لمحہ فکریہ

آج دوپہر کے وقت ایک راستے سے گزرتے ہوئے نظرجب دو نوجوانوں ( اُنکی اوسط عمر چودہ سال کے قریب ہو سکتی ہے ) پر پڑی جو نہر میں ایک مہینے سے کھڑے پانی، جسمیں قریب گھروں کے رہائشی گندگی اور غلاظت پھینکتے ہیں، وہاں سے اپنی روزی تلاش کرکے ایک بڑے تھیلے میں ڈال…

Read more

ہڑتال اور غریب کا روزینہ

دنیا کو دیکھنے کے لئے ہمارے ملک میں، چند شہروں اور اسٹریٹس کے علاوہ، ہر ایک اسٹریٹ کو چند لمحوں کے لئے قریب سے دیکھا جائے تو پوری دنیا اور اس کی ہر ایک رنگ نظر آجاتی ہے۔ پشاور میں پیر کے روز سے، جوکہ آج بروز منگل بھی جاری ہے، نان بائیوں نے ہڑتال…

Read more

قصہ ایک پریشان سیاح کا

چند سال پہلے آسٹریا کے ایک سیاح سے بوقت ناشتہ اُس وقت بات شروع ہوئی جب وہ ہوٹل والے کو یہ بتا نہیں سکتا تھا کہ وہ ناشتے میں کیا کیا لینا چاہتا ہے اور ہوٹل والا اسے بتا نہیں سکتا کہ اُس کے پاس ناشتے میں کیا کیا آئٹم ملتے ہیں۔ میں نے کاونٹر…

Read more

چترال میں مہم کہ استاد اپنا بچہ گورنمنٹ اسکول میں پڑھائے

تعلیم سب کا بنیادی اور آئینی حق ہے۔ اگر تعلیم معیاری اور ساتھ مفت بھی ہو تو وہ کون ہو سکتا ہے جو اِس بہتریں پیکج سے فائدہ نہ اُٹھا لے۔ دُنیا میں شاید کوئی ایسے والدین ہوسکتے ہیں جو اپنے بچوں کے لئے اچھا اور معیاری تعلیم نہیں چاہتے ہوں۔ گو کہ پانچ سال…

Read more