الیکشن کمشن میں تعیناتیوں کے لئے پیدا ہوتی الجھنیں

حکومت اور اپوزیشن کو اتفاق رائے سے الیکشن کمیشن کے چیئرمین اور اس کے اراکین کا انتخاب کرنا ہوتا ہے۔ ان دو فریقین کے مابین اس ضمن میں ’’اتفاق رائے‘‘ کا حصول ہمارے آئین میں لازمی ٹھہرایا گیا ہے۔اس کا مقصد الیکشن کمیشن کی غیر جانب داری اور وقار کو یقینی بنانا ہے۔فروری 2019میں سندھ…

Read more

اپوزیشن کی ’’مجبوریوں‘‘ سے لطف اندوز ہوتی عمران حکومت

بدھ کی سہ پہر سے قومی اسمبلی کا ایک اور سیشن شروع ہوگیا ہے۔سیاسی معاملات پر تبصرہ آرائی کرنے والوں کی اکثریت کا اصرار ہے کہ یہ سیشن بہت ’’دھواں دھار‘‘ ہوگا۔ ایک اہم اور حساس ترین منصب کی بابت سپریم کورٹ نے پارلیمان کو واضح ترین الفاظ میں قواعد تیار کرنے کی ہدایت دی…

Read more

عدلیہ بحالی تحریک اور اسکے ’’ثمرات‘‘

انٹرنیٹ کی بدولت لوگوں تک اپناپیغام پہنچانے کے لئے جدید ترین ٹیکنالوجی نے جو راہیں متعارف کروائی ہیں مجھے ان کی ککھ سمجھ نہیں۔برسوں سے یہ معمول بنارکھا ہے کہ صبح اُٹھنے کے بعد لیپ ٹاپ کھولتا ہوں۔’’نوائے وقت‘‘ کی ویب سائٹ پر جاکر اپناچھپا ہوا کالم پڑھنے کے بعد اسے فیس بک اور ٹویٹر…

Read more

یہ نہ ہُوا تو ’’کچھ نہ کچھ‘‘ ہو کر رہے گا

میری عمر کے بہت سارے پاکستانیوں کی طرح عمران خان صاحب کو بھی فیلڈ مارشل ایوب خان کا ’’سنہری دور‘‘ بہت یاد آتا ہے۔ذاتی طورپر اگرچہ میں خودان لوگوں میں شامل نہیں ہوں۔میں نے ہوش سنبھالی تو صدارتی انتخاب کی گہماگہمی دیکھی۔سن 1964تھا ۔ ایوب خان کے مدمقابل دائیں اور بائیں بازو کی تمام جماعتوں…

Read more

ولیم کی ’’انارکی‘‘ اور طلبہ کی تحریک

جمعہ کی دوپہر سے بستر میں دبکاولیم ڈیل رمپل(William Dalrymple) کی تازہ ترین کتاب The Anarchy پڑھ رہا ہوں۔اپنے تئیں انارکی کا ترجمہ میں عموماََ خلفشار یا ابتری کرتا رہا۔بلھے شاہ نے اپنے دور پر طاری ہوئی افراتفری کو ’’کھلادرحشرعذاب دا‘‘ کہا تھا۔ولیم نے اپنی کتاب کا جو دیباچہ لکھا ہے اسے پڑھ کر مگر…

Read more

’’جیہڑا جتے اوہدے نال‘‘

جمعرات کی صبح اُٹھ کر اخبارات پر سرسری نگاہ ڈالنے اور آج چھپے کالم کو سوشل میڈیا پر پوسٹ کرنے کے بعد دیہاڑی لگانے کے لئے قلم اٹھایا ہے تو خبر آئی ہے کہ سپریم کورٹ آف پاکستان سے ’’توسیع‘‘ کے ضمن میں فیصلہ دوپہر ایک بجے آئے گا۔ڈیڈ لائن کی مجبوری کے باعث اس…

Read more

’’توسیع‘‘ شاید ’’استحکام‘‘ کیلئے ضروری تھی مگر!

متوازی عدالت میں نے کبھی لگائی نہیں۔اسے لگانے سے ان دنوں بھی پرہیز کیا جب میرے رزق کا بنیادی ذریعہ ٹی وی سکرین پر ’’نیوز اینڈکرنٹ افیئرز‘‘کے نام سے ہوئی یاوہ گوئی ہوا کرتی تھی۔صبح اُٹھتے ہی یہ کالم لکھ کر دفتر بھجوانا ہوتا ہے۔ڈیڈ لائن اورڈاک ایڈیشنوں کے تقاضے ہوتے ہیں جن کی وجہ…

Read more

’’نہلے کے بعد ’’دہلا‘‘ آ گیا۔ اب تماشہ دیکھیں

پیر کی رات میں نے اُکتا کر اپنا فون بند کردیا۔ حالانکہ میری بیوی شہر میں موجود نہیں تھی اور اس کی عدم موجودگی میں فون کی گھنٹی بھی بند نہیں کرتا۔مبادا…کے خوف سے۔فون بند کردینے کی احمقانہ ضرورت اس لئے محسوس ہوئی کہ بے تحاشہ افراد نے جن میں سے اکثر سے کبھی ملاقات…

Read more

ایلس ویلز کی ’’ہوشیار باش‘‘ والی دُہائی

جنوبی ایشیاء کا ایک ملک سری لنکا بھی ہے۔کسی زمانے میں سیلون کہلاتا تھا۔اپنے بچپن میں لیکن میری عمر کے لوگ اس ملک کو ’’ریڈیوسیلون‘‘ کے ایک پروگرام کی وجہ سے جانتے تھے۔ ذرائع ابلاغ کے تناظر میں بات کریں تو اس پروگرام نے ہمارے خطے میں پہلا RJ متعارف کروایا تھا۔ اس کی خوب…

Read more

چین کے ساتھ سرد جنگ میں پاکستان کو دھکیلنے کی امریکی کوشش

جولائی 2018کا انتخابی عمل جب اپنی تکمیل کو پہنچا تو عمران خان صاحب کے وزیر اعظم پاکستان کا منصب سنبھالنے کے امکانات روشن ہوگئے۔ان کے اس عہدے کا حلف اٹھانے سے قبل ہی امریکی وزیر خارجہ مگر ایک ٹی وی پروگرام میں نمودار ہوگئے۔کسی معقول نظر آتے پسِ منظر کی عدم موجودگی میں اینکرنے ’’اچانک‘‘…

Read more