جینئیس نفسیات دان سگمنڈ فرائیڈ نے خودکشی کیوں کی؟

ایک ماہر نفسیات کے لیے کتاب، تاریخ، قدیم فن اور حال سے تعلق استوارکرنا کس قدر ضروری ہوتا ہے، اس بات کا اندازہ فرائڈ کی زندگی سے بخوبی لگایا جاسکتا ہے۔ ادبی دنیا میں وہ شیکسپیئر کا بہت بڑا مداح تھا۔ شیکسپیئر کے مشہور ڈرامے ہیملٹ کے کردار میں ایڈی پس کمپلیکس پایا جاتا ہے۔ اس الجھاؤ میں بچے کو اپنی ماں سے جنسی لگاؤ ہوتا ہے اور وہ باپ سے رقابت محسوس کرتا ہے جس سے طفلانہ جنسیت (Infantile Sexuality) کے نظریے نے جنم لیا۔حالانکہ تنقید نگاروں نے فرائڈ کو اس کے متعارف کروائے گئے جنسی نظریوں کی وجہ سے اسے آڑے ہاتھوں لیا۔ نقاد اس کے ماں کے تقدس کو پامال کرنے پر کافی برہم رہے۔ اس نے تحلیل نفسی کے نظریے کے تحت ذہنی امراض کو سمجھنے اور کم کرنے کے مواقع فراہم کیے۔ تحلیل نفسی کے حوالے سے وہ کہتا ہے : ”تحلیل نفسی میری تخلیق ہے۔ دس برس تک میں اکیلا اس میں الجھا رہا۔ اس نئے شعبے نے میرے ہم عصروں میں جس غصے کو جنم دیا، میں تنہا اعتراضات کی صورت میں اسے برداشت کرتا رہا۔ اب جب کہ اس میدان میں اور بھی مصالحین آچکے ہیں تو میں یہ باورکرنے میں حق بجانب ہوں کہ تحلیل نفسی کو مجھ سے بہتر سمجھنے والا اور کوئی نہیں۔ “

Read more

سچل اور رومی کی شاعری: فطرت و کائناتی شعور کا عکس بے مثال

فطرت اور کائناتی شعور یہ دو ایسے مکتبہ فکر ہیں جو انسان کی باطنی آنکھ کو روشن کردیتے ییں۔ مظاہر فطرت کے پاس ایک الہامی رویہ ملتا ہے۔ بارش سے پہلے حبس، بارش کی پیشنگوئی کردیتا ہے۔ فطرت کی زندگی میں ہم آہنگی، رابطہ و برداشت نظر آتی ہے۔ جس کے بعد انسان پر کائنات کی سمجھ کے بند دروازے کھلتے چلے جاتے ہیں۔ یہ آگہی ماورائی جمالیات سے بہرہ ور ہے۔ تصوف یا صوفی ازم کی بات کی جاتی ہے تو اسے فکری یا فلسفے کے طور پر سماجی زندگی سے متصل کردیا جا تا ہے۔ اور اس کا روحانی و ماورائی پہلو نظر انداز کردیا جا تا ہے۔ روحانیت بھی روزمرہ کی سوجھ بوجھ و سمجھ کا ردعمل ہے۔

Read more

جان کیٹس : درد سے رومانس کرنیوالا شاعر

تکلیف ، دکھ و تشنگی کا مجموعہ جان کیٹس انگریزی کا لافانی شاعرہے ۔ جو غم سے رومانس کرتا تھا۔ اس کی زندگی دکھوں اور تلخیوں سے بھری ہوئی تھی۔ وہ چودہ سال کا تھا کہ ماں نے دنیا سے ہمیشہ منہ موڑ لیا۔ وہ پڑھائی چھوڑ کر کسی سرجن کے پاس سرجری کی تربیت…

Read more

زمین کی منفی توانائی، ذہنی دباؤ کا سبب بنتی ہے

انسان کا زمین سےتعلق انتہائی قدیم ہے۔ جہاں دھرتی اس کے جینے کا اسباب مہیا کرتی ہے، اس کی فکری و روحانی ارتقا کا باعث بھی ہے۔ زمینی حالتیں اور ماحول کا اثر انسان کی ذہنی و روحانی نشونما پر بھی مرتب ہوتا ہے۔ طبعی، ذہنی و روحانی بہتری اور بھلائی کے لئے انسان کو…

Read more

عورت کو کام نہیں مگر سماج کے برے رویے مارڈالتے ہیں !

قدیم زمانے سے دنیا کی مختلف تہذیبیں عورت کے لئے سخت رویوں کی حامل تھیں۔ چانکیہ نے ارتھ شاستر میں لکھا ہے کہ ”دریا، سپاہی، سینگ، پنجے رکھنے والے جانور، بادشاہ اور عورت پر بھروسہ نہیں کرنا چاہیے“ روسی اسے خبیث روح سمجھتے جو نومولود بچوں میں داخل ہوجاتی ہے۔ چینی لوگوں کا کہنا ہے…

Read more

موت سے پہلے انسان کو کیا محسوس ہوتا ہے؟

موت ایک دکھ دینے والا موضوع ہے۔ یہ زندگی کی ایک تلخ حقیقت ہے کہ تبدیلی انسانی زندگی کے لیے بہت اہم ہے۔ ہر منظر عارضی اور فنا کے راستے پر گامزن ہے۔ بقول کافکا: ”زندگی کا مطلب یہ ہے کہ اسے ختم ہوجانا ہوتا ہے“۔ ہر انسان کو زندگی کے کسی نہ کسی موڑ…

Read more

اچھی عورت + بری عورت

مشرقی معاشرے ہمیشہ اچھے اور برے کے تضاد میں الجھے رہتے ہیں۔ جن میں جھوٹ اور غلط بیانی مصلحت کی آڑ میں سانس لیتی ہے۔ اور اچھائی کا تصور جانبدار رہا ہے۔ قدیم زمانے میں عورت اور زمین کو زرخیزی کی علامت سمجھا جاتا تھا، ڈیڑھ ہزار سال پرانی منو مہاراج کی کتاب منو سمرتی…

Read more

لاشعور روح کی مسند ہے

انسان کے ذہن میں ایک خودکار نظام نصب ہے جو اسے ہر خطرے اور برے وقت سے آگاہ کرتا ہے۔ عام طور ہر اندر کی آواز اسے مشکل کام سے روکتی ہے، جو اس کے لئے مصیبت کا باعث بن سکتا ہے۔ ذہن ہر خطرے کو بھانپ لیتا ہے۔ مگر انسان کی بے یقینی اس…

Read more

جھوٹ کی آکسیجن پر زندہ معاشرے کا المیہ

جھوٹ زندگی کی بہت بڑی ضرورت ہے۔ جھوٹ، منافقت اور موقع پرستی ہے۔ یہ وہ ہتھیار ہیں، جن سے مسلح ہوکر کئی کامیابی کے قلعے فتح کیے جاتے ہیں۔ یہ جدید دور کے مختصر و باسہولت راستے ہیں، جو قبل از وقت کامیابی سے ہمکنار کرتے ہیں۔ معاشرے میں جا بجا ایسی مثالیں موجود ہیں۔…

Read more

ڈپریشن کا مقابلہ کیسے کیا جائے؟

ہر موسم کا اپنا اثر اور مزاج ہے جو ہماری طبیعت پر اثر انداز ہوتا یے ۔ جتنا تعمیری خزاں کا موسم ہے شاید ہی کوئی اور موسم ہو ۔ یہ راستہ دیتا ہے ایک نئی رت کو جو زمین میں سہمی سانس لیتی ہے۔ خزاں تماتر اداسی بیجوں میں سمو دیتی ہے ۔ اور…

Read more