امام بارگاہ کربلا گامے شاہ

یہ مشہور و معروف امام بارگاہ بیرون بھاٹی دروازہ نزد دربار حضرت علی ہجویری واقع ہے۔ کربلا گامے شاہ کا شمار لاہور کی قدیم ترین بلکہ اولین امام بارگاہ میں ہوتا ہے۔ یہ امام بارگاہ بابا سید غلام علی شاہ المعروف گامے شاہ سے منسوب ہے۔ گامے شاہ کے حالات زندگی زیادہ تر زبانی روایات…

Read more

مزار بابا بلھے شاہ

سید محمد عبداللہ المعروف بابا بلھے شاہ کا مزار قصور میں واقع ہے۔ بابا بلھے شاہ کی ابتدائی زندگی کے متلعق کچھ خاص معلومات دستیاب نہیں۔ آپ کی جائے پیدائش کے متعلق بھی اختلاف ہے۔ مولا بخش کشتہ، ڈاکٹر لاجونتی، ڈاکٹر فقیر محمد، مفتی غلام سرور، جے آر پوری، ٹی آر شنگاری، ڈاکٹر انیس ناگی…

Read more

پاکستان کب آزاد ہوا؟

پاکستان کی مظلوم نئی نسل کو ہمیشہ یہی ذہن نشین کرایا جاتا ہے کہ اُن کا پیارا ملک 14 اگست کو آزاد ہوا تھا۔ یہ کہانی اُن کے والدین بھی سناتے ہیں، اُن کی درسی کتب بھی اور، ٹیلی وِژن پر بیٹھے بابے یعنی دانشور یا 14 اگست 1947 ء کے چشم دید گواہ (جن…

Read more

ساغر صدیقی کی قبر کا احوال

ساغر صدیقی کی قبر میانی صاحب قبرستان لاہور میں واقع ہے۔ ساغر صدیقی کے ایک دوست سید م سلیم یزدانی نے ساغر سے بہت مشکل سے اس کی کی ابتدائی زندگی کے متعلق کچھ معلومات حاصل کی تھی۔ محمد عبداللہ قریشی مدیر ادبی دنیا نے ساغر کے آخری مجموعہ کلام ”مقتل گل“ میں یزدانی صاحب…

Read more

لاہور کی تاریخی مسجد صالح کمبوہ

مسجد صالح کمبوہ اندرون موچی دروازہ لاہور میں واقع ہے۔ محمد صالح لاہوری کمبووؤں کے ایک ممتاز فرد اور سلسلہ سہروردیہ کے بزرگ ہیں۔ آپ کا درجہ بحیثیت مصنف بھی بہت بلند ہے۔ آپ فارسی کے معروف لکھاری شیخ عنایت اللہ کے رشتہ دار ہیں، سید لطیف و ڈاکٹر عبداللہ چغتائی نے آپ کو ان…

Read more

سعادت حسن منٹو کی زندگی اور قبر

سعادت حسن منٹو کی قبر میانی صاحب قبرستان لاہور میں واقع ہے۔سعادت حسن منٹو 11 مئی 1912 ء کو سمبرالہ، ضلع لدھیانہ میں پیدا ہوئے۔ منٹو کے والد غلام حسن حکومت پنجاب کے محکمہ عدل میں منصف تھے اور منٹو کی والدہ سردار بیگم نرم مزاج اور محبت کرنے والی خاتون تھیں۔ منٹو اپنے والد سے زیادہ اپنی والدہ سے قربت محسوس کرتے تھے۔ منٹو کے سوانح نگار ابو سعید قریشی کی کتاب سے معلوم ہوتا ہے کہ منٹو بچپن میں بے حد شرارتی تھے۔ منٹو کو رسمی تعلیم سے کوئی خاص دلچسپی نہیں تھی اور منٹو نے تعلیمی میدان میں کوئی خاص کامیابی بھی حاصل نہیں کی۔

Read more

مقبرہ مولانا محمد حسین آزاد

مولانا محمد حسین آزاد کی قبر امام بارگاہ کربلا گامے شاہ لاہور کے اندر ہے۔ مولانا محمد حسین آزاد کے روز پیدائش اور سن پیدائش میں اختلاف ہے۔ کچھ لوگوں نے آپ کا سن پیدائش 5 مئی 1827 ء لکھا ہے جبکہ زیادہ تر سوانح نگاروں نے آپ کا سن پیدائش 10 جون 1830 ء…

Read more

گلابی باغ و مقبرہ دائی انگہ

گلابی باغ و دائی انگہ سے منسوب یہ مقبرہ شالامار باغ لاہور کے قریب ہی واقع ہے۔ گلابی باغ جو کہ ماضی میں کافی وسیع تھا اب اس کا فقط ایک دروازہ موجود ہے۔ کنہیا لال ہندی لکھتے ہیں ”وسعت میں یہ باغ بہت بڑا تھا۔ چار طرف چار ڈیوڑھیاں عالیشان بنی ہوئی تھیں اور…

Read more

سانحہ جلیانوالہ باغ کی دستاویزات کی نمائش

13 اپریل 1919 ء کو امرتسر میں عام عوام کا قتل عام کیا گیا اس واقعے کو سانحہ جلیانوالہ باغ کہا جاتا ہے۔ جلیانوالہ باغ میں کوئی خاص درخت یا پودے نہیں تھے بلکہ یہ ایک خالی قطعہ زمین ہے جو کہ مختلف لوگوں کی مشترکہ ملکیت تھا، چاروں طرف مکانات ہیں، ایک شکستہ سمادھی…

Read more

علامہ عنایت اللہ مشرقی کے مزار کا احوال

مزار علامہ عنایت اللہ مشرقی علامہ عنایت اللہ مشرقی کی قبر خاکسار تحریک کے مرکزی دفتر، اچھرہ ذیلدار روڈ پر واقع ہے۔ علامہ عنایت اللہ مشرقی 1888 ء میں امرتسر میں پیدا ہوئے۔ علامہ کے بزرگوں میں سے لال محمد اورنگ زیب کے عہد میں مسلمان ہوئے۔ علامہ کے بزرگ مغل حکومت کے علاوہ سکھ…

Read more