چونی چھاپ مشاعرے کی روداد

اور ایک دوست نے یونہی سا سوال پوچھ لیا کہ آپ مشاعرے میں کیوں نہیں جاتے؟ میں نے کہا کہ ایسا نہیں کہ بالکل نہیں جاتا مگر جن ادبی و شعری محفلوں میں میں جاتا ہوں، انہیں مشاعرہ کہا جاسکتا ہے یا نہیں، اس پر ضرور سوالیہ نشان قائم ہوسکتا ہے۔ یہ سب باتیں تو…

Read more

ایک خود رو پھول کا مشاہدہ، مرد کا دماغ اور کوشل کی بیوی

میں بارہ بنکی پہنچا تو رات ہوچکی تھی، اپنے کمرے تک جاتے اور بستر پر دراز ہوتے ہوتے قریب ساڑھے بارہ بج چکے تھے۔ بے حد تھک گیا تھا، پچھلے سات گھنٹوں کا سفر، گاڑی بھی خود ہی ڈرائیو کی تھی۔ یہاں مجھے اپنے ایک دوست کوشل سے ملنا تھا۔ بہت زیادہ تھک جانے کے…

Read more

میں غزل کے خلاف نہیں ہوں

غزل کے بارے میں بات کرتے وقت سب سے زیادہ ضروری یہ ہے کہ ہم دیکھیں کہ غزل کا مطالعہ بحیثیت مجموعی ہمیں کیا دیتا ہے۔ ہم اس زمانے سے کچھ باہر نکل آئے ہیں، جہاں استاد اپنے شاگردوں کو دو سو، پانچ سو غزلیں یاد کرنے کے لیے دیا کرتے تھے۔ ان غزلوں کو…

Read more

درمیانی جنس، عورت اور چترا مدگل کا ناول ‘پوسٹ باکس نمبر 203 نالا سوپارہ’

اردو کی ایک خرابی یہ ہے کہ جب تک اعراب نہ لگائیں جائیں، دوسری زبانوں کا صحیح تلفظ ادا نہیں کیا جاسکتا۔ اعراب ہندی کی ماترائوں کی طرح حرفوں سے گھلی ملی ہوئی بھی نہیں ہیں۔ خیر، اس پرانی بری عادت کا رونا کیا رویا جائے، پہلے چترا مدگل کے نام کا تلفظ سمجھ لیجیے،…

Read more

میرا آخری اردو مضمون

یہ میرا اردو زبان میں آخری مضمون ہے۔ آخری اس لیے کیونکہ اب میں اس زبان میں کچھ بھی لکھنے پر خود کو آمادہ نہیں پاتا ہوں۔ میری آنکھ جن کتابوں کے درمیان کھلی تھی وہ زیادہ تر اردو کی تھیں۔ میں نے جس سکول میں داخلہ لیا وہ اردو کا تھا اور جن لوگوں…

Read more

بے غیرت تصنیف حیدر

ابھی دو دن بھی نہیں گزرے کہ مجھ پر ایک نئی بدنامی کا دور آیا۔ مگر اس بدنامی کے لیے جن صاحب نے بھی چھوٹی موٹی کہانی لکھی، وہ میری بے غیرتی کی توصیف میں بے حد ادھوری ہے۔ مجھے اسے پڑھ کر خود ہی مزا نہیں آیا تو دوسروں کو کیا خاک آیا ہوگا۔…

Read more

انگریزی علیہ السلام کی امت

کبھی آپ کی ملاقات فر فر انگریزی بولنے والے کسی شخص سے ہوئی ہے۔ ایسا شخص جس کو دیکھ کر یہ تاثر پیدا ہو کہ یہ شخص پڑھا لکھا ہے، اگر آپ پر ایسا کوئی تاثر پیدا ہوتا ہے تو اس کا مطلب یہ ہے کہ آپ احساس کمتری کا شکار ہیں اور اپنے علم…

Read more

ششانک شکلا: بازدید

عام طور پر جب کوئی موت کا ذکر کرتا ہے تو انسان کا رد عمل بہت حیرت میں ڈوبا ہوا نہیں ہوتا۔ موت سے ہماری شناسائی اتنی پرانی ہے کہ ہم اس کے ذکر پر ذرا بھی نہیں چونکتے، ہم نے اسے زندگی کی ہی طرح کائنات کا ایک ضروری حصہ تسلیم کر لیا ہے۔…

Read more

کیا ہمارا معاشرہ مذہبی ہے ؟

میں کچھ ایسا مذہبی انسان نہیں ہوں۔ میں ایسا کیوں ہوں، اس پر اکثر بات کرتا رہتا ہوں۔ مگر سوچتا ہوں کہ میری نظروں کے سامنے اس وقت جتنے خطرناک معاشرے اور قاتل اقوام ہیں، کیا یہ سب بھی مذہبی ہیں۔ مذہب سے میری بے گانگی محض ان چھوٹی چھوٹی بنیادوں پر نہیں کہ اس…

Read more

اور جب لکھنوی تہذیب سے پردہ اٹھتا ہے…

یہ بات کس سے چھپی ہے کہ حکومت جس کی رہی, وہ کمینہ رہا ہے۔ نظام حکومت آمرانہ ہو یا جمہوری۔ ایک میں دھاندلی کے ساتھ اور دوسرے میں عوام کو بے وقوف بنا کر، ان کی آنکھوں میں دھول جھونک کر، مختلف رنگ کی پٹیاں پہنا کر محکوم افراد کو لوٹا جاتا ہے۔ تاریخ…

Read more
––>