امدادی رقوم کی تقسیم سے کپتان کے ٹائیگرز کو الگ رکھیں

ہفتے کی صبح ایک دوست نے راولپنڈی کے قریبی شہر سے فون پر اطلاع دی کہ غریب عورتوں کے جمگھٹے اس شہر سے تحریک انصاف کی ٹکٹ پر منتخب ہوئے ایم این اے اور ایم پی ایز کے ’’ڈیروں‘‘ پر جمع ہورہے ہیں۔ان کا مطالبہ ہے کہ انہیں تین ہزار روپے کی وہ رقم فی…

Read more

کرونا سے نمٹنے کی حکومتی خوداعتمادی

یہ رویہ درست ہے یا نہیں۔ اس کے بارے میں کوئی رائے دینے کی مجھ میں تاب نہیں۔ محض ایک رپورٹر ہوتے ہوئے اگرچہ یہ ”اطلاع“ دینے کو مجبور پاتا ہوں کہ وزیر اعظم کرونا کی وجہ سے اُٹھے بحران کا مقابلہ کرنے کے لئے اپوزیشن سے ”مشاورت“ کی ضرورت محسوس نہیں کرتے۔ اپنے دل کی اتھاہ گہرائیوں سے وہ یہ طے کرچکے ہیں کہ مسلم لیگ (نون) اور پیپلز پارٹی میں شامل لوگوں کی اکثریت ”چوروں اور لٹیروں“ پر مشتمل ہے۔ وہ جیلوں میں ”عام مجرموں“ کی طرح بند کیے جانے کے مستحق ہیں۔ پاکستان اور اس کے شہریوں کی بھلائی ان لوگوں کا دردِسر نہیں۔ بجائے اپنے ”کرتوتوں“ پر شرمندہ ہونے کے اپوزیشن جماعتوں کے رہنما کسی ”بحران“ کے منتظر رہتے ہیں۔ یہ نمودار ہوجائے تو ”قومی یکجہتی“ وغیرہ کے نام پر خود کو ”معتبر“ بنانے کی کوشش کرتے ہیں۔ انہیں ”بحرانوں“ کے بہانے اپنی ساکھ بحال کرنے کے مواقع فراہم نہیں کر نا چاہئیں۔

Read more

مگر ندیم چن کی کال ریکارڈ کس نے کی!

ندیم افضل چن صاحب سے عرصہ ہوا ملاقات نہیں ہوئی۔ ان سے رابطے کے لئے میرے فون میں جو نمبر محفوظ ہے وہاں سے جواب موصول نہیں ہورہا۔مجھے یقین ہے کہ ان دنوں وہ کوئی اور نمبر استعمال کررہے ہیں۔وہ نمبر بھی ڈھونڈا جاسکتا تھا منگل کی رات مگر سونے سے قبل سوشل میڈیا پر…

Read more

پاکستان میں لاک ڈاؤن لازم ہو چکا تھا

لوگوں کی اکثریت حیران ہے۔ عمران خان صاحب کی اندھی نفرت میں مبتلاخواتین وحضرات اگرچہ اس نوعیت کا اطمینان محسوس کررہے ہیں جسے انگریزی زبان میں Sadisticکہا جاسکتا ہے۔آسان الفاظ میں اسے اپنے مخالف کی بے بسی سے لطف اندوز ہونا یا اس کی ’’محدودات‘‘ عیاں ہونے کی وجہ سے حظ اٹھانا کہا جاسکتا ہے۔…

Read more

کرونا کے موسم میں کامل لاک ڈائون کا سوال

وزیر اعظم صاحب نے اتوار کے روز قوم سے خطاب کیا۔ میں اسے براہِ راست سن نہیں پایا۔ سوشل میڈیا پر اس کی ویڈیو کلپس دیکھی ہیں۔پیر کی صبح اُٹھ کر اخبار میں اس خطاب کا تفصیلی متن پڑھا۔میری دانست میں عمران خان صاحب نے اپنے خطاب کے ذریعے بنیادی طورپر ان وجوہات کو بیان…

Read more

کرونا‘ شہباز شریف کی واپسی اور افواہیں

مارچ 2020کی 22تاریخ والی اتوار کی صبح یہ کالم لکھنے تک پاکستان بھر میں کرونا وائرس کی زد میں آئے افراد کی تعداد 645 ہوچکی تھی۔تازہ ترین اعداوشمار پر سرسری نگاہ ڈالتے ہوئے میں بلوچستان کے بارے میں بہت فکر مند ہوا۔آبادی کے اعتبار سے وہ ہمارے ملک کا سب سے چھوٹا صوبہ ہے۔اس صوبے…

Read more

کرونا وائرس کا پھیلائو اور ہمارے اجتماعی روئیے

بدھ کے روز لکھے کالم کو دفتر بھیج کر طے کرلیا تھا کہ جمعرات کی صبح کرونا کے ذکر سے پرہیز کیا جائے گا۔سونے سے قبل مگر فون پر اپنی ٹویٹر لائن دیکھی تو خیبرپختونخواہ کے وزیر صحت نے نہایت دُکھ مگر جرأت سے ازخود یہ اطلاع دی ہوئی تھی کہ ان کے صوبے میں…

Read more

کرونا اور حکومت کا اصل امتحان

حیران کن بات ہے اور فی الوقت بہت تسلی بخش بھی۔ خدا کرے کہ یہ صورت حال برقرار بھی رہے۔جس حقیقت نے خوش گوار حیرت میں مبتلا کررکھا ہے وہ یہ ہے کہ چین اور ایران کے ہمسائے میں ہوتے ہوئے بھی جنوبی ایشیاء کے زیادہ تر ملکوں میں کرونا وائرس کی وہ شدت نظر…

Read more

کرونا ! گھبرانا نہیں مگر…

حکم ہم سب کے لئے یہ ہے کہ ’’گھبرانا نہیں‘‘۔ حساب مگر ’’سیدھا‘‘ نہیں ہے۔دورِ حاضر میں Dataیعنی ٹھوس اعدادوشمار ہر مسئلے کا حل ڈھونڈنے کے ضمن میں کلیدی شمار ہوتا ہے۔منگل کی صبح اُٹھ کر اخبارات دیکھے ہیں تو وفاقی حکومت کے کرونا وائرس کے مقابلے کے لئے ’’پوائنٹ پرسن‘‘ بنائے ڈاکٹر ظفر مرزا…

Read more

کرونا ، حقائق کا اعتراف ضروری ہے

پہلی اور دوسری جنگ عظیم کے ہولناک تجربات کو ذہن میں رکھتے ہوئے علمِ سماجیات کے ماہرین نے انسانی رویوں کو جاننے کے لئے بے پناہ سوالات کے ساتھ کئی برسوں سے تحقیق جاری رکھی ہوئی ہے۔محض چند سوالات کے جواب مل پائے ہیں۔اس حقیقت کا اگرچہ عمومی اعتراف ہوا ہے کہ آفتوں کے موسم…

Read more