ناول ٹوٹی ہوئی دیوار ۔۔دسویں قسط

دسواں باب وقت : آٹھ بجے رات تاریخ: 8 نومبر، 2015 مقام : شاہ فیصل کالونی نمبر 5۔ کراچی جس رات شاہ فیصل نمبر پانچ تھانے پر دھاواپڑ ا تھا، اُس رات سارا علاقہ اللہ اکبر کے نعروں سے گونج اُٹھا تھا۔ پہلے مولوی سلیم اللہ چار پانچ بندوں کے ساتھ ایس ایچ او سے…

Read more

درویشوں کا ڈیرہ کے مصنفوں سے ایک مکالمہ

خواب نامے (خالد سہیل اور رابعیہ الربا کے ساتھ ایک گفتگو) دوستوں کچھ دنوں قبل ایک ایسی کتاب نظر سے گزری جو کہنے کو کوئی ناول، افسانوں کا مجموعہ، شاعری، آپ بیتی یا کوئی جگ بیتی تو نہیں تھی مگر اُس میں بیک وقت ناول بھی تھا، افسانے بھی، شاعری بھی، آپ بیتی اور جگ بیتی…

Read more

ناول ٹوٹی ہوئی دیوار ۔۔ نویں قسط

وقت: دو بج کر تیس منٹ رات تاریخ: 7 نومبر، 2015 مقام: مسی ساگا۔ کینیڈا اچانک سیل کی کی وابریشن کی آوازسے ثانیہ چونک گئی، دوسری طرف دلیپ ہی تھا۔ وہی ہوا جس کی امید تھی دلیپ، اِٹس آل میسی ناؤ، مما پپا کو پتا چل گیا، اُنھوں نے ہمیں ساتھ دیکھ لیا ہے، اسٹار…

Read more

ناول ٹوٹی ہوئی دیوار ۔۔آٹھویں قسط

آٹھواں باب وقت : بارہ بجے دوپہر تاریخ: 7 نومبر، 2015 مقام : کابل، افغانستان گھر پہنچ کر واحدی نے کپڑے بدلے ہی تھے کہ فون کی گھنٹی بجنے لگی۔ دوسری طرف ایک انجانی سی آواز تھی، ”پروفیسر صاحب تمھارے بارے میں ہمیں سب پتہ ہے۔ تم کہاں رہتے ہو کیا کام کرتے ہو اور…

Read more

ناول ٹوٹی ہوئی دیوار ۔۔ساتویں قسط

وقت : دس بجے رات تاریخ:7 نومبر ، 2015 مقام : شاہ فیصل کالونی نمبر 5 ۔کراچی بختاور نے گلی والا دروازہ کھولا تو وہاں ادریس نہیں تھا بلکہ مولوی سلیم اللہ چار پانچ داڑھی والے لوگوں کے ساتھ کھڑے تھے۔ بختاور نے فوراٌ ہی دوپٹہ سر پر لے لیا اور دروازے کی آڑ میں…

Read more

ٹوٹی ہوئی دیوار – ناول قسط چھ

چھٹا باب وقت: بارہ بج کر تیس منٹ رات تاریخ: 7 نومبر، 2015 مقام: مسی ساگا۔ کینیڈا دروازے کے کھلنے کی دھیمی سی آواز اور مما کی دھاڑتی ہوئی تیز آوازیں جو آپس میں ملیں تو ثانیہ کے سارے بدن میں ایک خوف کی لہر سی دوڑ گئی۔ اُسے لگا جیسے ایک طوفان کسی چیتے…

Read more

ٹوٹی ہوی دیوار (ناول) پانچویں قسط

پانچواں باب وقت : صبح گیارہ بج کر تیس منٹ تاریخ:7 نومبر، 2015 مقام : کابل، افغانستان دوگھنٹے گزرنے کے بعد بھی جب ناظر عزیزی کی کال نہیں آئی اور اُس کا نمبر بھی مسلسل مصروف ملتا رہا تو واحدی نے تنگ آکرکالج کے ایک اور پروفیسر نعمت اللہ خان کو کال ملائی مگر ابھی…

Read more

ٹوٹی ہوی دیوار (ناول) چوتھی قسط

چوتھا باب وقت : صبح دس بجے تاریخ:7 نومبر، 2015 مقام : شاہ فیصل کالونی نمبر 5۔ کراچی ‘ ساری رات نہیں سویا ہے یہ، ذرا سی آنکھ لگتی نہیں ہے تو پھر چیخ کر اُٹھ جاتا ہے، اُٹھتا ہے تو پھر الٹیاں لگ جاتی ہیں، مجال ہے جو ایک دانا بھی پیٹ میں گیاہو۔…

Read more

ناول ٹوٹی ہوئ دیوار ۔۔ تیسری قسط

ثانیہ نے ڈاکٹر واحدی کو بائی فار ناؤ ٹائپ کیا اور پھر رائٹ کلک سے فیس بُک سے ہی سائن آوٹ کردیا۔ وہ کچھ دیر یوں ہی خالی آنکھوں سے کمپیوٹر کے آئیکانز کو تکتی رہی جیسے کچھ سوچ رہی ہو اور پھر کسی خیال سے کیمرے کے ائیکون کو کلک کیا اور خود کوا…

Read more

ٹوٹی ہوئی دیوار – دوسری قسط

وقت : صبح آٹھ بجکر 30 منٹ تاریخ:7 نومبر، 2015 مقام : کابل، افغانستان ‘اگر مذہب سیاست ادب رسوم و رواج فراڈ نہ ہوتے تو کیا انسان فراڈ ہوتا؟ ’ ڈاکٹر واحدی نے کمنٹ لکھ کر کچھ دیر ہی پلک جھپکی تھی کہ اسکرین پر دوسری طرف سے ثانیہ کا جوابی کمنٹ موصول ہوگیا۔ مگر…

Read more