”انسانی کیڑے“

رات اپنی انتہاء کو چھو رہی تھی، ہر طرف ایسے سناٹا تھا جیسے سارا شہر سوگیا ہو۔ ہاں مگرپھر بھی بازار میں صرف ایک دکان کھلی تھی اور ہم دوست اسی دکان کی بائیں جانب ایک اور بند دکان کے سامنے بہترین ماربلز سے بنے چبوترے پہ بیٹھے گپیں مار رہے تھے۔ اسی دوران ایک…

Read more

لپ سٹک گردی

” نہ کوئی فنکشن ہو اور نہ کسی حوالے سے کوئی خاص دن، تو یونیورسٹی میں آتے ہوئے لڑکیاں عموماًلپ سٹک نہیں لگاتیں اور شوخ لپ سٹک تو بالکل بھی نہیں، ہاں اگر کوئی لڑکی باقاعدگی سے لپ سٹک لگانا شروع کردے تو وہ اس بات کی نشانی ہوتی ہے کہ یا تو اس کی…

Read more

شرعی سنسرشپ

ایک دفعہ ہم دوستوں میں بحث چھڑ گئی کہ سنیما میں فلم دیکھی جائے تو کیا اس کا گناہ اپنے گھر بیٹھے لیپ ٹاپ یا موبائل پر وہی فلم دیکھنے سے زیادہ ہوگا یا برابر؟ لیکن کسی بھی گناہ کی شدت ماپنا انسانی قوت کے بس کا کام نہیں اس لئے ایک لمبی بحث کے…

Read more

جدید سنیما کا پشاور میں پہلا قدم

”فی الحال تو ہم نے ایک ہی سکرین لگائی ہے اگر اس کا رسپانس اچھا رہا تو مستقبل میں ہم مزید بھی سکرینز لگا سکتے ہیں کیونکہ ہمارے پاس جگہ بھی ہے اور ریسورسز بھی“ یہ پشاور کے پہلے 3 D سنیما کے ٹکٹ کاؤنٹر پر بیٹھے انتظامیہ کے اہلکار نے ہمارے ایک سوال کے…

Read more

”میرے پاس تم ہو“ ایک مکتب فکر

خلیل الرحمن قمر صاحب کے ڈرامے ”میرے پاس تم ہو“ کے چند ہی اقساط دیکھ چکا ہوں اور انشاءاللہ آخری قسط تک دیکھنے کی نیت رکھتا ہوں۔ میں کافی عرصے سے قمر صاحب کے مکالمے کا مداح ہوں اور میں ہی کیا جنھوں نے بھی ان کا ڈرامہ دیکھا تو واہ واہ کرتا ہی رہ…

Read more