خود بدلتے نہیں ہم، حکمرانوں کو بدل دیتے ہیں

یہ حقیقت ہے کہ حکمرانوں کی بے شمار ذمہ داریاں ہیں جن کو اچھے طریقے سے نبھانا ان کا فرض ہے اور وہ ان ذمہ داریوں کو اچھے طریقے سے نبھانے میں بڑی حد تک ناکام ہیں، لیکن اس کے باوجود ہرقسم کے فساد کا ان کو ذمہ دار ٹھہرانا اور معاشرے کی تمام تر برائیوں کو ان کی طرف منسوب کرنا بھی کوئی انصاف نہیں بلکہ ان میں سے اکثر ہماری اچھی تربیت نہ ہونے کا یا بے پروائی کا نتیجہ ہیں۔ اگر ہم ایک اچھا معاشرہ وجود میں لانا چاہتے ہیں تو ہمیں خود کو بدلنا پڑے گا نہ کہ حکمرانوں کو، نماز، روزہ کی پابندی، زکوۃ اور صدقات سے غریبوں کی مدد نمود و نمایش سے پاک حج، قرآن کی تلاوت، بڑوں کا ادب، چھوٹوں پر شفقت، رشتداروں سے صلہ رحمی، بیماروں کی تیمار داری اور بے کسوں کی دل جوئی یہ سب اور اس قسم کے تمام اچھے ک

Read more

عورت اور لطیفہ

ہمارے ایک جاننے والے ہیں جو چالیس سے تجاوز کرگئے ہیں اور ابھی تک غیر شادی شدہ ہیں،ابھی تک شادی نہ کرنے کی وجہ پوچنھے پر موصوف نے بتایا کہ خواتین سے واسطہ پڑنے کے بعد تو شاید سب کو ڈر لگتاہو لیکن ہم نے اُن کا نگیٹیو پہلو اتنا سُن اور پڑھ رکھا ہے…

Read more

مولانا ہم سے بچھڑ کے نہ جانا

مولانا طارق جمیل صاحب ایک جید عالمِ دین ہونے کے ساتھ ساتھ مبلغ بھی ہیں، وہ اپنے مخصوص اندازِ بیان کی وجہ سے مشہور ہیں، انہوں نے تبلیغی جماعت کے ساتھ کئی ممالک کا سفر کیا ہے، لوگ بڑی تعداد میں اُن کے بیانات سنتے ہیں، ان کے بیانات سے متاثر ہوکر کئی معروف شخصیات اسلامی طرزِ زندگی کی طرف مائل ہوئیں، اوراُن کی تبلیغی کوششوں کے باعث بہت سے گلوکار، اداکار اور کھلاڑی نہ صرف یہ کہ خود دینِ اسلام کے احکامات کے اوپر عمل پیرا ہوئے بلکہ دوسروں کے لئے بھی ذریعہ ہدایت بنے، مولانا کا تعلق دعوت و تبلیغ کی اس جماعت سے ہے جس میں ان پڑھ، کاشتکار مزدور، تاجر، ملازمت پیشہ، اہل صنعت، اہل علم، گریجویٹ، ڈاکٹر انجنیئر ہر طبقہ کے لوگ اپنے خرچ پر سفر کرتے ہیں، جس کو جتنا وقت ملا نکلا، ہر فرد اپنے سے بڑے سے سیکھتا ہے اور چھوٹے کو سکھاتا ہے۔

کسی نے نماز سیکھی، کسی نے قرآن کی سورتیں سیکھیں، کسی نے ترجمہ ومطلب سیکھا، کسی نے حدیثیں یاد کیں، گشت کے لئے نکلتے ہیں، اپنے بھائیوں کے پاس جاکر نہایت ہمدردی سے ان کی خوشامد کرکے مسجد لاتے ہیں، دین کی اہمیت بتلاتے ہیں، نماز کی طرف توجہ دلاتے ہیں، کوئی وضوء کراتا ہے، کوئی فاتحہ، کوئی سورہ اخلاص تو کوئی تشہد یاد کراتا ہے، عموماً مسجدوں میں قیام کرتے ہیں، نوافل

Read more

دو بیویاں حانہ اور مانہ

قیامت کے دن انسان سے کہا جائیگا کہ"کیا ہم نے تمہیں اتنی عمر نہیں دی تھی کہ جس کسی کو اُس میں نصیحت حاصل کرنی ہوتی کرلیتا اور تمہارے پاس (اللہ تعالی کے عذاب سے) ڈرانے والا بھی آیا تھا،، سورۃ الفاطر 37 ڈرانے والوں اور خبردار کرنے والوں سے مراد انبیاء کرام، اللہ تعالی کی…

Read more

شادیوں کاموسم اور زن مرید کا درست کنسیپٹ

یوں تو شادیاں کسی خاص موسم یا وقت کی پابند نہیں ہوتیں لیکن عام طور پر عیدالاضحی کے بعد شادیوں کا ایک نہ رکنے والا سلسلہ شروع ہوجاتا ہے جو چلتے چلتے موجودہ شب و روز میں اپنے عروج کو پہنچ جاتا ہے۔

شومئی قسمت کہ پردیس میں ہونے کی وجہ سے نہ تو ولیمے کی کسی دیگ کی کُھرچن یاخوشبو پا سکتے ہیں اور نہ ہی کسی بے گانی شادی میں عبداللہ کی دیوانگی والا رول پلے کر سکتے ہیں۔

Read more

سلیم صافی اور صراطِ مستقیم

چند دن پہلے ہم سب گروپ کی آفیشل ویب سائٹ پر سلیم صافی صاحب کا کالم (یوٹرن اور صراطِ مستقیم) نظر سے گزرا ، سلیم صافی ایک زیرک صحافی اور کالم نگار ہیں ، وہ روزنامہ جنگ میں کالم لکھنے کے ساتھ ساتھ جیو نیوز پر پروگرام جرگہ کے میزبان بھی ہیں ، درجن سے زیادہ…

Read more

مولوی اور پینٹ شرٹ

کل 2 دسمبر 2018 کو میں نے یو اے ای کے قومی دن پر اپنی پینٹ شرٹ والی ایک تصویر شیئر کی جس پر جہاں کافی دوستوں نے مثبت کمنٹ کئے وہیں کچھ دوست نالاں بھی نظر آئے۔ میں اختلافِ رائے کی قدر کرتا ہوں اور نالاں دوستوں کو خود سے کہیں بہتر مانتا ہوں۔…

Read more

ان پڑھ ماں باپ کا ان پڑھ بیٹا

ذرا ذرا سا یاد ہے جب میں اپنے آبائی گاؤں چیرمنگ کے ایک پرائمری سکول میں ادنٰی جماعت کا سٹوڈنٹ تھا۔ ایک آنٹی ہمیں پڑھاتی تھیں، شفقت بھی فرماتیں اور حوصلہ افزائی بھی ، والدہ ماجدہ بھی (اللہ تعالی اُن کاسایہ صحت و عافیت کے ساتھ تا دیر ہمارے سروں پر قائم رکھے) چونکہ والد صاحب…

Read more