منٹو کے افسانے ”ہتک“ کا ردِ تشکیلی مطالعہ

سعادت حسن منٹو کا افسانہ ”ہتک“ ناصرف منٹو بلکہ اردو ادب کے چند بہترین افسانوں میں سے ایک ہے۔ منٹو کے بارے میں عام طور پر جو خیال پایا جاتاہے وہ یہ ہے کہ منٹو کے افسانوں کے کردار نہ نوری ہوتے نہ ناری بلکہ خالص خاکی ہوتے ہیں۔ منٹو ایک ماہر نفسیات دان کی…

Read more

بابل کا برج اور سرائیکی صوبہ

تورات میں ایک واقعہ مرقوم ہے کہ طوفان کے نوح کے چند نسلوں بعد کچھ لوگوں نے سلطنتِ بابل میں ایک برج بنانے کا قصد کیا۔ ان کا ارادہ یہ تھا کہ اس برج کو آسمان تک بلند کیا جائے۔ خدا تعالیٰ کو یہ باغیانہ کوشش پسند نہ آئی۔ سو خدا تعالیٰ نے انہیں اس کے باغیانہ کوشش سے باز رکھنے کے لیے ان کی زبانوں میں اختلاف ڈال دیا۔ یوں تھوڑے عرصے بعد زبانوں کے اختلاف کے باعث یہ لوگ ایک دوسرے سے لڑتے جھگڑتے اس جگہ سے منتشر ہو گئے۔ اس واقعہ کو تاریخ اور ادب کی کتابوں میں برج ِ بابل کے نام سے منسوب کر رکھا ہے۔

Read more

خون آشام کارپوریشنز اور زومبی صارفین

ہالی ووڈ فلموں میں دو فکشن بڑے عرصے سے تواتر کے ساتھ پیش کیے جارہے ہیں۔ ایک خون چوسنے والے ڈریکولاز اور ایسی دوسری مخلوقات جو عام لوگوں کا خون پیتے ہیں اور زندہ رہتے ہیں اور دوسرا تصور زومبیز کا جس ایسے انسان دکھائے جاتے ہیں جو بظاہر تو زندہ ہیں لیکن ان میں…

Read more

بہت جلد دنیا ”میر ا جسم میری مرضی“ کی منزل پہ ہوگی

 یہ مسلمہ حقیقت ہے روٹی، کپڑا اور مکان ہی انسانی زندگی کا بنیادی محرک اور مقصد رہے ہیں۔ انسان اپنی ان بنیادی ضرورتوں کے حصول کے جو طریقہ کار اپنا تاہے اس کے مطابق اخلاقی قوائد وضع کرتا رہاہے۔ انسانی زندگی میں جیسے جیسے معاشی اور اقتصادی ذرائع تبدیل ہوتے رہے ویسے ویسے انسان کے اخلاق اور معاشرتی آداب بھی تبدیل ہوتے رہے ہیں۔ یعنی انسان جب کھانے، پہننے اور رہائش کے نت نئے طریقے ایجاد کرتا رہا ہے۔ تو پھر ا ن کے مطابق نت نئے آداب اور اخلاق بھی ترتیب دیتا رہاہے۔ انسان کی معاشی ضروریات کے لیے جدوجہد ہی اسے جنگلی سے خانہ بدوش، خانہ بدوش سے دیہاتی، دیہاتی سے شہری، اور پھر شہری سے گلوبل سیٹزن بنا تی آئی ہیں۔

Read more

کلامِ فیض میں تجسیم کاری (Personification)

شاعری محض جذبات کے اظہار کا نام نہیں بلکہ جذبات کے لطیف پیرائے میں اظہارکا نام ہے ۔ دوسرے لفظوں میں کہیں تو شاعری سے مراد ایسا کلام ہے جس میں جذبات ، نظریات اور احساسات کا اظہار اس طرح سے کیا جائے کہ پڑھنے والے کوتحریر سپاٹ ، ثقیل اور بے مزہ محسوس نہ…

Read more