عدالتی احکامات نظرانداز: محکمہ تعلیم ضلع آواران میں قائم مقام افسر تعینات

ضلع اواران کا تعلیمی نظام اب بھی ایکٹنگ افسر ان کے سہارے چل رہا ہے۔ عدالت عالیہ کے احکامات کی روشنی میں محکمہ تعلیم میں بڑے پیمانے پر تقرریاں و تبادلے کیے گئے۔ جس سے لگ یہی رہا تھا کہ ان تقرری و تبادلوں کے نتیجے میں تعلیمی نظام میں بہتری آئے گی مگر ایسا…

Read more

کھلا خط بنام صوبائی وزیر تعلیم سردار یار محمد رند

جناب والا! اس وقت پوری دنیا ایک وبا کی لپیٹ میں ہے۔ اس سے نمٹنے کا واحد ذریعہ گھروں میں رہنا قرار پا چکا ہے۔ تعلیمی ادارے بند ہیں دفاتر تک رسائی ناممکن ہے آپ کی توجہ بذریعہ کھلا خط ایک اہم اور حل طلب مسئلے کی جانب لے جانا چاہوں گا۔ جیسا کہ آپ…

Read more

آواران کے انٹرنیز اساتذہ کی بحالی ضلعی ذمہ داران کے لیے چیلنج بن گئی

آواران کے انٹرنیز اساتذہ کی بحالی ضلعی ذمہ داران کے لیے چیلنج بن گئی ایک سال سے تنخواہوں سے محروم انٹرنیز بجٹ کی فراہمی کے باوجود تنخواہوں کے حصول سے محروم ہو گئی۔ 22 فروری کو محکمہ خزانے سے بجٹ جاری ہونے کے باوجود ضلعی ایجوکیشن افسر کی کوتاہیوں سے انٹرنیز اساتذہ پریشانی سے دوچار…

Read more

کیچ سے رخصتی

کیچ میں قیام کا یہ ہمارا آخری دن تھا۔ کرونا وائرس کی دھوم نے کیچ کے تعلیمی اداروں کو تالے لگا دیے تھے۔ اداروں کے اندر صرف انتظامی امور سنبھالنے والوں کا حلیہ نظر آیا۔ مالک دور حکومت کیچ کو یونیورسٹی کا بنیاد فراہم کر گیا۔ یونیورسٹی کیمپس سے اس کا سفر اب ایک مکمل…

Read more

روز نامہ آساپ اور تربت میں ذرائع ابلاغ کا زوال

کیچ کا صحافتی سفر ادھورا رہے گا جب تک آساپ کا ذکر نہ آئے۔ آساپ کا جنم بھومی علاقہ۔ ماہنامہ سے ہفت روزہ پھر ہفت روزہ سے روزنامہ کا سفر روزنامہ آساپ نے کیچ کی سرزمین پر طے کرکے کیا۔ دشتی بازار میں واقع آساپ کا پرنٹنگ پریس بطور نشانی اب بھی آساپ اخبار کی…

Read more

کوہِ مراد کی زیارت

سنگانی سر۔ شاعر عطا شاد کا آبائی گاؤں۔ تربت سٹی سے ملحقہ علاقہ۔ مگر اس علاقے سے اچھی خبریں نہیں آتیں۔ ناپسندیدہ علاقہ قرار پایا ہے بھلا وہ کیوں۔ لفظِ منشیات سے جڑا ہوا ہے اس لیے۔ ایک عجیب سے بے کیفی ہے روح پر طاری ہے یہ لاتعلقی کا مظہر ہی تو ہے کہ…

Read more

سینما چوک، کیچ کی چائے میں موسیقی کا ذائقہ

کراچی سے پنجگور اور پنجگور سے کیچ کا طویل مسافت طے کرتے ہوئے چائے کی طلب ختم ہونے کا نام نہیں لے رہی تھی۔ چائے کا چسکا ہر جگہ لے چکا تھا مگر حقیقی ذائقہ دینے سے وہ چائے محروم تھے۔ چائے کی بدمزگی کا برملا ا اظہار میں نہ چاہتے ہوئے پنجگور کے دوستوں…

Read more

کیچ یاترا

2006 کو گریجویشن مکمل ہو چکی تھی۔ ذرائع آمدن ختم ہو چکے تھے۔ غمِ روزگار ستانے لگا۔ تو کسی نے بتایا کہ پوسٹ آفس آواران میں پوسٹ مین کی پوزیشن خالی ہے۔ ڈیلی ویجز بنیاد پر کام کرنا پسند کرو گے۔ جھٹ سے ہاں کردی۔ حصولِ ملازمت کے لیے اپنے ڈاکومنٹس کیچ روانہ کر دیے۔…

Read more

کراچی سے پنجگور کا سفری احوال

زندگی کا سفر کہاں سے شروع ہوتا ہے اور کہاں اختتام پزیر، بشر خود اس حوالے سے لاتعلق ہوجاتا ہے۔ درمیانی حصہ اس نے کیسے گزارنی ہے اس کے لیے پلاننگ کرتا ہے، صدیوں کا پلاننگ۔ لیکن اپن کی زندگی میں پلاننگ نامی چیز نے کبھی بھی چلانگ نہیں ماری۔ اتفاقات کی ایسی بھرمار کہ۔…

Read more

پنجگور میں پڑاؤ

گوریچ کے خطرناک عزائم دیکھ کر ہم نے اپنے آپ کو چادر میں لپیٹ لیا ورنہ یہ گوریچ دشمنی کی آخری حد تک جا سکتا ہے اور ہم یہ خطرہ مول لینا نہیں چاہ رہے تھے۔ نہ جانے اس ہوا کو بلوچستان کی سرزمین بالخصوص پنجگور سے کیسی انسیت آن پڑی ہے کہ یہ اس…

Read more