عوام خان کہتا ہے کہ سانوں کیہ

بابا عبیر ابو ذری مرحوم کہا کرتے تھے ؎ پلس نوں آکھاں رشوت خور تے فیدہ کیہ پچھوں کردا پھراں ٹکور تے فیدہ کیہ اور آج فقیر بے زری کہتا ہے کہ ’’سانوں کیہ‘‘ جب عوام خان کی سنی نہیں جاتی، تو وہ بھی کہتا ہے کہ ’’سانوں کیہ‘‘ ہوائیں مخالف ہو جاتی ہیں، فیصلے…

Read more

رنگوں کی سیاست اور آصف زرداری کا سرخ کارڈ

زمانہ قدیم میں حصول اقتدار کےلئے جنگ ہوتی تھی۔ انسان مہذب ہوا تو حکومت بنانے کے لئے الیکشن اور سیاسی مقابلے کارجحان فروغ پایا۔ جنگ میں فریق اپنے پرچم لہراتے تھے، الیکشن میں بھی ہر سیاسی جماعت اپنے مخصوص رنگوں کے پرچم کے ساتھ مہم چلاتی ہے۔ ان دنوں پرچموں اور رنگوں کی بہار ہے۔…

Read more

لسّی نوش

میں صدیوں کا بیٹا ہوں، نہ موہنجوڈرو کا پروہت لڑاکا اور جارح تھا نہ تضادستان کا باسی، پروہت کے پاس لڑنے کے لئے گھوڑے نہیں تھے دودھ اور لسی پینے کے لئے گائے اور بھینس ضرور موجود تھی۔ میں صدیوں سے لسی نوش ہوں، آرام سکون اور امن کی زندگی گزارنا چاہتا ہوں کوئی مجھ…

Read more

تھیٹر خاموش کیوں ہے؟

دنیا میں جب سے تھیٹر بنا ہے اس کی پہچان شور شرابے، اونچے ڈائیلاگ، شوخ و شنگ لباس اور بلند آہنگ لہجے رہے ہیں۔ یونانی ڈرامہ نویس ہوں یا رومن کردار، شیکسپیئر کے المیہ ڈرامے ہوں یا طربیہ ڈرامے، سب کی قدر مشترک اونچی آوازیں رہی ہیں۔ اس زمانے میں لائوڈاسپیکر نہیں ہوتے تھے مگر…

Read more

نصرت بھٹو بنام کلثوم نواز

نصرت بھٹو بنام کلثوم نواز باوفا منزل مکافات نگر۔ ساتواں آسمان میری بیمار بہن کلثوم! صحت یابی کے لئے دعاؤں کے ساتھ یہ خط اس لئے لکھ رہی ہوں کہ تمہاری حالت دیکھ کر مجھے 70اور 80کی دہائی کے وہ دن یاد آ گئے جب میں بھی تمہاری طرح مشکلات، بیماریوں اور مصائب کا شکار…

Read more

دو ماہ بعد …..

پورے دو ماہ پہلے کی بات ہے مجھے اچانک شدید جھٹکا لگا، ہوش و حواس جاتے رہے، یادداشت کھو گئی، مجھے محسوس ہوا کہ میں خلاء اور زمینی فضا کے درمیان کہیں معلق ہوں، اس سارے عرصے میں زیادہ تر تو غشی طاری رہی مگر کبھی کبھی تھوڑا سا ہوش آتا تو نیم وا آنکھوں…

Read more

پہاڑ اور چیونٹی

حضرت اقبال بڑے تھے اس لئے پہاڑ اور گلہری لکھی، میں چھوٹا ہوں اس لئے پہاڑ اور چیونٹی لکھ رہا ہوں۔ میرا پہاڑ بڑا اور میری چیونٹی چھوٹی ہے، میرا پہاڑ بہادر اور میری چیونٹی بزدل ہے، میرا پہاڑ 70سال سے ڈٹا ہوا ہے چیونٹی لاکھ صدائیں دیتی ہے مگر پہاڑ پر کوئی اثر نہیں…

Read more

عمران آ رہا ہے؟

گو تبدیلی کی ہوا دیرسے چلی ہے مگر اب چل پڑی ہے انتخابی گھوڑے پرانے اصطبلوں سےرسّے تڑاکر بنی گالہ کی سبز چرا گاہ کی طرف سرپٹ دوڑ رہے ہیں۔ فضا مترنم ہے۔ چوہدری فواد جہلمی نے تو خود ہما کو عمران خان کے سر پربیٹھے ہوئے دیکھا ہے۔ وہ رنگ برنگا ایرانی سیمرغ، جو…

Read more