میر صاحب، پہلے سے نہ سوچا تها انجام محبت کا؟

غالبا 2009 کا زمانہ تھا جب ہم کوئٹے کی ایک بڑی یونیورسٹی کے چھوٹے سے کیمپس میں نام نہاد تحقیقی مقالہ لکھنے کی ناکام کوشش کررہے تھے۔ تبھی ایک دوپہر کینٹین میں جب ہم بیف بریانی جسے ہم گائے بریانی کہتے تھے اور بقول ہمارے ایک دوست کے درباروں میں اس طرح کی بریانی مفت…

Read more

ہوئے پڑھ کہ ہم جو رسوا

کسی سیانے کا قول ہے کہ معاشرے میں آگاہی اور شعور اگر اجتماعی سطح پر ہو تو معاشرہ ترقی کی نئی منزلیں طے کرتا ہوا آگے بڑھتا ہے اور اہمیت حاصل کرتا جاتا ہے۔ مگر یہی شعور محض انفرادی سطح پر ہو اور معاشرہ زوال پذیر ہو تو یہ شعور و آگہی اس فرد کے لئے کسی عذاب سے کم نھیں۔ بقول احمد فراز
عیسی نہ بن کہ اس کا مقدر صلیب ہے
انجیل آگاہی کے ورق عمر بھر نہ کھول

جبکہ حضرت جون ایلیا اس رمز اورتکلیف کو کچھ یوں بیان کرتے ہیں۔
ان کتابوں نے بڑا ظلم کیا ہے مجھ پر
ان میں اک رمز ہے جس رمز کا مارا ہوا ذہن

Read more