اپنے عہد کی گواہی

اردو کے کرشماتی افسانہ نگار انتظار حسین نے یاداشتوں کو ٹٹول کر کہانی بنا دیا تو ان پر پر ناسٹیلجیا کی پھبتی کسی گئی، خاص طور پر اُن حلقوں کی طرف سے جنھوں نے اپنی روایت سے کنارہ کشی اختیار کر کے مغربی تجربے کی روشنی میں اپنے مزاج کو سمجھنے کی کوشش کی۔ یہ…

Read more

فواد چوہدری کاغصہ

فواد چوہدری کہتے ہیں، ریاستی ادارے انھیں انصاف دلائیں یا الزام لگانے والے الزام کو ثابت کریں، ایسا اگر نہیں ہو گا تو پھر وہی ہوا جو مبشر لقمان کے ساتھ ہوا یا اس سے قبل سمیع ابرہیم کے ساتھ ہوا۔ گزشتہ چار پانچ برس کے دوران میں یہ ملک جن تجربات سے گزرا ہے،…

Read more

ہوا بدلنے کے آثار

کوئٹہ کا ایک سفر کبھی نہیں بھولتا، ریل گاڑی اسٹیشن پر پہنچی تو مسافروں نے اس پر ہجوم کیا۔ اُ ن زمانوں میں اوّل ٹرین پر سوار ہونا پھر اس میں جگہ بنانا جان جوکھوں کا کام تھا۔ خوش قسمتی سے جنھیں جگہ مل جاتی، وہ آنے والوں کا راستہ بند کر دیتے۔ گاڑی کے…

Read more

عبدالصمد بنگالی اور سقوط ڈھاکہ کی روح تڑپا دینے والی یاد

ابا جی نے ایک روز اعلان کیا: ”آج سے گھر کا سودا سلف عبدالصمد بنگالی کے ہاں سے آئے گا“۔ وہ عجب زمانہ تھا۔ ہمارے بزرگ بات بات پر جذباتی ہوجاتے، مشرقی پاکستان کے ذکر پر آنسو بہاتے اور اُس دیار سے کسی کے آنے کی خبر ملتی تو اس کی راہ میں پلکیں بچھا…

Read more

طلبہ یونین کی بحالی – سو رنگ کے پھول کھلنے کی نوید

لوگ جو بھی کہیں کالجوں اور یونیورسٹیوں میں بہار دو بار آتی۔ ایک اس وقت جب انتخابات ہوا کرتے اور دوسرے نئے تعلیمی سال آغاز پر داخلوں کے موقع پر۔ ان دونوں مواقع کی یادیں دلوں میں تتلیاں بن کر اڑتی ہیں۔ داخلوں کے موقع پر نئے طلبہ اپنی تعلیمی پیش رفت میں سرشاری، میرٹ…

Read more

گر زباں ہو دل کی رفیق

یہ اختلاف بیزاری کا زمانہ ہے۔ آپ نے جیسے ہی اپنی رائے کا اظہار کیا یا کوئی سوال ہی اٹھا کیا، سنگ زنی شروع ہو گئی۔ اس رجحان کا تازہ تجربہ ایک دیرینہ رفیقِ کار حمیداللہ عابد کو ہوا ہے۔ حمیداللہ عابد نہایت پڑھے لکھے، محنتی اور لائق صحافی ہیں چونکہ پڑھنے لکھنے کی عادت…

Read more

لال پرچم کا خیر مقدم

ایک عزیز دوست نے سوال کیا کہ علی قاسمی کو جانتے ہو؟ ذرا توقف کے بعد وضاحت کی کہ وہی علی عثمان قاسمی جو عطا الحق قاسمی کے فرزند ہیں۔ اسی ہلے میں انھوں نے اطلاع دی کہ یہ نوجوان بھی ترقی پسندوں کے مظاہرے میں پائے گئے، لال قمیص پہن کر، یقینا لال لال…

Read more

کس نے غائب کیے خوابوں کے رنگ؟

ایوانِ صدر میں آئے زیادہ دن نہیں گزرے تھے کہ ایک شخص سے میری ملاقات ہوئی۔ یہ شخص مجھے کچھ مختلف سا لگا لیکن ذرا ٹھہریے، یہ ماجرا اتنا سادہ نہیں۔ اس ایوان کی راہ داریوں میں چلنے والوں کے بارے میں میرے تصورات میں کچھ مسئلہ ہے جس کی جڑیں طلسم ہوش ربا یا…

Read more

عوام کی شرکت کے بغیر سیاسی تحریک کیسے چلے؟

سیاسی تحریکوں کی اثر انگیزی کے بارے میں ایک سوال پرجمیعت علمائے اسلام کے سیکرٹری جنرل مولانا عبد الغفور حیدری نے عجب بات کہی۔ فرماتے ہیں جب تحریک نظام مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وسلم چلی، وہ بچے تھے، اس لیے نہیں جانتے کہ اس تحریک کا مزاج اور افتاد کیا رہی ہے۔ ہماری تاریخ میں…

Read more

سرسید احمد خان کا پیغام اور ڈاکٹر طاہر مسعود

ہماری قومی زندگی سرسید کے بغیر نامکمل ہے۔ وہ ہماری تحریک آزادی کے جد امجد اور بنیاد ہیں۔ وہ مسلمانانِ برصغیر کو جدید تعلیم کی طرف متوجہ نہ فرماتے اور اس مقصد کے لیے تحریک نہ چلاتے تو نہ صرف یہ کہ علی گڑھ وجود میں نہ آتا بلکہ برصغیر کے طول و عرض میں…

Read more