پاکستان کی جنگ صرف کورونا سے نہیں ہے

چند ماہ پہلے چین سے خبریں آنی شروع ہوئیں کے ووہان میں کوئی پراسرار وبا پھیل رہی ہے، لوگ اس پر تبصرے کرتے رہے، خبریں بڑھتی چلی گئیں اور چائنہ میں موجود پاکستانی طلبہ کے حوالے سے حکومت اقدامات پر سیاسی اور سماجی فورمز پر بحث بھی جاری رہی، پاکستانیوں کی اکثریت کا خیال تھا کہ اگر چائنہ سے آنے والے لوگوں کے حوالے سے ہم نے اپنی آنکھیں کھلی رکھیں اور چوکس رہے تو یہ جو بھی وبا ہے یہ پاکستان تک نہیں آئے گی۔ تب تک یہ عالمی وبا قرار نہیں دی گئی تھی۔

چائنہ نے اپنی پوری طاقت سے اس کو روکنے اور اپنے ملک کے دوسرے حصوں میں پھیلنے سے بچانے کے لیے اقدامات کیے مگر دنیا کے دوسرے حصے میں اٹلی کے اندر کورونا وائرس کی گونج سنائی دینے لگی، پھر ایران اور سعودی عرب کا نام آیا اور ایک وقت آیا کہ پاکستان بھی ان ممالک کی فہرست میں شامل ہوگیا جس میں کورونا وائرس کے کنفرم کیس رپورٹ ہوئے۔

Read more

میں عورت مارچ کی حمایت کیوں کرتا ہوں؟

پچھلے برس جو غوغا عورت مارچ کے بعد مچا تھا اس برس پہلے ہی آ موجود ہوا ہے، کوئی ٹی وی پر تنقید کر رہا ہے تو کوئی اخبارات میں، کوئی سوشل میڈیا پر اپنے ہراساں کیے جانے کی بات کر رہا ہے تو کوئی عورت مارچ رکوانے کے لیے عدالت کے دروازے کھٹکھٹا رہا…

Read more

ماں نے کب کھایا، پتہ بھی ہے؟

کافی دنوں پہلے ایک بلاگ لکھا اور جب میں اس موضوع پر کسی سے گفتگو کر رہا تھا تو معلوم ہوا کہ خواتین کا جسمانی استحصال محض جنسی استحصال ہی نہیں ہے۔ ہم بطور معاشرہ ان کی صحت کا استحصال کر رہے ہیں اور وہ بھی یہ جانے بغیر کہ یہ استحصال ہے۔ ذرا اپنے…

Read more

کیا ہمارے معاشرے کے مرد واقعی عورت نے پیدا کئے ہیں؟

پچھلے کچھ دنوں سے یکے بعد دیگرے ایسی خبریں سنی ہیں کہ شک ہو رہا کہ کیا مرد عورت سے پیدا بھی ہوئے ہیں؟ کہیں بچیوں کو ونی کیا جا رہا، کہیں انہیں نوچ کر بھنبھوڑ کر کنوؤں میں پھینکا جا رہا ہے، کہیں انہیں رشتہ نہ ملنے پر الزام لگا کر سنگسار کیا جا…

Read more

انجیل بطور مسیحی نصاب

کچھ عرصہ پہلے یہ خبر سامنے آئی کہ مسیحی برادری کے نمائندوں نے عدالت میں ایک پٹیشن دائر کی ہے جس میں یہ مطالبہ کیا گیا ہے کہ مسیحی بچوں کو اسلامیات کی بجائے انجیل پڑھائی جائے۔ اس موضوع پر اپنی چند گزارشات سامنے رکھنا چاہتا ہوں۔عرصہ دراز سے مسیحی اور دیگر غیرمسلم طلبہ کو اسلامیات کے متبادل کے طور پر ”اخلاقیات“ نامی ایک مضمون پڑھایا جا رہا ہے، جس کی بعض اوقات نہ تو کتابیں ملتی ہیں اور نہ اساتذہ، سو بہت سارے مسیحی طلباء اسلامیات ہی پڑھتے ہیں۔ اخلاقیات کی یہ کتب جو اسلامیات کے متبادل کے طور پر دی گئی ہیں یہ بھی مسلمان مصنفین کی لکھی ہوئی اور معاشرت اور الہیات پر اسلامی تناظر کو ہی پیش کرتی ہیں۔

Read more

جو ماں بن جاتی ہے وہ کبھی سوتیلی نہیں ہوتی

میں لگ بھگ چار سال کا تھا اور گلی میں بچوں کے ساتھ کھیل رہا تھا کہ ایک بچے نے پتھر مار دیا۔ مجھے چوٹ لگی تو رونے لگا اور روتے روتے اسے کہا ”میں ابھی اپنی امی کو بلا کر لاتا ہوں“ اس نے زور زور سے ہنسنا شروع کر دیا اور بولا، ”کیہڑی امی؟ آنٹی تو تیری امی ہے ہی نہیں، تیری امی تو مر چکی ہیں کب کی“ جو کیفیت تھی وہ آج بھی یاد ہے مگر الفاظ میں بیان کرنا آج بھی مشکل۔ اپنا گھر دھندلا گیا، چند قدم چلنا مشکل ہو گیا۔ رو تو میں اب بھی رہا تھا مگر آواز نہیں تھی۔ بس آنسو تھے جو تھوڑے باہر گر رہے تھے اور زیادہ اندر۔

Read more

جنگ کا چہرہ

دونوں طرف طبل جنگ بج چکا ہے، دونوں طرف مار دیں گے، جلا دیں گے، فنا کر دیں گے جیسی آوازیں آرہی ہیں، سوشل میڈیا پر کچھ دھمکیاں لگا رہے ہیں اور کچھ ان کی دھمکیوں کا ٹھٹھا اڑا رہے ہیں۔یہ پاک بھارت جنگ ہے۔ روایتی حریف، ازلی دشمن، اور پتہ نہیں کیا کیا کہہ کر سالوں سے ذہن تیار کیے گئے ہیں۔ یہ دونوں تو کرکٹ اور ہاکی کے میچ تک زندگی موت کا مسلئہ بنا لیتے ہیں یہ تو پھر واقعی جنگ کی باتیں ہیں۔ کاٹنے مارنے کی باتیں تو ہوں گی۔

Read more

بڑا دن۔ کرسمس پاکستان میں کیسے منائی جاتی ہے؟

ابھی دو ہفتے قبل ہی کرسمس گزرا ہے جو کہ ہم یسوع مسیح کہ ولادت کی یاد میں مناتے ہیں۔ تیز رفتار الیکٹرانک میڈیا کے اس دور میں پوری دنیا کی خبریں پَلوں میں آپ تک پہنچتی ہیں۔ یورپ، امریکہ اور آسٹریلیا جیسے براعظموں میں دسمبر ایک جشن کی طرح ہوتا ہے۔ کئی روایات کرسمس سے جڑی ہیں، کئی کھانے اورکئی عبادات تو بعض اوقات دوست اجباب سمجھتے ہیں کہ پاکستانی کمیونٹی بھی کرسمس عین اسی طرح مناتی ہے جیسے اُن ممالک کے لوگ، جیسا کرسمس آپ باہر دیکھتے ہیں، کرسمس ٹری، کرسمس پڈنگ، جنگلز۔ لوگاس طرح بھی مناتے ہیں مگر کم تعداد میں، لیکن جو مناتے ہیں وہ بہت ہی نفاست اور رکھ رکھاؤ سے مناتے ہیں۔

زیادہ تر طبقہ کچھ روایات انگریزی والی لیتا اور کچھ اپنی، کرسمس ٹری کوئی مذہبی علامت نہیں، ایک روایت ہے جس کو زیادہ تر لوگ مناتے ہیں، سانتا کلاز یا کرسمس فادر ایک دیومالائی کردار ہے۔ سب جانتے ہیں کہ نہیں ہوتا، کچھ لوگ اسے سیلیبریٹ کرتے ہیں، کچھ نہیں کرتے۔ وہ صرف بچوں کی خوشی کے لیے ہوتا ہے، جِنگل بیل ایک عام کرسمس گیت ہے لیکن پاکستانی مسیحوں کی اکثریت اس کو نہ جانتی ہے اور نہ گاتی ہے، ہمارے گھروں میں کرسمس گیت زیادہ ترپنجابی اور اردو میں گائے جاتے ہیں اور چند ایک انگریزی میں بھی۔

Read more