برے دن کی خواہش کے ساتھ

بچپن میں ایک واقعہ کہیں سنا، پڑھا تھا (جاوید چوہدری صاحب نے بھی اپنے استاد کے حوالے سے ایسا ہی واقعہ اپنے ایک کالم میں لکھا تھا) ، کہ ایک استاد نے کلاس روم میں تختہ سیاہ پر ایک لکیر کھینچ دی اور بچوں سے کہا کہ اسے چھوٹا کرنا ہے لیکن شرط ایک ہے اور وہ یہ کہ اسے مٹانا نہیں۔ اب بچے شروع ہو گئے۔ ہر طرح کا اندازا لگا لیا لیکن آخر اس نتیجے پر پہنچے کہ مٹائے بغیر اس لکیر کا چھوٹا ہونا ناممکن ہے۔ آخراستاد اٹھے اور اس لکیر کے متوازی اس سے بڑی ایک اور لکیر کھینچ دی۔ اور سمجھایا کہ ”دیکھو یہ پہلی لکیر اپنے آپ چھوٹی ہو گئی ہے۔ پھر سمجھایا کہ زندگی میں کسی اور کے قد کو کسی سازش، کسی پلان، کسی منفی قدم سے چھوٹا کرنے کی بجائے اپنا قد بڑا کرو، دوسرے کا قد خود بخود چھوٹا ہوجائے گا۔ “

Read more

پستول نہیں ماحول، گولی نہیں گول میز

پی ٹی ایم اور فوج کے قضیے میں ایک طرف جولوگ فوج کو ذمہ دار قرار دے رہے ہیں ان پر نام نہاد محبان وطن طعنہ زن ہیں۔ دوسری جانب جو پی ٹی ایم کو قصور وار قرار دینے والوں کے مخالفین کی طرف سے 1971 اور بنگلہ دیش یاد کرایا جارہا ہے۔ایسے میں ظالم اور غدار کا تعین کیے بغیرمیرے ذہن میں وہ نقشہ ابھرتا ہے جو چند سال قبل ایک امریکی جریدے آرمڈ فورسز جرنل میں شائع ہواتھا۔ دماغ میں سی آئی کے ایک اعلی اہلکار کا انٹرویو چلتا ہے جس میں وہ بلوچستان میں سی آئی اے کے نیٹ ورک کی بات کرتا ہے۔

Read more

کیکڑوں کے معجزے

کیکڑا ون پراجیکٹ سے تیل یا گیس نہیں نکلی۔ کسی آس امید پر ہی انٹرنیشنل کمپنیاں اور حکومتیں انتہائی مشکل کھدائی کرتی اور اربوں روپیہ جھونکتی ہیں۔ لیکن یہ نہ تھی ہماری قسمت۔۔۔ فرض کریں یہاں سے جیسے کہ اندازے لگائے جا رہے تھے، اس مقدار میں گیس نکل آتی تو مشرف صاحب سے لے…

Read more

پاکستان، سیاحت اور کینیڈین خاتون

مارک وینز (Mark Wienes) ایک بین الاقوامی شہرت یافتہ فوڈ بلاگرہیں۔ وہ دنیا کے مختلف ممالک کے سفر کرتے اوروہاں کے مقامی کھانے کھاتے ہیں۔ یوٹیوب کے ذریعے کروڑوں لوگ ان کے ان سفروں اورکھانوں کو دیکھتے ہیں۔ کسی بھی ملک میں سفرکرنے کے لئے ان کے پروگرام دیکھ کروہاں کے اچھے کھابوں اور ریسٹورنٹس…

Read more

کینیڈین انتخابات اورجسٹن ٹروڈو کی مشکلات

ایک سابق وزیراعظم کا بیٹا جس کی پیدائش ہی وزیراعظم ہاوس میں ہوئی، سمارٹ، ہینڈ سم اور محنتی جسٹن ٹروڈو کینیڈا کی لبرل پارٹی کی قیادت کے لئے اس وقت سامنے آئے جب لبرل پارٹی قیادت کے شدید بحران کا شکار ہو چکی تھی۔ حالیہ دور کے سیاستدانوں میں جو کرزمہ (Chrisma) جسٹن ٹروڈو کی شکل میں دیکھا، کم سیاستدانوں کو نصیب ہوا۔ الیکشن سے کوئی ڈیڑھ برس قبل جسٹن جب ابھی اپوزیشن میں تھے اپنی الیکشن مہم کے سلسلہ میں ہمارے ہوسٹ کردہ ایک پروگرام میں تشریف لائے، ساتھ لبرل پارٹی کے اور بھی سینئر ممبران تھے۔ عوام خصوصاً نوجوانوں کی طرف سے انہیں اس وقت بھی جو پذیرائی ملی قابل دید تھی۔ ہم نے ان کا انٹرویو بھی ریکارڈ کرنا تھا، انہیں عوامی ریلے سے سٹوڈیوز تک لے جانے کے لئے ہمیں باقاعدہ سیکورٹی کی مدد لینا پڑی۔

Read more

“قاضی العلما”عثمان قاضی کے ساتھ ایک شام

کہانیوں، کتابوں اور روایات میں بعض شخصیات کا تذکرہ ہوتا ہے کہ کیسے کیسےعالم، کیسے نابغے ہوا کرتے تھے۔ کیسی کیسی یادداشت اور کیا مطالعہ۔ ایسے لوگوں کے بارے میں پڑھتے ہوئے یہ لوگ کسی دیومالائی کہانی، کسی الف لیلی کا کردار لگتے تھے۔ وقت اور شعور کے ساتھ معلوم ہوا کہ یہ اساطیری باتیں…

Read more

کسی کی موت پر خوشی نہیں مناتے

صبح پہلے انڈین جہازوں کے گرنے کی خبریں آئیں۔ پھر ٹی وی چینلوں کے پرجوش لئجے میں پتہ چلا کہ جہاز گرے نہیں بلکہ پاکستان ائیرفورس کی طرف سے گرائے گئے ہیں۔ سچ پوچھیں تو جنگ کا شدیدمخالف ہونے کے باوجود انڈیا کی طرف سے کل کی کارروائی کے بعد مجھے بھی ایک کمینی سی…

Read more

رائزنگ انڈیا کے کھوکھلے نعرے

قوموں کی ترقی کی تاریخ کا مطالعہ کریں تو پتہ چلتا ہے کہ آج کی مہذب اورترقی یافتہ قومیں بھی کبھی شدیدجنگی جنون میں مبتلا رہی ہیں۔ کینیڈا اور امریکہ کے درمیان باقاعدہ جنگ لڑی گئی، فرانس اور انگلستان بھی کبھی ازلی دشمن تھے، جرمنوں نے تو خیر انگریزوں کے علاوہ پوری دنیا ہی کو تگنی کا ناچ نچائے رکھا۔ آئر لینڈ انگلستان کئی دہائیاں باہم برسر پیکار رہے۔ جاپانی بھی جنگی جنون میں مبتلا رہے اور ہر دوسری قوم کے ساتھ ان کی لڑائیاں رہیں۔ لائپزگ، واٹرلو، سٹالن گراڈ، ٹرافیلگر، پرل ہاربر، ہیروشیما، ناگاساکی وغیرہ۔ انہی قوموں کی جنگی داستانیں ہیں۔

لیکن جیسے جیسے قوموں نے شعوری اور علمی ترقی کی اورخوشحالی کی شاہراہ پر قدم آگے بڑھایا وہ تنازعات اور جنگوں وجدل سے دور ہوتی گئیں۔ بدلوں کی آگ، ازلی دشمنی، تباہی و بربادی جیسے لفظ بتدریج ان کی لغت سے نکلتے گئے اور افہام و تفہیم، بات چیت، تحمل وبردباری جیسے لفظ پوری شان کے ساتھ ان کی روزمرہ زندگی میں جگمگانے لگے۔

Read more

کینیڈا کیوں اور کیسے

فیس بک پروفائل پر ٹورانٹو، کینیڈا لکھا دیکھ کر بھی کچھ لوگ، خصوصاً نوجوان فرینڈ ریکویسٹ بھیجتے ہیں۔ دوست بننے کے بعد ان باکس تشریف لاتے ہیں۔ یہ زیادہ تر کینیڈا جانے کے خواہشمند ہوتے ہیں۔ ان کی دلچسپی کے لئے کافی دنوں سے ایک معلوماتی مضمون لکھنا چاہ رہا تھالیکن سستی آڑے آتی رہی۔ آج اوپر تلے دو لوگوں کی طرف سے کیے گئے سوالات نے مجبور کر دیا کہ یہ نیک کام جلدی کروں۔ پہلے آج کی گفتگو ملاحظہ فرمائیں۔ (اس وضاحت کے ساتھ کہ میں امیگریشن ایکسپرٹ نہیں ہوں، میری رائے مخلصانہ ضرور ہوگی پروفیشنل نہیں ) ۔

”کیاحال ہے؟ “ جی ٹھیک ہوں۔ ”کیا ہو رہا ہے؟ “ میری طرف سے خاموشی۔ ”آپ مصروف ہیں؟ “ نہیں ویلا، فرمائیے۔ ”آپ کینیڈا ہوتے ہیں؟ “ جی۔ ”آپ کینیڈا کیسے گئے تھے؟ “ جہاز پر۔ ”میرا مطلب کس ویزے پر گئے تھے؟ “ جی کینیڈا کے ویزے پر۔ ”آپ نہیں سمجھے، بہرحال میں آنا چاہتا ہوں کینیڈا کچھ گائیڈ کریں۔ “

Read more

مرنے اور مارنے سے ارادے سرد نہیں ہوتے

فیض آباد کے اس پل کے نیچے سے گذر رہا ہوں جہاں بیٹھ کر سال بھر پہلے ایک "خادم" نے دارالحکومت کی شہ رگ بند کر دی تھی۔ آج وہاں ایک بڑا بینر لگا ہوا ہے جس پر جلی حروف میں تحریر ہے“ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے”۔ شہر اقتدار میں انڈین فورسز کی…

Read more