مگر میں نا امید نہیں ہوں

میں نے تقریبا ایک سال اپنے کالم ”نظریاتی ہٹ دھرمی“ میں کہا تھاکہ ”ہم سیاسی اور مذہبی آئیڈیل ازم اور بت پرستی میں اس درجہ متعصب اور متشدد ہو چکے ہیں کہ ہم اپنے سیاسی و مذہبی پیشوا کی ہر غلط اور فیک نظریے کو بھی ڈیفینڈ کرنے لگتے ہیں اور اس کے بعد کوئی ہزار سمجھا ئے ’ہم اپنی بات پر قائم رہتے ہیں کیونکہ ہم بت پرست قوم ہیں“ بت پرستی کا لفظ آئیڈیل ازم کے لیے استعمال کر رہا ہوں اگرچہ یہ کوئی مناسب لفظ نہیں۔ مگر ہمیں یہ بات مان لینی چاہیے کہ ہم اندھے مقلد ہیں اور شاید یہی وجہ ہے کہ ہم سوچنے اور سمجھنے کی صلاحیت کھو چکے ہیں۔

Read more

اردو ادب میں تہذیبی شناخت کا مسئلہ

گزشتہ دو ماہ سے زندگی اتنی مصروف ہو گئی ہے کہ نہ تو کالم لکھ پایا اور نہ ہی کوئی کتاب پڑھ سکا۔ ڈیوٹی سے فراغت کے بعد اتنا تھک جاتا ہوں کہ سوائے کھانے اور سونے کے کچھ سوجھتا ہی نہیں۔ مزید نومبر میں ہونے والی ادبی کانفرنسوں، مشاعروں اور بالخصوص دوستوں کی شادیوں…

Read more

شہباز شریف کی گرفتاری سے جمہوریت خطرے میں آ گئی یا کرپٹ مافیا

پاکستان کے سب سے بڑے صوبے کے تین بار وزیر اعلیٰ رہنے والے خادمِ اعلیٰ شہباز شریف آخر کار گرفتار کر لیے گئے۔ یہ وہی خادمِ اعلیٰ ہیں جو مکا لہرا کے کہا کرتے تھے کہ ”مجھ پر ایک پائی کی بھی کرپشن ثابت ہوئی تو مستعفی ہو جاؤں گا“ ۔ خیر یہ کرپشن ایک…

Read more

لفافہ صحافی اور نظریاتی ورکرز (۱)۔

میرے گزشتہ کالم”نواز شریف کو یہ ریلیف مہنگا پڑے گا“ پر جتنی مجھے تنقیداور گالیاں سننی پڑیں اس کی مثال نہیں ملتی۔ نون لیگی کارکنوں نے تو انتہا کر دی بلکہ یہاں تک کہہ ڈالا کہ میں تحریک انصاف کا لفافہ صحافی ہوں اور اسی وجہ سے ان کی طرفداری کرتا ہوں۔ اگرچہ اس سے…

Read more

نواز شریف کا یہ ریلیف مہنگا پڑے گا

جن دنوں سابق نا اہل وزیراعظم نواز شریف ”اڈیالہ شریف“ سے ہسپتال داخل ہوئے نئے این آر او ملنے کی خبریں قومی اور عالمی میڈیا پر گردش کرنے لگیں، انہی دنوں میں نے ایک ٹویٹ کیا کہ ”کیا این آر او مل گیا؟ “۔ جس پہ ایک سینئرنون لیگی صحافی نے مجھے فون کیا اور…

Read more

بیگم کلثوم نواز کا ادبی و سیاسی مقام

کلثوم نواز نے (سیشن:1969ء سے 1971ء میں)اورینٹل کالج پنجاب یونیورسٹی لاہور سے ”رجب علی بیگ سرور کا تہذیبی شعور“ کے موضوع پرمقالہ لکھ کر ایم۔ اے اردو کیا۔ ان دنوں معروف نقاد اور محقق ڈاکٹر عبادت بریلوی (سابق صدرِ شعبہ اردو) اورینٹل کالج کے پرنسپل تھے۔ یہ مقالہ 1985ء میں سنگِ میل نے کتابی شکل…

Read more

ثقافتی اداروں کے سربراہان اور صوبائی وزارت

پاکستان اس وقت جہاں اندرونی اور بیرونی طور پرسیاسی اور مذہبی سازشوں کا شکار ہے وہاں سب سے زیادہ جنگ ہمیں ثقافت کے نام پر کرنی پڑ رہی ہے۔ مغربی تہذیب ہو یا انڈین فلم انڈسٹری کا کلچر، یہ سب ہماری نسوں میں سرایت کر گیا۔ آج ہمارے پاس فلم انڈسٹری میں صرف اور صرف…

Read more

موت کتنی بھیانک چیز ہے

موت کتنی بھیانک چیز ہے اس کا اندازہ مجھے زندگی میں تین بار شدت سے ہوا، پہلی دفعہ جب میں اپنے والد کو کامرہ چھاؤنی کے فوجی ہسپتال میں زندگی اور موت کی جنگ لڑتے دیکھ رہا تھا، وہ شخص جو زندگی کے انتہائی تلخ حالات اور سخت کسمپرسی میں بھی سر اٹھا کر جیا…

Read more

یثرب کی سیر

آج سے آٹھ سال قبل اردو زبان میں لکھی جانے والی مکہ مکرمہ کی مکمل تاریخ’’تاریخ ام القریٰ‘‘کے نام سے مارکیٹ میں آئی جسے ادبی اور مذہبی حلقوں میں خاصی مقبولیت ملی‘اس کتاب کے مصنف معروف شاعر اور مؤرخ محمد عمر ندیم تھے ۔مجھے اس وقت یہ کتاب پڑھنے کا حسین اتفاق ہوا تھا‘آج اتنے…

Read more

جعلی شاعرات کی بحث

ان دنوں ہمارے شاعر حضرات دن رات یہ ثابت کرنے میں لگے ہوئے کہ شاعرہ کون ہے اور متشاعرہ کون؟۔ اس حوالے سے اپنی بات پہچانے کا انتہائی آسان اور سستاترین ذریعہ سوشل میڈیا ہے۔ میں بذاتِ خود ایسے موضوعات پر بات کرنے اور ایسی بحثوں میں حصہ لینے سے کتراتا ہوں کیونکہ یہ بحثیں…

Read more