہمیں شیخ رشید کے جہادی جذبے کو سراہنا چاہئے۔ انہوں نے ٹیلی ویژن پر جس طرح اچھل اچھل کے جہاد کے حوالے سے اپنے دِلی جذبات کا اظہار کیا ہے، اس سے قوم کو امید رکھنی چاہئے کہ آئندہ چند دِنوں تک ممکن ہے، شیخ رشید وگ…

Read more

استاد طالب حسین درد کی یاد میں

تھل کے صحراؤں میں اڑتی ہوئی ریت درختوں کے پتوں سے لپٹ لپٹ کے رو رہی ہے۔ جھنگ کی آنکھوں سے آنسوؤں کی جھڑی لگی ہوئی ہے۔ اس کے گاوں خانوآنہ کے گھروں میں چولہوں کی راکھ درد کی تصویر بنی ہوئی ہے۔ ہر طرف سے ایک ہی آواز فریاد بن کے سنائی دے رہی…

Read more