قاضی فائز عیسی اور عوامی ہیجان

جسٹس قاضی فائز عیسی کے ایشو پر کچھ ایسی دلیلیں سامنے آرہی ہیں جنہیں عقل سے عاری لوگ پیش کرسکتے ہیں جس کا ذکر اس کالم کے آخر میں ہوگا۔ مجھے ان لوگوں پر حیرت نہیں ہوتی جو پہلے کچھ پڑھتے ہیں پھر سوچتے اس کے بعد اپنی رائے قائم کرتے ہیں اگرچہ ان کی رائے غلط بھی ہو۔ حیرت ان لوگوں پر ہوتی ہے جنہیں معاملہ کا فہم ہی نہیں ہوتا جنہیں چیزوں کا ادراک ہی نہیں ہوتا صرف دیکھا دیکھی میں حمایت یا مخالفت میں کھڑے ہوجاتے ہیں۔ ایسے لوگوں کی ذہنیت کا خاکہ کچھ طرح پیش کیا جاسکتا ہے۔

پہلے نمبر پر تو وہ لوگ ہیں جو حمایت و مخالفت اپنی ذاتی حمایت و مخالفت پر کرتے ہیں۔

Read more

بلوچستان کا مخصوص و انوکھا کھیل: ٹوک بازی

ہر ملک کا کوئی نہ کوئی مخصوص کھیلا ہوتا ہے سوائے چند استثنائی ممالک کے۔ اسی طرح ہر قوم و قبیلہ اور علاقے کا مخصوص قومی کھیل ہوتا ہے۔ جیسے پنجاب میں کبڈی پنجابی کھیل ہے۔ اسی طرح کہیں پہ گلی ڈنڈا وغیرہ مخصوص علاقی کھیل ہوا کرتے ہیں۔ بلوچستان میں تقریبا سب کھیل کھیلے جاتے ہیں اس کے باوجود ہمیشہ ایک کمی محسوس ہوتی تھی کہ بلوچستان کا ایک ایسا مخصوص کھیل ہو جسے صرف قومی سطح پر ہی نہیں بلکہ بین الاقوامی سطح پر متعارف کرایا جائے۔

Read more

موجودہ ملکی صورتحال کا واحد حل عمران خان ہے

موجودہ ملکی اندرونی مسائل اور بے چینی کا واحد حل عمران خان ہے مگر مجھے معلوم ہے عمران خان ایسا کرے گا نہیں۔ میں عمران خان کی کاکردگی اور پی ٹی آئی حکومت کا سخت ناقد ہوں اور یہ بھی سچ ہے حکومت عوامی مسائل حل کرنے میں نا اہل ثابت ہوچکی ہے۔ مگر اس وقت ملک کے جو اندرونی حالات ہیں ان کا واحد حل عمران خان ہے۔

Read more

غلامی کا تصور اور اسلام پر اعتراض

یورپی ممالک خود کو بہت مہذب اور انسان دوست سمجھتے ہیں مگر ہیں انتہائی منافق جو انسانیت کو کچلتے پھر رہے ہیں۔ ان کی چالیں شطرنج کی چالوں سے بھی زیادہ خطرناک ہیں۔ کچلنے کے لئے پہلے بہانے پیدا کرتے ہیں۔ ان بہانوں کو پیش کرتے ہوئے انسانیت کو کچلنا مجبوری گردانتے ہیں اور جب…

Read more

کچھ تلخ اعتراضات کا تلخ جواب

ہونا تو یہ چاہیے تھا میں اس سوال کا جواب نہ دیتا کیونکہ ہر سوال کا جواب دینا ضروری نہیں ہوتا مگر چونکہ سوال تلخ ہے اس لئے جواب دینا پڑا۔سب سے پہلی بات یہ تاثر دینا کہ پاکستان میں حکومت یا اداروں پر تنقید کرنا بہت مشکل کام ہے ورنہ انسان اٹھا لیا جاتا ہے یہ تاثر ہی غلط ہے۔ میں تو کہتا ہوں پاکستانی شکر کریں کہ پاکستان میں کتنی آزادی سے جی رہے ہیں۔ جب میں بیرونی ممالک کے دوستوں سے بات کرتا ہوں تو وہ لوگ کہتے ہیں پاکستان رہنے کے لئے بہترین ملک ہے۔ یہاں ہر قسم کی آزادی ہے یہاں قدم قدم پر گاڑی چیک نہیں کرانا پڑتی۔ یہاں بات کرتے ہوئے خوف نہیں ہوتا۔

Read more

ڈالر کی اڑان اور امریکا کی سازش

اسے امریکہ کی معاشی جنگ کہیں، آئی ایم ایف کی سازش کہیں آپ کچھ بھی نام دے سکتے ہیں۔ مگر میری نظر میں سب سے پہلے اپنی کمزوریوں کو واضح کرنا اشد ضروری ہے۔ پی ٹی آئی حکومت نے تین ماہ کا وقت مانگا میں نے کسی قسم کی تنقید نہ کی۔ مگر تین ماہ…

Read more

بلوچستان کا مسئلہ حل کرنا ہے تو اختر مینگل کو سنو

کہتے ہیں آدھے مسائل کا مسائل کو سمجھنا ہے جبکہ ہمارے ملک کی بدقسمتی کہا جائے کہ ہم ہر بار مسائل کا حل ایسے لوگوں سے چاہتے ہیں جنہیں مسائل کا علم ہی نہیں۔ ہم موچی سے آپریشن اور نائی سے کپڑے سلوانا چاہتے ہیں پھر نتیجہ کیا نکلتا ہے ہماری آنکھوں کے سامنے ہے۔ پاکستان کا یہ مسئلہ نہیں کہ یہاں قابل اور اہل لوگ نہیں ہیں یا پاکستان میں وسائل کی کمی ہے ایسا ہرگز نہیں نا اہل اور غیرسنجیدہ لوگوں سے مسائل حل کروانا اصل مسئلہ ہے۔

Read more

طبقاتی تعلیمی نظام مسائل کی اصل جڑ

دینی مدارس کے نظام تعلیم پر بحث یہاں مطلوب نہیں اس لٰئے یہاں صرف وزارتِ تعلیم کی زیرِ سرپرستی تعلیمی نظام اور تعلیمی اداروں پر بحث ہوگی۔ عصری علوم کی پہلی تقسیم انگلش میڈیم اور اردو میڈیم میں ہوتی ہے۔ ملک کے مختلف صوبوں کے مختلف شہروں میں سرکاری اسکولز میں کہیں انگلش میڈیم رائج ہے تو کہیں اردو میڈیم پڑھایا جاتا ہے۔ دوسری تقسیم سرکاری اسکولز اور پرائیویٹ اسکولز میں ہوتی ہے۔ سرکاری اسکولز کے مضامین مختلف ہوتے ہیں اگرچہ انگلش میڈیم ہی کیوں نہ ہو جبکہ پرائیویٹ اسکولز کے مضامین مختلف ہوتے ہیں۔ اس قدر طبقاتی نظام تعلیم میں یکساں سوچ برابری کی بنیاد پر مواقع کیسے میسر آسکتے ہیں یہ سوالیہ نشان ہے۔ اگر برابری کی بنیاد پر مواقع میسر نہ آ رہے ہوں تو پھر محرومیاں جنم لیتی ہیں اور محرومیاں تشدد اور انتہاء پسندی کی طرف لے جاتی ہیں۔

Read more

سوسائٹی کے دو کنارے

قومیں بڑی بڑی عمارتوں سے عظیم نہیں بنتیں، قومیں اپنے اعلی اقدار کی بدولت دنیا میں مقام حاصل کرتی ہیں۔ مادیت پرستی کے اس دور میں اونچی عمارتیں، وسیع سڑکیں، کھلے میدان کی اپنی اہمیت ضرور ہے، جس سے انکار نہیں کیا جا سکتا۔ مگر صرف مادیت پرستی ہی سب کچھ نہیں ہوتی۔ اخلاقی بلندی، تہذیب، اجتماعی مثبت سوچ کا بھی بہت اہم کردار ہے۔ مادیت پرستی ہو یا بلند اخلاقی اقدار دونوں اعتبار سے پاکستان کا شمار ترقی پزیر ممالک میں ہوتا ہے۔

Read more

ڈی جی آئی ایس پی آر کا وہ بیان؟

پریس کانفرنس کرتے ہوئے ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ مدارس کو وزیر تعلیم کے ماتحت لانے کا فیصلہ کیا ہے یہ وہ بیان ہے جس پر دو رائے سامنے آرہی ہیں۔ پہلی رائے والے وہ مذہبی حضرات ہیں جو ڈی جی آئی ایس پی آر کی اس بات سے مکمل اختلاف…

Read more
––>