عمران کے راج میں کافر کافر کیوں ہو رہی ہے؟

ابھی عمران خان کی حکومت آئے کوئی چار دن ہی ہوئے ہیں لیکن یار لوگوں نے سیاپا کچھ زیادہ ہی ڈال دیا ہے۔ کوئی کہتا ہے کہ خان صاحب دفتر ہیلی کاپٹر پر بیٹھ کر کیوں جاتے ہیں، کسی کو یہ تکلیف ہے کہ یہ دفتر جا کر چائے کے ساتھ بسکٹ کتنے کھاتے ہیں،…

Read more

کلدیپ نیئر کا پاکستانی پیر

انڈیا اور پاکستان کے درمیان امن کی خواہش رکھنے والوں اور اس خواہش کے اظہار کے طور پر واہگہ بارڈر کے دونوں طرف کھڑے ہو کر شمعیں روشن کرنے والوں کو ہمارے کچھ بھائی موم بتی مافیا کہتے ہیں۔ اگر مافیا ہو گی تو ڈان بھی ہو گا اور اس بھولی بھالی مافیا کا اصلی…

Read more

چیف صاحب کی چپیڑ

زندگی کی بارے میں یار لوگوں نے کچھ رومانوی سی باتیں بنا رکھی ہیں۔ کوئی کہتا ہے کہ پہلا پیار کبھی نہیں بھولتا۔ کوئی کہتا ہے ریل کا پہلا سفر ساری عمر یاد رہتا ہے۔ کسی کو اپنے گاؤں میں دیکھا ہوا پہلا میلہ ہمیشہ یاد رہتا ہے تو کسی کو گرمیوں کی پہلی چھٹیوں…

Read more

دوستووسکی اور خلیفہ ہارون رشید

فیس بک اور ٹوئٹر کے بعد جب سے میں نے واٹس ایپ دریافت کیا ہے میں بھی کچھ عقلِ کل سا ہو گیا ہوں۔ بلوچستان سے لے کر برلن تک کی لمحہ بہ لمحہ خبریں میرے پاس ہوتی ہیں۔ دوزخ کے درجۂ حرارت کے بارے میں ہونے والی جدید ترین سائنسی تحقیق سے بھی واقف…

Read more

ضیاء زندہ ہے

سابق جنرل کی سوچ ہر طرف پھیلتی نظر آ رہی ہے نہ کہیں ماتمی جلسہ، نہ کوئی یادگاری ٹکٹ، نہ کسی بڑے چوک پر اس کا بت، نہ کسی پارٹی جھنڈے پر اُس کی تصویر، نہ اُسکے مزار پر پرستاروں کا ہجوم، نہ کسی کو یہ معلوم کہ مزار کے نیچے کیا دفن ہے۔ نہ…

Read more

نیا نیب، پرانا ہیرا

پرانے زمانوں میں ہر خاندان میں ایک بزرگ ایسے ہوتے تھے جو ہر فن مولا ہوتے تھے۔ شعر بھی کہہ لیتے، کشتہ بھی گھر پر تیار کر لیتے تھے۔ علم الاعداد اور دست شناسی سے بھی شغف رکھتے تھے۔ شادی بیاہ کے مواقع پر کھانا پکانے والوں کی رہنمائی بھی کر دیتے تھے۔ ایسے بزرگ…

Read more

باجوہ ان کنٹرول

رات کے 12 بج رہے تھے۔ آنکھیں نیند سے بوجھل تھیں لیکن نیند ٹالنے کی بچگانہ خواہش بھی انگڑائیاں لے رہی تھی۔ خیال آیا بڑے دنوں سے ٹی وی نہیں دیکھا کم از کم جیو کے بلیٹن پر ہی نظر ڈال لو۔ گذشتہ دو برس سے یہ بھی ایک سسپنس ہی رہتا ہے کہ جیو…

Read more

عمران صرف نیسلے کی بوتل سے جان چھڑوا دیں

عمران خان نے نیا نیا ورلڈ کپ جیتا تھا اور مُصر تھے کہ سیاست میں نہیں آئیں گے۔ اسی زمانے میں کراچی میں دماغی امراض کے ماہر ایک بزرگ ڈاکٹر نوجوانوں میں بڑھتے ہوئے منشیات کے استعمال اور سگریٹ نوشی کے خلاف منصوبے بناتے رہتے تھے۔ انھوں نے ایسا ایک زبردست آئیڈیا بتایا کہ اگر…

Read more

رضیہ ہوتی تو کیا کرتی!

گذشتہ ہفتے کراچی میں ایک چھوٹی سی تقریب تھی۔ آئی بی اے کے جرنلزم سکول میں ایک کلاس روم کے باہر رضیہ بھٹی کے نام کی تختی لگا کر صحافت کے لیے اُن کی خدمات کو خراجِ عقیدت پیش کیا جا رہا تھا۔ رضیہ بھٹی کو دنیا کے گئے تقریباً 22 سال ہو چکے ہیں۔…

Read more