جمہوریت اور کرپشن کا تعلق کیا ہے؟

شوگر سکینڈل ایک بڑا سکینڈل ہے، مگر اس اتنے بڑے سکینڈل پر نہ کسی کو کوئی خاص حیرت ہوئی، اور نہ ہی میڈیا میں کوئی طوفان برپا ہوا۔ اب تک اشرافیہ کی کرپشن کے اتنے سکینڈل سامنے آ چکے ہیں کہ کسی نئے سکینڈل پر کسی کو حیرت یا افسوس نہیں ہوتا۔ لوگوں کا رد…

Read more

کورونا کے شر میں خیر کا پہلو کیا ہے؟

کورونا نے مختلف لوگوں کو الگ الگ طریقوں سے متاثر کیا ہے۔ متاثرین میں سرفہرست وہ ہیں، جو اس وبا کا براہ راست شکار ہو کر علیل ہوئے۔ ان میں جو کم خوش قسمت تھے، وہ لقمہ اجل بن گئے۔ کم خوش قسمت سے مراد تقدیر کا لکھا نہیں، بلکہ وہ لوگ جن کی قوت مدافعت کمزور تھی یا جن کو مناسب علاج، خوراک اور وینٹی لیٹرز وغیرہ جیسی جدید سہولیات میسر نہیں تھیں۔ جوخوش قسمت تھے، وہ صحت یاب ہو کراپنے روزمرہ کے معمولات کی طرف لوٹ گئے۔

Read more

نہ گل کھلے ہیں، نہ ان سے ملے

گزشتہ چند ہفتوں سے یہ خوبصورت شہر کسی آسیب زدہ شہر کی طرح لگتا تھا۔ ان چند ہفتوں کے دوران جب میں صبح صبح گھر سے نکلتا تھا تو سڑکیں سنسان اور ویران ہوتی تھیں۔ کسی سڑک پر خال خال ہی کوئی گاڑی نظر آتی۔ پیدل چلنے والے راہ گیر تو گویا یکسر منظر سے…

Read more

کیا ہم اجتماعی قبر کھود رہے ہیں؟

انسان ایک سماجی حیوان ہے۔ اس کے لیے دوسرے انسان سے سماجی یا جسمانی فاصلہ رکھنا ایک مشکل اور اکتا دینے والا کام ہے۔ مگر یہ صورتحال انسان کو پورے سکون سے سوچنے اور غوروفکر کرنے کا موقع فراہم کرتی ہے۔ تنہائی کے ان لمحات میں انسان اس طرز زندگی کے بارے میں بھی غور…

Read more

کورونا نے کن حقائق سے پردہ اٹھایا ہے؟

کورونا نے ہم سب پرحملہ کیا ہے۔ یہ خطرناک حملہ بلا امتیازرنگ، نسل، مذہب اورطبقات ہے، اوراس حملے کے خلاف لڑائی میں ہم سب اکٹھے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار کچھ دنوں پہلے میں نے انہی سطورمیں کیا تھا۔ ردعمل کے طورپر نیویارک سے ایک قاری نے میرے اس خیال پر ناراضگی کا اظہار کیا۔…

Read more

عالمی ادارہ صحت بروقت سیٹی بجانے میں ناکام رہا

کوروناوائرس نے دنیا میں بہت تباہی اورخوف پھیلایا ہے ۔ بہت زیادہ جانی و مالی نقصان کیا ہے ۔ جانی نقصان پرماتم کرنے اورمالی نقصان پرکف افسوس ملنے کے بعداب وقت آگیا ہے‘ یہ دیکھا جائے کہ دنیا اس بحران سے کیا سبق سیکھ سکتی ہے ؟ کورونابحران میں دنیا کے لیے بہت سے اسباق…

Read more

کیا کورونا نے ہمیں بے نقاب کر دیا؟

آج ہم کسی معجزے کے منتظرہیں۔ پوری دنیا کسی خوشخبری کے انتظارمیں سانس روکے بیٹھی ہے ۔ دنیا کوخوش خبری یہ چاہیے کہ کورونا کی روک تھام کے لیے ویکسین یاعلاج کے لیے دواتیارکرلی گئی ہے۔ ویکسین کے معجزے کے لیے دنیا کی نظریں صرف معدودے چند ملکوں پرجمی ہیں۔ یہ مغرب کے کچھ ترقی…

Read more

کیا کورونا زندگی اور موت کا مسئلہ ہے؟

کورونا کے خلاف جنگ جاری ہے۔ دنیا بھر میں انسان کو اس آفت سے بچانے کے لیے جنگی بنیادوں پر کارروائیاں ہو رہی ہیں۔ بری خبروں کے اس اداس دور میں اچھی خبر یہ ہے کہ دنیا بھر میں بہت بڑی تعداد میں انسانی زندگیاں بچائی جا رہی ہیں۔ ہر روز اس جنگ میں انسانی…

Read more

کورونا کے بعد کیا ہونے والا ہے؟

کورونا وائرس کی چوٹ نے دنیا کو ہلا کر رکھ دیا ہے۔ معاشی مشکلات کا شکار تیسری دنیا کے پسماندہ ممالک کے لیے یہ ایک تباہ کن افتاد ہے۔ غریب ممالک کے ساتھ ساتھ اس بحران نے ترقی یافتہ، خوشحال اور معاشی اعتبار سے مضبوط ترین ممالک کی معیشت کو بھی ایسے بحران سے دوچار کر دیا ہے، جس سے نکلنے میں ان کو کئی برس لگ سکتے ہیں۔ کورونا کے جھٹکے سے دنیا کی معیشت کا جو حال اس وقت ہو گیا ہے، اور آنے والے دنوں میں جو شکل یہ اختیار کرنے والی ہے، وہ بہت ڈراؤنی ہے۔

دانشور اور ماہرین معاشیات تو یہ جانتے ہیں کہ یہ کیا ہو رہا ہے اور اس کا انجام کیا ہو گا؟ اگلے چند مہینوں اور سالوں میں یہ بحران کس شکل میں سامنے آئے گا؟ مگر عام آدمی بھی اجتماعی دانش کی روشنی میں اس کا ادراک رکھتا ہے۔ عام آدمی کا فکر اور اندیشہ خواص سے بہت زیادہ ہے، کیونکہ تاریخی اعتبار سے اس طرح کے حالات کا پہلا شکار عموماً عام آدمی ہی ہوتا رہا ہے۔ اس طرح کے بحرانوں میں اس کا روزگار ختم ہو جاتا ہے۔ اس کے بچوں کی تعلیم و صحت کی سہولیات کم ہو جاتی ہیں۔ اسے شدید جسمانی اور ذہنی صحت کے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ یہ ایک خوفناک صورت حال ہے، جس سے عام آدمی ڈرتا رہتا ہے۔

Read more

کورونا کے دورمیں تادم مرگ بھوک ہڑتال

کورونا وائرس کے شورشرابے میں کئی بڑی خبریں دب کررہ گئی ہیں۔ خوف اوراندیشے کے ماحول میں لوگ ان خبروں پربھی توجہ نہیں دے رہے ہیں، جن کوعام حالات میں نظرانداز کرنا شاید ممکن نہ ہوتا۔

کورونا بحران کے دوران جن بڑی خبروں کو نظراندازکیا گیا، ان میں ایک خبرکشمیری رہنمایاسین ملک کی دلی کی تہاڑ جیل میں بھوک ہڑتال کی خبرہے۔ یاسین ملک کی طرف سے تاحیات بھوک ہڑتال کے اس اعلان کا پس منظرکافی طویل اورپچیدہ ہے۔ لیکن اس کا فوری سبب جموں کی انسداد دہشت گردی کی ایک خصوصی عدالت میں ان کے خلاف دہشت گردی کے تحت قائم مقدمات پرہونے والی سماعت ہے۔ اس سماعت کے از سرنوآغازاوراس کے طریقہ کار پرانہوں نے شدید تحفظات اوراعتراضات کا اظہار کرتے ہوئے تادم مرگ بھوک ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔

Read more