پاکستان میں کس چیز کی کمی ہے؟

’ہم سب‘ میں محترم حاشر بن ارشاد کا کالم ’’ہمارے ڈیمز کا خواب کہیں ہماری تباہی کا خواب تو نہیں؟‘‘ نظر نواز ہوا۔ اپنے موضوع کے لحاظ سے انھوں نے ڈیموں کے حوالے سے حقائق پر مبنی بہت عمدہ تجزیہ پیش کیا ہے۔ میں اس میں ایک اضافہ کرنا چاہوں گا، وہ یہ کہ ہم…

Read more

پختونوں کا بڑھتا ہوا عدم تحفظ اور ریاست کی خاموشی

گزشتہ روز دو واقعات ایسے ظہور پزیر ہوئے جن کی وجہ سے پختونوں میں بڑھتے ہوئے احساسِ عدم تحفظ کو مزید مہمیز ملی ہے۔ اس کے نتیجے میں نوجوان تعلیم یافتہ پختونوں میں غم اور غصے کی ایک شدید لہر پیدا ہوگئی ہے۔ جس کے مظاہر ہم سوشل میڈیا کی مختلف سائٹس پر بہ خوبی…

Read more

پابندیوں  کے باوجود حقائق چھپانا ممکن نہیں

وطن عزیز میں اس حقیقت سے آنکھیں مسلسل چرائی جا رہی ہیں کہ اگر کسی ادارے پر ہر مکتبۂ فکر کی طرف سے تنقید ہو رہی ہے اور اسے کوئی ڈھکے چھپے الفاظ میں مطعون کر رہا ہے اور کوئی اسے ببانگ دہل مقررہ آئینی حدود سے تجاوز کرنے والا جارح قرار دے رہا ہے…

Read more

قلم پہ پہرے بٹھانے والو

قلم پہ پہرے بٹھانے والو! بدل چکا ہے وُہ دورِ کہنہ کہ جس پہ اب بھی تمہاری نظریں جمی ہوئی ہیں زمیں وہی ہے، فضا مگر اب بدل رہی ہے ذرا سا ذہنوں کے بند دریچوں کو وا تو کرلو اِس عہدِ نو میں سمجھنے والے سمجھ چکے ہیں وُہ جس کو تم نے اُجالا…

Read more

پختون تحفظ موومنٹ اور سوات کے حکام سے چند مطالبات

آج سوات میں ’پختون تحفظ موومنٹ‘ کا جلسۂ عام ہے۔ پختونوں اور پھر سوات کے حوالے سے یہ بڑی تبدیلی ہے کہ ریاستی ظلم اور جبر کے خلاف منظور پشتین اور ان کے ساتھیوں کی توانا آواز بلند ہوئی ہے۔ ہر محب الوطن پاکستانی کو ان کی آواز سے آواز ملانی چاہئے۔ کسی ریاستی ادارے…

Read more

پختونوں کی آواز پر کان دھریں!

لاہور میں پختون تحفظ موومنٹ کا پُرہجوم جلسہ اس حوالے سے بھی کامیاب تھا کہ اس کو روکنے کے لئے مقامی انتظامیہ اور فوج نے کافی متشددانہ ہتھکنڈے استعمال کئے لیکن وہ اسے روکنے میں کامیاب نہ ہوسکے۔ جلسے کے مقام پر لاہور انتظامیہ کی جانب سے گندا پانی گرادیا گیا، اس کے چند رہنماؤں…

Read more

منظور پشتین اور پختونوں کا مقدمہ

”پشتون تحفظ موومنٹ‘‘ کی پشتون نوجوانوں میں روز افزوں مقبولیت کے ساتھ اس پر کئی حلقوں کی طرف سے تنقیدی سوالات بھی اٹھائے جا رہے ہیں۔ کوئی اسے غیرملکی ایجنڈے کا حصہ قرار دے رہا ہے اور کوئی اسے ریاست سے بغاوت کی تحریک سمجھ رہا ہے۔ لیکن اگر بہ نظر غائر دیکھا جائے تو…

Read more