وبا، آسمانی احکامات اور دنیاوی پابندیاں

لوگو! گواہ رہنا۔ جو میں نے دیکھا، مجھ پر فرض عائد ہوتا تھا کہ تمہیں بتا کر جاتا اور اب تمہاری ذمہ داری ہے کہ میرے بعد آنے والوں کو تم بتاؤ۔ لوگو میں اس دور میں زندہ رہا ہوں جو مصیبتوں، بیماریوں اور وباؤں کا دور تھا۔ پوری قوم کے لئے یہ سب ایک…

Read more

شریعت کا پابند شوہر اور چھنال بہو

”ہمارے بیٹے کی ایک ہی خواہش ہے کہ وہ اس سے شادی کرے گا جو شریعت اسلامی کی پابند ہوگی“ سر پر چار مون کا ہاتھ کی کڑھائی کا دو پٹہ اوڑھے لڑکے کی ماں بولی۔ دوپٹے کے پلو کے ساتھ موتی جڑے کروشیے کی لیس تلے کے ساتھ جوڑی گئی تھی۔ کندھوں پر پڑی…

Read more

جنوبی پنجاب بل، شریعت بل اور جاتی ہوئی حکومت

اسی اور نوے کی دہائی ملک میں اسلامی نطام کے نفاذ کے نعرہ کی تھی۔ تحریک ِنظام مصطفے ٰکے نتیجے میں ’امیر المومنین‘ جنرل ضیا الحق کی حکومت قائم ہوئی تھی اور اس کی بنیاد پر یہ آمریت برقرار رہی۔ یہ حکومت اپنے دور اقتدار میں ملک میں نظام شریعت کو مرحلہ وار لاگو کرنے…

Read more

تو کیا، تیری اوقات ہی کیا ہے؟

میرا نام آگنس (رومی) ہے۔ میں ابھی بارہ سال کی ہوں۔ روم کے معزز خاندان کی۔ اعلیٰ خاندانوں کے بہت سے نوجوان اور افسر مجھ سے شادی کے خواہش مند ہیں۔ میں خدا سے لو لگا چکی ہوں اس لئے یہ سب میرے دشمن بن گئے ہیں۔ حکم ہوا ہے، ”اسے بازاروں میں ننگے گھسیٹتے…

Read more

ہوٹل کا کمرہ

صاحب نے اسے اشارے سے اپنے پاس بلا یا۔ ہوٹل کے وسیع ہال کے سٹیج پرمحکمے کے مختلف افراد اپنے خیالات کا اظہار کر چکے تھے۔ پروگرام ختم ہونے والا تھا۔ ”یہ چابی لو! میری گاڑی میں پڑا سامان اور بریف کیس کمرے میں پہنچا دو۔ “ اس کے صاحب نے آج پھر ہوٹل میں…

Read more

ہسپتال کے چوکھٹے اور قبرستان کی تصویریں

یہ رواج تو اِس علاقے کا ہے ہی نہیں۔ ایسی قبریں تو میں نے سمر قند میں افراسیاب کے کھنڈرات کے کنارے واقع قدیم قبرستان ’شاہی زندہ‘ (زندہ بادشاہ) میں دیکھی تھیں۔ اس قبرستان کو یہ نام نبی پاکﷺ کے غسال، چچا زاد بھائی قثم بن عباس  کی نسبت سے ملا ہے۔ آپ …

Read more

ژالہ باری کی رات اور پِرجا کا حلالہ

اترسوں رات سے موسم خراب تھا۔ اس سال سردی کڑاکے کی پڑی تھی۔ موسم کی شدت ہر چیز کو غارت کردینے پر تلی تھی۔ بہار کا موسم شروع ہو چکا تھا پھاگن کا مہینہ تھالیکن سردی جانے کا نام نہیں لے رہی تھی۔ بادلوں کے اوٹ سے جھانکتے تر چھے سورج کی زرد روشنی ابھرتی…

Read more

جوتے اور جنسی علامت پرستی

سنڈریلا کو جوتی کی وجہ سے شہزادہ مل گیا تھا۔ عصمت چغتائی کا ’میٹھے جوتے‘ کھانے کو دل چاہتا تھا۔ املیڈا مارکوس اور اس کا خاوند جب ملک سے فرار ہو رہے تھے تو اسے کپڑوں کے ساتھ جوتے کے انتخاب کی پڑی تھی۔ یہ مشکل کام اسے چھ سو کے لگ بھگ قیمتی جوتوں…

Read more

بچہ اس کا جس کے بستر پر پیدا ہو

جیسے جیسے میرے جانے کے دن قریب آ رہے ہیں دل پر پڑا بوجھ زیادہ ہوتا جا رہا ہے۔ میں اس کے ساتھ کیسے مدفون ہو جاؤں، یہ ممکن نظرنہیں آرہا۔ مرنے کے بعد میراسینہ پھٹ جائے گا یا پھر میری قبر اس کی تپش سے سلگے گی اور لاوا ابل پڑے گا۔ جس راز…

Read more

جوتے کی نوک پر

”اری او سوہنی! کہاں ہو؟ جب دیکھو جوتوں سے ہی کھیلتی رہتی ہو۔ “ ”جی، بی بی جی۔ آئی۔ “ ”صبح سے کیا کام کیا ہے؟ “ ”بی بی جی، سارا صحن صاف کر چکی ہوں۔ کمرے جھاڑ پونجھ لئے، اب صاحب کے جوتے پالش کر رہی ہوں۔ “ ”اب چھوڑ بھی دو ان کو۔…

Read more