منگوُ رے منگُو نیا قانون آیا کیا؟

عمران خان کہا کرتے تھے ہالینڈ کا وزیراعظم سائیکل پر دفتر جاتا ہے تو اِسے خیال آیا کہ جب نیا پاکستان بنے گا تو پاکستان میں بھی ایسا ہی ہو گا۔ بھلا باؤلے کو کسی نے کیوں نہ سمجھایا کہ میاں ہالینڈ میں تو سائیکل امیر غریب ہر کسی کی سواری ہے۔ پاکستان میں تو…

Read more

کشمیر کی آواز

جالب نے کہا تھا حسیں آنکھوں مُدھر گیتوں کی دیش کو کھو کر میں ہوں حیراں وہ ذکرِ وادی کشمیر کرتے ہیں علاجِ غم نہیں کرتے مگر تقریر کرتے ہیں مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نافذ ہوئے کتنا وقت گزر گیا اگر آپ جاننا چاہیں تو سرینا ہوٹل کے سامنے لگی گھڑی آپ کو ہر پل…

Read more

بس نام رہے گا اللہ کا

سُنا تھا مڈل کلاس کے پاؤں کیچڑ میں ہوتے ہیں اور نگاہیں آسمان پر۔ میرے کچھ دوستوں نے اِس محاورے کی سچائی پر میرا ایمان پختہ کر دیا ہے۔ چونکہ اُن کے گھر کا چولہا باآسانی جل رہا ہے تو اُن کے نزدیک ملک میں نہ مہنگائی ہوئی نہ کوئی بحران ہے۔ یہ سب کیا…

Read more

کیا مغرب اور مسلمان حالتِ جنگ میں ہیں؟

نیوزی لینڈ میں سفید قوم پرست اور سفید نسل کی برتری کے قائل ایک انتہا پسند نے جب دہشتگردی کرتے ہوئے معصوم نمازیوں کو شہید کیا تو ہم میں سے اکثریت اِس پر دِل سے دُکھی ہوئی۔ اِس کے ساتھ کچھ پیغام وائرل ہوئے جن میں مغرب کے روئیے پر شکایات کا اظہار کیا گیا۔ ان پیغامات میں باور کرایا گیا کہ مغرب اُس شخص کو انتہاپسند نہیں مانے گا اور ذہنی مریض قرار دے گا وغیرہ۔ کچھ دوستوں کو یہ شکوہ بھی تھا کہ مسلم دہشتگردی کا لفظ استعمال کیا جاتا ہے تو کیا سفید فام دہشتگردی اور عیسائی دہشتگردی کا لفظ بھی استعمال کیا جائے گا؟

دُنیا نے دیکھا کہ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم نے اُسے انتہاپسند اور دہشتگرد قرار دیا۔ سفید فام نسل پرستی کو اُنہوں نے پوری دنیا کے لیے ایک مسئلہ قرار دے ڈالا۔ یہ ہمارے اعتراضات کے جواب کے لیے کافی تھا پھر بھی وہ رکی نہیں۔ آگے بڑھی مسلمانوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے سر پر دوپٹہ اوڑھا، کالا ماتمی لباس پہنا اور مقتولین کے وارثوں سے تعزیت کے لیے پہنچی۔

Read more