بول کہ لب آزاد ہیں تیرے

گذشتہ ہفتے ہم سب پے ایک کالم پڑھنے کو ملا جس میں ایک لکھاری نے پا کستان میں انسانی حقوق کے حوالے سے سرگرم کارکن گلالئی اسماعیل کے حوالیسے ایک کالم لکھا اور اس کے پاکستان سے امریکہ پہنچنے کے حوالے سے مختلف قسم کے سوالات اٹھائے تھے اور گلالئی اسماعیل سے اس حوالے سے…

Read more

وزیر اعظم عمران خان کے اقوال زریں

اسلامیی جمہوریہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان صاحب اپنے اقوال کی وجہ سے بہت مشھور اور معروف جانے جاتے ہیں۔ اسی مشھوری کو مدنظر رکھتے ہوئے عمران خان کے مشھور اقوال میں سے دس اقوال زریں پڑھنے والوں کے لئے پیش کرتا ہوں۔ نمبر ایک ”جنگ کے دوران بھی، جب فرسٹ ورلڈ وار ہو…

Read more

ماما قدیر بلوچ سے جنیوا میں ملاقات

ماما قدیر بلوچ، جس کا اصل نام عبدالقدیر بلوچ ہے جس کو اب ہم ”ماما قدیر“ کے لقب سے جانتے اور پکارتے ہیں۔ ماں کے بھائی کو بلوچی زبان میں ماما بولتے ہیں میرے خیال میں عبدالقدیر بلوچ کو ماما کا لقب اس لئے ملا چونکہ بلوچستان میں مسنگ پرسن کے بازیابی کے لئے زیادہ خواتین…

Read more

اقوام متحدہ یا گورکھ دھندہ

اقوام متحدہ کا قیام دوسری جنگ عظیم کے بعد اس وجہ سے عمل میں آیا کہ تاکہ مستقبل میں اس ادارے کے ذریعے ملکوں کے درمیان دوستانہ ماحول قائم کیا جائے اور ان کے درمیان امن بھائی چارگی کو پروان چڑھایا جائے اورمستقبل میں جنگ جیسی خطرناک چیز سے بچا جائے اور انسانی حقوق کا…

Read more

370 آرٹیکل اور بولنے کی آزادی

ویسے دیکھا جائے تو اس میں کوئی دو رائے نھیں کہ انڈیا نے اپنے زیر اثر کشمیر میں آرٹیکل تین سوستر ( 370 ) کا خاتمہ کر کے نہ صرف کشمیریوں سے نا انصافی اور بے ایمانی کی ہے اس کے ساتھ ساتھ بین الاقوامی معاہدوں سے انحراف کر کے ایشیا ریجن میں بے چینی…

Read more

بخشو سردار اور سہانے سپنے

ایک علاقے میں ایک بخشو نام کا سردار تھا۔ ویسے وہ بنیادی طور پے سردار نہیں تھا۔ مگر اس کے سرداری کچھ اس طرح ہوئی کہ بخشو کے علاقے کے لوگوں کو گلی ڈنڈے کھیل میں بہت دلچسپی تھی اور بخشو چونکہ گلی ڈنڈے کا اچھا کھلاڑی تھا اور ماضی میں گلی ڈنڈے کے ٹورنامنٹ…

Read more