مناسک حج کا آغاز ہونے جارہا ہے

الحمد اللہ حج 1440 ہجری کا آغاز ہونے جارہا ہے جس کا طریقہ یعنی مناسک حج درج ذیل ہیں۔ 8ذوالحجہ ( 9۔ 7۔ 2019 ) پہلا دن: ایک کا م کرنا ہے ( میدانِ عرفات جانا ہے ) ۔ 1۔ جانے سے 3۔ 4 گھنٹے پہلے احرام باندھ لیں۔ 2۔ اپنے کمرے ہی میں احرام…

Read more

نوجوان وکیل رہنما ملک دلاور حسین کا بہیمانہ قتل

یہ خبر مورخہ 14۔ 7۔ 2019 کوتقریباً نصف شب کے بعد ملی کہ ہمارے انتہائی قابل ِ احترام ساتھی اور نوجوان وکیل رہنما ملک دلاور حسین اپنے گھر پرایک قاتلانہ حملے کے دوران شدید زخمی ہوگئے ہیں اور اِس وقت ملک دلاور حسین ایڈووکیٹ کو ہنگامی حالت میں لاہور کے میو ہسپتال منتقل کیا جا…

Read more

محکمہ قانون و پارلیمانی امور کی آسامیاں اور طریقہ کار

مورخہ 7 جولائی کو قومی روزنامہ اخبارات میں صوبائی محکمہ قانون و پارلیمانی امور نے اپنی آسامیاں پر ُ کرنے کے لئے ہمیشہ کی طرح بذریعہ پنجاب پبلک سروس کمیشن ایک اشتہار دیا ہے۔ اِس اشتہار کے مطابق جن آسامیوں کا اعلان کیا گیاہے اُن میں اسسٹنٹ ڈسٹرکٹ اٹارنی، ڈپٹی ڈائریکٹر (ایڈوائزری ونگ) ، ڈپٹی…

Read more

وکلا جدوجہد پر ”جسٹس آف پیس“ کے اختیارات کی بحالی

فروری کے تقریباً وسط میں سپریم کورٹ کی کمیٹی جس کی سربراہی چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ کررہے تھے کی طرف سے ”جوڈیشنل پالیسی 2019“ متعارف کروائی گئی جس میں چند ترامیم شامل کی گئی تھیں جن کے تحت صرف چار دنوں میں قتل کے مقدمے کا فیصلہ، ضمانت بذریعہ تھانیدار (ایس ایچ او) ، جانشینی سرٹیفکیٹ بذریعہ نادرا اور ضابطہ فوجداری کی دفعات 22۔ Aاور 22۔ Bکے تحت دائرہونے والی پٹیشن کا خاتمہ یعنی جسٹس آف پیس کے اختیارات کو ختم کیا جانا شامل تھا۔

Read more

عدلیہ پر بوجھ، نئی جوڈیشل پالیسی اور وکلا کا احتجاج

چند ماہ قبل چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ نے عہدہ سنبھالتے ہی یہ اعلان کیا تھاکہ وہ عدلیہ پر بوجھ ختم کرنے کے لئے اپنے دور میں کوئی غیر ضروری ”ازخود نوٹس“ نہیں لیں گے اورچھوٹی مقدمہ بازی کا خاتمہ کرنا چاہے گے تو اب تک غیر ضروری ”ازخود نوٹس“ نہیں لیا…

Read more

پاکستان سٹیزن پورٹل: آگاہی اور داد رسی!

پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ عوامی داد رسی کے لئے ایک ”موبائل ایپ“ متعارف کروائی گئی ہے، جس کا باقاعدہ افتتاح وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان جناب عمران خان نے مورخہ 29 اکتوبر کو کیا تھا۔ اِس ”موبائل ایپ“ کا نام ”پاکستان سٹیزن پورٹل“ رکھا گیا ہے جو آج کل استعمال ہونے والے جدید موبائل فون میں ہی چل سکتی ہے اور ہر خاص و عام گھر بیٹھے بیٹھے اِس جدید سہولت سے مستفید ہو سکتا ہے اور اپنی شکایات و آرا ارباب اختیار تک پہنچا سکتا ہے۔ ویسے یہ پورٹل وزیر اعظم پاکستان کی زیر نگرانی ہے اور اِسے کنٹرول بھی وزیر اعظم سیکرٹریٹ سے کیا جا رہا ہے۔ دوسرے لفظوں ہم ”پاکستان سٹیزن پورٹل“ کو ”وزیر اعظم شکایت سیل“ بھی کہہ سکتے ہیں۔

اب دو ماہ گزر نے کے بعد اِس پورٹل کے اعداد و شمار جاری کیے گئے ہیں، جن کے مطابق اب تک تقریباً 6 لاکھ افراد اِس پورٹل میں رجسٹرڈ ہوئے ہیں۔ انھوں نے کل 2,29,667 شکایات درج کروائی ہیں۔ اِن شکایات درج کروانے والوں میں بیرون ممالک میں مقیم پاکستانی بھی شامل ہیں۔ اعداد و شمار کے مطابق پنجاب سے کل 105,794 میں سے، سندھ سے 31,698، خیبر پختوان خوا سے 26,790، بلوچستان سے 2,524، وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سے 61,644، گلگت بلتستان سے 184 اور آزاد کشمیر سے 1172 شکایات موصول ہوئی ہیں۔ ان میں سے پنجاب کی 40,411، سندھ کی 2,063، خیبر پختوان خوا کی 12,771، بلوچستان کی 316 اور اسلام آباد کی 35,950 حل کی گئی ہیں۔ جب کہ اِسی پورٹل کے ذریعے 47,579 آرا بھی موصول ہوئی ہیں۔ دوسری طرف انھی اعداد و شمار کے مطابق 24,076 افراد نے اِس پورٹل پر اعتماد کا اظہار کیا ہے۔

Read more