ہمارا عذاب

گزشتہ دنوں ایک خبر نظر سے گزری کہ دادو کے گاؤں میں ایک کم عمر لڑکی کو جرگہ نے کاروکاری کے الزام میں سنگسار کر دیا۔ اس کا جرم یہ تھا کہ اس کے والدین نے اس کا رشتہ دینے سے انکار کر دیا تھا۔ کسی نے یہ بھی کہا کہ یہ خبر درست نہیں…

Read more

خانہ خدا اور میں

سفر مدینہ کے بعد میری یہ تحریر اس سفر کی روداد ہے جو ہر مسلمان کا خواب ہوتا ہے۔ سفر مکہ، عمرہ کی ادائیگی کے لئے اللہ کے گھر کی حاضری۔ مسجد نبوی میں نماز جمعہ کے بعد ہمیں مکہ کے لئے روانہ ہونا تھا۔ مسجد سے ہوٹل پہنچ کر ہم نے آ گے سفر…

Read more

دو ٹکے کی عورت

پچھلے دنوں فیس بک پر ایک پوسٹ دیکھی جس میں تحریر تھا کوئی عورت دو ٹکے کی نہیں ہوتی وہ ماں، بہن، بیوی اور بیٹی ہوتی ہے وغیرہ وغیرہ۔ مختلف لوگوں نے اس بات کی تائید کی مجھے اس سے اختلاف نہیں لیکن کچھ سوال تھے جو میرے ذہن میں آ ئے۔ ایک بات کی…

Read more

بچے اور ہوم ورک

ہوم ورک کے تصور سے ہی اکثر ایک بیزاری اور بوجھ محسوس ہوتا ہے۔ زمانہ طالب علمی میں بھی اور آ ج بھی جب کہ مجھے خود بچوں کو ٹیوشن پڑھاتے قریباً 25 سال ہونے کو آئے ہیں اس سے اختلاف ہی رہا کیوں کہ جو نام نہاد ہوم ورک دیا جاتا ہے چاہے وہ…

Read more

سفر مدینہ

لوگ مختلف سفر نامے لکھتے ہیں شہروں اور ملکوں کی روداد وہاں کے قصے اور گزرے دنوں کی کہانیاں۔ گزشتہ دنوں اللہ کے فضل اور عطا سے عمرہ کی سعادت نصیب ہوئی۔ مکہ مدینہ ایک خالق دوجہاں کا شہر دوسرا اس کے محبوب کا۔ جہاں جانے کی خواہش شاید ہی کوئی محروم ہو جو نہ…

Read more

چنے ہوئے لوگ

چنے ہوئے لوگ

چنے ہوئے لوگ کون؟ چند دن پہلے مری ہر دلعزیز دوسث صوفیہ سے بات کے دوران چنے ہوئے لوگ کا ذکر نکلا۔ چنے ہوئے لوگ یہ وہ تحریر ہے جو صبا نے لکھی تھی آ پ سوچ رہے ہوں گے یہ کون صباتو صبا وہ ہیں جن سے مری براہ راست کوئی دوستی نہ تھی بلکہ وہ تو صرف ایک مہمان تھیں جنھوں نے اپنی بھابھی (میری پیاری دوست فرح) کے ساتھ مری شادی میں شرکت کی تھی اور اس تقریب کی بہت سی یادداشتوں کو اپنے ذہن میں محفوظ کرلیا تھا۔ سچ بتاؤں تو وہ تحریر میں نے پڑھی نہیں تھی لیکن شاید کسی سے سنا تھا کہ اس میں ذکر تھا ایک دلہن کا جو اپنی کمزور وجود کو سنبھالے دھیرے دھیرے اسٹیج کی طرف بڑھ رہی تھی۔

Read more