یوتھینیزیا: مردہ جسم پر زندہ سر

یہ 23 اگست 1968 کی بات ہے۔ بحری جہازوں پر کام کرنے والے 25 سالہ نوجوان رامون سمپدرو نے شمالی اسپین میں واقع اپنے ساحلی گاؤں میں ایک چٹان سے سمندر میں چھلانگ لگائی۔ پانی کی گہرائی سمجھنے میں غلطی ہوئی اور اس کا نتیجہ یہ نکلا کہ اس کا سر سمندر کے فرش سے…

Read more

زبانیں مر رہی ہیں

اکثر صبح کو میرا اسمارٹ فون مجھے یاد دلاتا ہے کہ آج کس چیز کا عالمی دن ہے۔ اس کا نتیجہ یہ نکلا کہ مجھ جیسے کم علم کو بھی کچھ تاریخیں اس طرح یاد ہو گئی ہیں کہ ان میں کون سا دن منایا جاتا ہے۔ فروری کے تیسرے ہفتے کا آغاز ایسے ہی…

Read more

ہم اتنے منافق کیوں ہیں؟

ایک ہی دن میں دو ایسے حادثے ہوئے کہ دماغ جھنجھنا اٹھا۔ صبح میں میرے دوست حافظ صاحب باتوں باتوں میں فرمانے لگے کہ ان کے سنی اکثریتی محلے میں شیعوں نے امام باڑہ بنانے کی کوشش کی تھی لیکن سنیوں نے بروقت روک دیا۔ حافظ صاحب بظاہر مسلکی عصبیت میں مبتلا نہیں لگتے، البتہ…

Read more

نصرت جہاں کا سندور اور زائرہ وسیم کی دین داری

سماج کے مذہبی اور لبرل طبقوں کو اگر آپ دو فکری انتہائیں مان لیں اور اس بات کا موازنہ کریں کہ ان میں سے اپنے نظریات پر کون زیادہ ثابت قدم ہے تو یقین مانئے آپ کو یہ دونوں ہی کبھی نہ کبھی مایوس ضرور کریں گے۔ اپنے ہی طے شدہ اصولوں سے انحراف بھی…

Read more

ٹی وی اور سی سی ٹی وی حرام ہونے کے فتوے

اسلامی فقہ کی جانکاری رکھنے والے افراد سد ذریعہ کے نظریے سے خوب واقف ہیں۔ اس نظریے کی تفصیل بہت طولانی ہے اس لئے نہ جاننے والے اسے جاوید احمد غامدی کے ان لفظوں سے آسانی سے سمجھ سکتے ہیں کہ ”اگر کسی چیز میں اگر دوسری چیز تک لے جانے کی کوئی طاقت موجود…

Read more

پروفیسر عبید صدیقی: منہ پھٹ، باغی یا آزاد منش؟

تقریبا پانچ ماہ پہلے پروفیسر عبید صدیقی نے سوشل میڈیا پر فرحت احساس کا ایک شعر شیئر کیا۔ میں رونا چاہتا ہوں، خوب رونا چاہتا ہوں میں پھر اس کے بعد گہری نیند سونا چاہتا ہوں میں 9جنوری کی ایک سرد اور دھندلی صبح وہ ابدی نیند سو گئے۔ جامعہ ملیہ اسلامیہ، جہاں انہوں نے…

Read more

برابری ثابت کرنے کے لئے عورتوں کو ریپ کرنے پڑیں گے؟

رونا اس بات کا نہیں کہ یہ بات کہی گئی بلکہ ماتم اس کا ہے یہ کہنے والا وہ ہے جس کی پہچان قلم کار کے طور پر ہے۔ پاکستان کے اسکرپٹ رائٹر خلیل الرحمان قمر فرماتے ہیں کہ عورتوں کو مردوں کی برابری کرنی ہے تو پہلےکسی مرد کا گینگ ریپ کرکے دکھائیں۔ انہوں…

Read more

ضرورت ہے! بھارتی مسلمانوں کے لئے ایک حسن نثار کی

پاکستان کی جو چیزیں بھارت والوں کو بہت پسند ہیں وہ مندرجہ ذیل ہیں: یکم: خواتین کے لباس کا اسٹائل دوم: یہ گلیاں یہ چوبارہ ٹائپ سیریئل سوم: فواد خان اور ماہرہ خان ٹائپ فلمی ستارے چہارم: حسن نثار چونکہ شروع کی تین چیزوں کی ہمیں کچھ زیادہ سمجھ بوجھ نہیں اس لئے چوتھی چیز…

Read more

کیا عزاداری کر کے کربلا کا حق ادا ہو گیا؟

ہر سال محرم کا چاند نظر آتے ہی دنیا بھر میں فرش عزا بچھا دی جاتی ہے۔ مرثیہ، نوحہ، سلام، مجلس اور ماتم کی صدائیں فضاؤں میں گونجنے لگتی ہیں اور لوگ امام حسین اور ان کے ساتھیوں کی قربانی کی یاد میں کاروبار دنیا کو بھلا دیتے ہیں۔ یہ وہ عمل ہے جو پچھلی کئی صدیوں سے ہر سال ہوتا چلا آ رہا ہے لیکن لوگوں کے دلوں میں اس غم کی شدت جیسے کم ہی نہیں ہو رہی۔ کیسی حیرتناک بات ہے کہ خطیب منبر سے جو مصائب بیان کرتا ہے اس کی ایک ایک تفصیل ہمیں پہلے سے معلوم ہوتے ہوئے بھی جیسے جیسے ذکر مصیبت آگے بڑھتا ہے سننے والوں کی کیفیت بدلتی جاتی ہے۔ ایسا لگتا ہے جیسے سامعین اس واقعہ کو پہلی بار سن رہے ہوں۔ یہی وجہہ ہے کہ ہزار برس سے زیادہ بیت جانے کے باوجود یہ سانحہ پچھلے سال وقوع پذیر ہوا معلوم ہوتا ہے۔

Read more

عزاداری پر مسلکی رنگ کیوں چڑھ گیا؟

میرا تعلق جس بستی سے ہے وہاں ایک صاحب ہوا کرتے تھے۔ دیوبندی مکتب فکر سے تعلق رکھتے تھے اور سنی اکثریتی محلے نئی بستی کی سرگرم شخصیات میں شمار ہوتے تھے۔ ہر چند کہ بستی کے اہل تشیع سے ان کی سلام دعا تھی لیکن شیعہ طبقہ میں عام تاثر یہی تھا کہ یہ صاحب دل ہی دل میں شیعوں سے چڑتے ہیں۔ ہم نے بھی کئی ایک سے یہی کچھ سنا اور ان کے بارے میں مخصوص تاثر قائم کر لیا۔ ایک بار محرم میں بستی میں جو تعزیتی بینر لگے ان پر کربلا سے متعلق اشعار درج کیے گئے۔ ایسے ہی ایک بینر پر میں نے یہ قطعہ پڑھا

Read more