عورت ذات کے تضادات

ہمارے ہاں ہمیشہ عورت کو مظلوم دکھایا جاتا ہے، کوئی ڈرامہ کوئی فلم کوئی سوپ اس وقت تک کامیاب نہیں ہو سکتا جب تک اس میں موجود بھولی بھالی ہیروئین کو ہر قسط میں کم از کم دو تین بار ذلیل کرنے، نیچا دکھانے، طعنے دینے کی کوشش نہ کی گئی ہو۔ خدا جانے لوگ…

Read more

جو مہنگائی سے بچ نکلنے، ڈینگی سے ماریں گے؟

یہ ذکر ہے 11۔ 2010 کا جب ڈینگی مچھر نے پنجاب بھر میں عموماً اور لاہور میں خصوصاً تباہی مچا رکھی تھی۔ تب 25,000 سے زائد افراد اس بیماری کا شکار ہوئے جن میں سے 350 افراد جان کی بازی ہار گئے۔ اس وقت کے وزیر اعلیٰ شہباز شریف صاحب نے اس معاملے کو انتہائی…

Read more

ہنگامہ ہے کیوں برپا؟

سربراہ تحریک انصاف جناب عمران خان صاحب نے گزشتہ برس وزیراعظم کا حلف اٹھاتے ہوئے مختلف شعبوں میں اصلاحات اور اکھاڑ پچھاڑ بارے چند وعدے کیے تھے۔ اصلاحات اور تبدیلوں کے یہ تقریباً تین درجن کے قریب وعدے تھے جن میں پولیس اصلاحات اور فوری انصاف کی فراہمی سر فہرست تھے۔ وزیراعظم صاحب نے جہاں پولیس میں بنیادی تبدیلوں کے خواب دکھائے وہیں اپنے اسٹار ناصر درانی کی تعریفوں کے پل باندھتے بھی نظر آئے۔

Read more

بابا جی آپ کی داستان سرائے اجڑ گئی

برصغیر کے لوگ توہمات کو یوں سینے سے لگائے لگائے پھرتے ہیں جیسے حاصل زندگی ہوں۔ چند برس ہوئے نانی نہیں رہیں ان کے بے حد قریب ہونے کے ناتے ان کی جدائی بہت گراں گزری، جب کوئی اپنا مر جائے قبرستانوں سے انسیت ہو جاتی ہے خوف جاتا رہتا ہے یہ میں نے تب…

Read more

والدین اپنی ناکامیوں کا بدلہ بچوں سے کیوں لیتے ہیں؟

عادل میرا اچھا دوست ہے۔ ان چند دوستوں میں سے ایک جن سے مہینوں بعد بھی بات ہو گی تو یوں کہ کبھی رابط منقطع ہوا ہی نہ تھا۔ رابطہ ہو توکیسا یہ یوں سمجھ لیں کہ دونوں ذات کے جٹ ہیں اور ہر وقت ٹھیک بارہ بجے ہوتے ہیں۔ ہنستے ہیں تو شتر بے…

Read more

”مار نہیں پیار“ سے ”متفق نہیں تو مرو“ تک

مقتول پروفیسر خالد حمید جو گورنمنٹ صادق ایجرٹن کالج بہاولپور کے شعبہ انگریزی کے ایسوسی ایٹ پروفیسر اور کالج کے سیکنڈ پرنسپل تھے حسب معمول 8 بج کر 40 منٹ پر کالج پہنچے مگر اس بات سے بے خبر تھے کہ جب وہ اپنے کمرے کی جانب بڑھ رہے ہیں بی ایس انگریزی کا طالب علم خطیب حسین اک ستون کی آڑ میں چھپا ان کا منتظر ہے۔ففتھ سمسٹر کے طالب علم نے پروفیسر کے سر پر پہلے وزنی آہنی تالا مارا اور پھر چھریوں سے اپنے استاد کی آنکھوں ، چہرے،اور سینے پر پے در پے وار کرنے لگا۔اپنی کارروائی کے دوران بملزم باآواز بلند کہتا رہا 21 مارچ کو شعبہ انگریزی میں نئے طالب علوں کے اعزاز میں دی جانے والی ویلکم پارٹی اسلامی تعلیمات کے منافی ہے۔ جس کی پروفیسر خالد حمید کھلم کھلا حمایت کر رہے ہیں۔ اس لیے پروفیسر کو قتل کر دینا چاہیے۔

Read more

”عورت مارچ“ عام عورت کے لیے تضحیک کا سامان ہے

گزشتہ برس 8 مارچ کو پاکستان کی خواتین نے انٹرنیشنل ویمن ڈے کی مناسبت سے عورت مارچ کا انعقاد کر کے اپنی طرز کی اچھوتی اور منفرد تاریخ رقم کر دی۔ پاکستان کے چند بڑے شہروں میں عورت مارچ کے نام سے چند منظم اجتماعات ہوئے اور خواتین نے اپنے لیے مساوی حقوق کا مطالبہ کیا۔ پاکستان جیسے معاشرے میں رہتے ہوئے قابل حیرت چیز یہ مطالبات نہیں تھے بلکہ خواتین کے وہ پلے کارڈز تھے جو مارچ کے دوران انہوں نے تھام رکھے تھے۔ان میں سے چند پلے کارڈز جو تقریباً پورا سال ہی مذاق اور تزہیک کا نشانہ بنتے رہے ان پر درج تحریر کچھ یوں تھی۔ ”میرا جسم میری مرضی“، ”اپنا کھانا خود گرم کر لو“، ”خواتین تمہارے باپ کی جاگیر نہیں“ وغیرہ وغیرہ۔ نتیجتاً پاکستانی معاشرے کا ہر فرد جو ہر معاملے میں اپنی رائے دینا انتہائی ضروری سمجھتا ہے نے اس ایشو پر بھی خوب کھل کے ریمارکس دیے۔

Read more

شدت پسند معاشروں کا سب سے بڑا مسئلہ ”محبت“ ہے

ویلنٹائن ڈے ہماری عوام کے اعصاب پر کس طرح سوار ہے اس بات کا اندازہ اس بات سے لگائیے کہ ماہ جنوری کے ابتدائی ایام چل رہے تھے کہ خبر آئی کہ اس بار 14 فروری کو جی سی یورنیورسٹی فیصل آباد ”سسٹرز ڈے“ کے طور پر منائے گی۔ یقیناً ایسے اعلان کا مقصد معاشرے…

Read more

پولیس کو پیسے کھلائیں اور جی بھر پتنگیں اڑائیں

چند روز قبل ٹیرس پر بیٹھی دھوپ اور چائے سے لطف اندوز ہو رہی تھی کہ پڑوس میں ہونے والی غیر روایتی دستک نے چونکا کر رکھ دیا۔ دستک کیا تھی غضب اور بد تہذیبی کی ایک لہر تھی جو چند سیکنڈز کے وقفے کے بعد پے در پے دروازے کو اپنا نشانہ بنائے ہوئے…

Read more

یک طرفہ محبتوں میں امید ہی فساد کی جڑ ہے

وہ ایک دن خطرناک لفظ ہے کیونکہ وہ ایک دن کبھی آتا ہی نہیں۔ اسی طرح کاش بھی ایک کربناک لفظ ہے جس کے ناتواں وجود کے ساتھ جانے انجانے میں امید لوگوں کے ذہنوں میں، اور دلوں میں اپنے قدم جمانے لگتی ہے۔ یک طرفہ محبتوں میں امید لاحاصل انتظار کی وہ سولی ہے…

Read more