صحرا تھر میں چنکارا ہرن کو بچانے کی ضرورت

بھارومل امرانی تھرپارکر دنیا کی سبز ریگستانی زون میں سے ایک ہے، جس میں منفرد اور خوبصورت جغرافیائی، زمین کی تزئین، ثقافت، روایات، پودے اور حیوانات پائی جاتی ہے، اسی وجہ سے تھرپارکرکو اوپن ایئرمیوزم سے منسوب کرنے کے ساتھ پاکستان کے پانچ اہم ماحولیاتی ایکوسسٹم میں شامل کیا جاتا ہے۔ ماحولیات کے مایرین نے…

Read more

موسمی تبدیلی کے اثرات میں صحرا تھر کی بھٹکتی زندگی

تھرپارکر کا تصورآنے سے ہی ریت کی زندگی ذہن میں آ جاتی ہے، جس کے زندہ رہنے کے سارے ذریعے ریت کے ٹیلوں پے بارش کی رم جھم سے اپنا دم لیتے ہیں، اگر بارش نہیں ہوتی تو صحرا تھر کے سماجی، معاشی، ثقافتی اور ماحولیاتی رنگ روپ بے رنگ ہوکر بکھر جاتے ہیں۔ صحرا…

Read more

صحرائے تھر کی زبان اور لوک ادب

انسان اپنے وجود سے لے کرلاکھوں سال ارتقائی سفر طے کرکے اپنی موجودہ منزل پے پہنچا ہے ارتقائی سفر کے دوران اندرونی بیرونی کیفیت کا طریقہ اظہار، فکر، رہن سہن اور جسمانی بناوٹ میں بیشمار تبدیلیاں آئی ہیں۔ انسان کی سفری کہانی میں کبھی تاریخ، کبھی روایات، کبھی سائنسی نقطہ نظرسے کچھ اصول بناکراس کی روشنی میں تحقیق ہوتی رہی ہے، نہ کبھی انسانی سفر رکا ہے، نہ کبھی تحقیق کا عمل بند ہواہے۔ انسانی کہانی پہ تحقیق کا سائنسی عمل علم بشریات جسم، آثارقدیمہ، زبان اور ثقافت جیسے چارمرکبات پہ مشتمل ہے۔

ضلع تھر پارکر میں یہ چاروں مرکبات اپنی انفرادیت اور کثرت سے ملتے ہیں۔ صحرائے تھر کا خطہ تہذیبی، ثقافتی اور تاریخی حوالے سے منفرد رہا ہے، تھر کی زبان اور رہن سہن سے لے کر رسم رواج تک زندگی منفرد اور سادی ہے۔ تپتی ہوئی ریت اورجلتی ہوئی دھوپ میں ویرانی کا روپ دکھائی دینے والا ریگستان برسات کی حسین رت میں قدرت کا عظیم شاھکار بن جاتا ہے۔ ریگستان جہاں قدرتی وسائل سے مالا مال ہے، وہاں شاعری وموسیقی میں بھی درجا کمال کے روحانی سکون کا سبب ہے۔

Read more